گھر میں تنہا رہنے والے بزرگ شخص کی لاش برآمد۔ قتل کیے جانے کا شبہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th September 2018, 12:41 PM | ساحلی خبریں |

سولیا 9؍ستمبر (ایس او نیوز) سولیا کے کلاچارے نامی گاؤں میں اپنے گھر پر تنہا رہنے والے ایک بزرگ شخص کی سڑی گلی لاش بر آمد ہوئی ہے جس کے بارے میں شبہ کیا جارہا ہے کہ ا س کا قتل کیا گیا ہوگا۔

بند گھر سے بر آمد ہونے والی لاش کی شناخت سبرامنیا بھٹ (60سال) کے طور پر کی گئی ہے۔بھٹ کی موت کے بارے میں پاس پڑوس والوں کو اس وقت پتہ چلا جب ایک ڈاکیہ بھٹ کے گھر پر ڈاک دینے کے لئے پہنچاتو اس نے گھر کے اندر سے بدبو آنے کی بات بتائی۔چونکہ کچھ دنوں سے پڑوسیوں نے بھٹ کو گھر سے باہر نکلتے نہیں دیکھاتھا اس لئے فوری طور پر پولیس کو اطلاع دی گئی۔

سبرامنیا پولیس اسٹیشن سے وابستہ افسران نے بھٹ کے گھر پر پہنچ کر جائزہ لیا تو وہاں پر سڑی گلی لاش برآمد ہوئی جسے دیکھنے کے بعد اندازہ لگایا گیا ہے کہ موت کم از کم دس دن پہلے واقع ہوئی ہوگی۔ سبرامنیا بھٹ کی اس موت کے تعلق سے ابھی یہ بات صاف نہیں ہوئی ہے کہ یہ خود کشی کا معاملہ ہے یا کسی نے اسے قتل کردیا ہے۔معلوم ہوا ہے کہ سبرامنیا بھٹ نے اپنی بیوی اور بچوں سے تعلقات منقطع کرلیے تھے اور وہ تنہا ہی گھر پر رہا کرتا تھا۔ اس کے علاوہ رقم قرض دینے کے کاروبار میں ملوث تھا۔

علاقے کے کچھ لوگوں نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ جن لوگوں کے ساتھ رقم کے لین دین سے متعلق اس کا تنازعہ تھا ان لوگوں نے شاید تنہائی کا فائدہ اٹھا کر اسے قتل کردیا ہوگا۔حقیقت جو بھی ہوگی وہ پوسٹ مارٹم رپورٹ اور پولیس تحقیقات کے بعد ہی سامنے آئے گی۔ ضلع ایس پی ڈاکٹر روی کانتے گوڈا، پتّور ڈی وائی ایس پی سرینواس، مقامی سرکل انسپکٹر ستیش کمار، اسٹیشن ہاؤس آفیسر گوپال اور دیگر پولیس عملے نے موقع پر پہنچ کر معائنہ کیا۔ تحقیقات کے لئے فنگر پرنٹس ماہرین اور ڈاگ اسکواڈ کا بھی سہارا لیا گیا۔لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے منگلورو اسپتال میں منتقل کیاگیا۔

ایک نظر اس پر بھی

لوک سبھا انتخابات؛ بھٹکل میں سبھی پولنگ بوتھوں کے اطراف امتناعی احکامات نافذ؛ ہوٹلوں پر ہوگی نگاہ، انتخابی پرچار پر پابندی

اپریل 23 کو ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے پیش نظر  بھٹکل ودھان سبھا حلقہ کے 248 پولنگ بوتھوں کے اطراف  پروٹوکول کے تحت انتخابات شروع ہونے کے 48 گھنٹے پہلے سے ہی امتناعی احکامات نافذ کردئے  گئے ہیں۔ جس کے تحت پولنگ بوتھ کے اطراف چار سے زائد لوگوں کے جمع ہونے پر پابندی رہے گی اس بات ...

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

اس بار کے انتخابات سب سے زیادہ اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ...

ہلیال میں جے ڈی ایس لیڈر کے گھر پر انتخابی افسران کا چھاپہ ۔تلاشی کے بعد خالی ہاتھ واپس لوٹے افسران؛ کیا بی جےپی کو شکست کا خوف ہے؟

پارلیمانی انتخابات کے پیش نظر چیک پوسٹس پر تلاشی مہم کے علاوہ ہلیال شہر کے گوداموں، شراب کی دکانوں، موٹر گاڑیوں کی بھی مسلسل تلاشیاں لے رہے ہیں۔

لوک سبھا انتخابات؛ اُترکنڑا میں کیا آنند، آننت کو پچھاڑ پائیں گے ؟ نامدھاری، اقلیت، مراٹھا اور پچھڑی ذات کے ووٹ نہایت فیصلہ کن

اُترکنڑا میں لوک سبھا انتخابات  کے دن جیسے جیسے قریب آتے جارہے ہیں   نامدھاری، مراٹھا، پچھڑی ذات  اور اقلیت ایک دوسرے کے قریب تر آنے کے آثار نظر آرہے ہیں،  اگر ایسا ہوا تو  اس بار کے انتخابات  نہایت فیصلہ کن ثابت ہوسکتےہیں بشرطیکہ اقلیتی ووٹرس  پورے جوش و خروش کے ساتھ  ...