سولیا میں گائے اور بچھڑا لے جانے والوں پر محکمہ جنگلات کے افسران کی طرف سے فائرنگ کاالزام

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th August 2018, 6:15 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کنّور 6؍اگست (ایس او نیوز) کاسرگوڈ کے رہنے والے ایک شخص نے الزام لگایا ہے کہ جب وہ اور اس کے ساتھی ضلع جنوبی کینرا کے سولیا سے اپنی جیپ میں ایک گائے اور بچھڑا لے کر جارہے تھے تومحکمہ جنگلات کے افسران نے ان کا پیچھا کیااورفائرنگ کرنے کے بعد زخمی کو چھوڑکر گائے اور بچھڑے سمیت جیپ اپنے ساتھ لے گئے۔

کاسرگوڈ میں راجہ پورم پولیس کے بیان کے مطابق کرناٹکا کے سولیا پولیس اسٹیشن کے حدود میں یہ واردات صبح تین بجے کے وقت پیش آئی تھی، جس میں زخمی کی شناخت ایلوکوچی کے رہنے والے نشانت کے طور پر کی گئی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ جب نشانت اور اس کے دوست ایم حنیفہ اور کے ڈی انیش جیپ میں گائے اور بچھڑا لے کر آرہے تھے تو کرناٹکا محکمہ جنگلات کے افسران نے ان کا پیچھا کیا اور پھر نشانت کے پاؤں پر فائر کردیا۔انیش کا کہنا ہے کہ محکمہ جنگلات کے افسران نے پیچھا کرتے ہوئے بغیر کسی اشتعال کے ہوائی فائرنگ کی تو وہ اور حنیفہ ڈر کے مارے بھاگ کھڑے ہوئے مگر چونکہ نشانت گاڑی ڈرائیو کر رہا تھا اس لئے وہ بھاگ نہیں پایا۔ جب وہ لوگ تقریباً آدھے گھنٹے بعد فائرنگ کے مقام پر واپس پہنچے تو دیکھا کہ نشانت کے پیر میں گولی لگی تھی اوروہ زخمی حالت میں پڑا ہواتھا۔پھر ان دونوں نے زخمی کو لے کرتقریباً10کیلومیٹر تک پیدل چلتے ہوئے پاناتھور تک کا سفر طے کیا اور نشانت کو کان ہانگڈ اسپتال لے گئے۔وہاں سے مزید علاج کے لئے اسے پیریارم میڈیکل کالج اسپتال میں منتقل کیا گیا ہے۔

فائرنگ کا معاملہ چونکہ سولیا میں ہوا ہے اس لئے سولیا پولیس اسٹیشن میں کیس درج کرلیا گیا ہے۔ سولیا پولیس کے بیان کے مطابق محکمہ جنگلات کے افسران کا کہنا ہے انہوں نے نشات کو گاڑی روکنے کا اشارہ کیا مگر اس نے ان کی ہدایت پر عمل نہیں کیا۔ پولیس نے کہا ہے کہ بالسٹک جانچ کے بعد ہی پتہ چلے گا کہ فائرنگ میں گولیاں استعمال ہوئی تھیں یا پھر چھرّے (pellets)استعمال ہوئے تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو وینلاک اسپتال کے روبرو پرائیویٹ میڈیکل کالج کے طلبا ڈاکٹروں کااحتجاج : تعلیمی وظیفہ کی  ادائیگی کی مانگ

سرکاری اسپتالوں میں کلینکل سہولیات پانے والے  پرائیویٹ میڈیکل کالج کے سرکاری کوٹہ کے گھریلو ڈاکٹر اور پوسٹ گریجویٹ  ڈاکٹرس کو گزشتہ 8مہینوں سے تعلیمی وظیفہ ادا نہیں کیاگیا ہے ، تعلیمی وظیفہ کی مانگ کرتے ہوئے طلبا ڈاکٹروں نے شہر کے وینلاک اسپتال کے روبرو احتجاج کیا۔

سورتکل میں ٹول گیٹ فیس وصولی  لائسنس کی تجدیدکاری کے خلاف غیر معینہ مدت کا دھرنا

ریاستی حکومت کی پیش کش کے باوجود  نیشنل ہائی وے اتھارٹی کی طرف سے  سورتکل کے غیر قانونی ٹول گیٹ کے  فیس وصولی لائسنس کی تجدید کئے جانے کی مخالفت کرتے ہوئے آج سے ٹول گیٹ مخالف ہوراٹ سمیتی کی قیادت میں سورتکل جنکشن پر دن رات کا غیر معینہ مدت کا دھرنا شروع کیاگیا

کاروار میں سرکاری انجینئرنگ کالج پرنسپال کی غفلت۔ بی ای سیکنڈ کو نہیں ملی لیاٹرل اینٹری۔ طلبہ کا خسارہ

سرکاری انجینئرنگ کالج کے پرنسپال کی غفلت کی وجہ سے بی ای سال دوم میں طلبہ کو داخلے کے لئے لیاٹرل اینٹری کی جو سہولت ہے وہ دستیاب نہیں ہوسکی ہے۔ لیاٹرل اینٹری سسٹم کے ذریعے ڈپلومہ پورا کرنے والے طلبہ براہ راست انجینئرنگ کے سال دوم میں ایک امتحان کے ذریعے داخلہ لے سکتے ہیں۔

ضلع شمالی کینرا میں جے ڈی ایس کا وجود نہیں ہے۔ آئندہ لوک سبھا میں کانگریس کا ہی امیدوار ہوگا۔ دیشپانڈے کا بیان

ریوینیو اور ضلع انچارج وزیر آر وی دیشپانڈے نے کہا ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں جنتا دل ایس کا کوئی وجود نہیں ہے، بلکہ کانگریس پارٹی ضلع میں پوری طرح مستحکم ہے۔ اس لئے آئندہ لوک سبھا انتخاب میںیہاں سے کانگریس کا امیدوار ہی میدان میں اتارا جائے گا۔

کمٹہ: پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل کی سازش پہلے بھی رچی گئی تھی؛ پولس کی تحقیقات جاری

حال ہی میں کمٹہ مندر کے پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل سے متعلق تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ اپنے خون کے رشتے دار پر بھروسہ ہی ان کے قتل کا سبب بنا ہے، کیونکہ انہیں نئی خریدی گئی زمین کی شدھی کرنے کی پوجا انجام دینے کے بہانے مرور کی طرف بلاکر لے جانے والا کوئی اجنبی نہیں ...

بھٹکل میں طبی سہولیات کا ایک جائزہ؛ تنظیم میڈیا ورکشاپ میں طلبا کی طرف سے پیش کردہ ایک رپورٹ

مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کی جانب سے منعقدہ پانچ روزہ میڈیا ورکشاپ میں جو طلبا شریک ہوئے تھے، اُس میں تین تین اور چار چار طلبا پر مشتمل الگ الگ ٹیموں کو شہر بھٹکل کے مختلف مسائل کا جائزہ لینے اور اپنی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی گئی تھی، اس میں سے ایک  ٹیم جس میں  حبیب اللہ محتشم ...