سپریم کورٹ نے کہا،نہیں ملتوی ہوگی سماعت، آلو ک ورماجلد از جلدداخل کریں جواب

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 19th November 2018, 10:20 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی:19/نومبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)سپریم کورٹ نے پیر کو سی بی آئی کے ڈائریکٹر آلوک کمار ورما سے کہا کہ ان کے خلاف بدعنوانی کے الزامات کے بارے میں سی وی سی کی جانچ رپورٹ پر جلد سے جلد آج ہی اپنا جواب داخل کریں۔عدالت نے واضح کیا کہ اس کیس کے لئے منگل کو مقدمے کی سماعت نہیں ٹالی جائے گی۔چیف جسٹس رنجن گگوئی کی صدارت والی بنچ کو ورما کے وکیل گوپال شکرنارائن نے مطلع کیا کہ سی بی آئی ڈائریکٹر رجسٹری میں اپنا جواب داخل نہیں کر سکے ہیں۔بنچ نے کہا کہ ہم آگے بڑھانے کی تاریخ نہیں دیں گے،جتنی جلدی ممکن ہواپنا جواب داخل کریں،ہمیں بھی جواب پڑھنا پڑے گا۔اس پر گوپال نے کہا کہ آج دن میں ہی جواب کردیا جائے گا۔عدالت نے سی بی آئی ڈائریکٹر کے خلاف بدعنوانی کے الزامات پر سی وی سی کی ابتدائی رپورٹ پر 16نومبر کو آلوک ورما کو سیل بند لفافے میں پیر تک جواب داخل کرنے کی ہدایت دی تھی۔
اس سے پہلے 16نومبر کو عدالت نے کہا تھا کہ سی وی سی نے اپنی جانچ رپورٹ میں کچھ بہت ہی منفی تبصرے کئے ہیں اور وہ کچھ الزامات کی آگے کی انکوائری چاہتا ہے، اس کے لے اس کو اور وقت چاہئے۔عدالت نے سی بی آئی سربراہ آلوک ورما کے تمام حقوق واپس لینے اور انہیں چھٹی پر بھیجنے کے حکومت کے فیصلے کو چیلنج دینے والی ورما کی عرضی پر سماعت کے دوران گزشتہ جمعہ کو یہ ہدایت دی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

شہیدوں کے گھر ’درد کے دریا کا سیلاب‘ تھا اور مودی دریا میں شوٹنگ کر رہے تھے: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے پلوامہ دہشت گردانہ حملے والے دن وزیر اعظم نریندر مودی کے ایک چینل کے لئے فلم کی شوٹنگ کرنے سے متعلق خبروں کو لے کر جمعہ کو ان پر حملہ بولا اور الزام لگایا کہ جب شہیدوں کے گھر دردکے دریا کا سیلاب تھا تو پرائم ٹائم منسٹر 'ہنستے ہوئے دریا میں شوٹنگ کر رہے ...

عظیم اتحادملک کے لیے اچھانہیں،اپوزیشن کے پاس کوئی نظریہ اورکوئی لیڈرنہیں ہے، امت شاہ کوپھرمہاگٹھ بندھن سے شکایت،کانگریس اورلیفٹ کونشانہ بنایا

جھک کرلوجپا،شیوسینا،جدیواورڈی ایم کے کے ساتھ اتحادکرنے والی بی جے پی صدر امت شاہ نے جمعہ کو اپوزیشن پارٹیوں کے مجوزہ مہاگٹھ بندھن پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملک کے لیے اچھا نہیں ہے۔

بہار کے سابق وزیرالیاس حسین کو 22 سال پرانے کول تار گھوٹالے میں 5 سال کی سزا

مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کی خصوصی عدالت نے جمعہ کو کول تار گھوٹالے میں بہارکے سابق وزیرالیاس حسین اورچاردیگر کو پانچ سال قید کی سزا سنائی اور ایک ٹھیکیدار کو اس معاملے میں سات سال کی سزا سنائی۔