ریاست میں بی جے پی کے مضبوط متبادل کا ابھرنا مشکوک: دیوے گوڈا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th October 2018, 12:29 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،11؍اکتوبر(ایس او نیوز) سابق وزیر اعظم اور جے ڈی ایس کے قومی سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڈا نے اپنے سیاسی موقف سے اچانک انحراف کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگلے لوک سبھا انتخابات میں بی جے پی کے خلاف متبادل سیاسی قوت کے ابھرنے کا امکان مشکوک نظر آرہاہے۔ آج شہر کے چتراکلا پریشد میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ بی جے پی اور شیوسینا کو الگ کرکے تمام سیاسی پارٹیوں کو یکجا کرکے ایک متبادل سیاسی قوت بنانے کی پہل کے ساتھ کرناٹک میں مخلوط حکومت کا قیام عمل میں آیا ہے، لیکن یہ اتحاد کس حد تک کامیاب ہوگا اس بارے میں کچھ نہیں کہاجاسکتا۔ انہوں نے کہاکہ فی الحال جو بدنظمی ہے اسے دور کرنے کی حتی الامکان کوشش کی جائے گی۔ انہوں نے کہاکہ سیاسی میدان سے وہ کبھی پیچھے نہیں ہٹے ۔ ہمیشہ جدوجہد کے پس منظر سے انہوں نے خود کو آگے بڑھایا ہے۔ اس موقع پر سابق رکن اسمبلی وائی ایس وی دتہ نے خطاب کرتے ہوئے لوک نائک تحریک کے مختلف پہلوؤں کو اجاگر کیا ،اور کہا کہ اس تحریک کی ضرورت آج پہلے سے زیادہ ہے۔ انہوں نے کہاکہ آج سیاسی پارٹیوں کا مقصد صرف اقتدار حاصل کرنا اور اراکین اسمبلی کا مقصد صرف وزارت حاصل کرنے تک محدود ہوکر رہ گیا ہے۔اس سے ہٹ کر عوام کی خدمت کے جذبے کے ساتھ کام کرنے کی ضرورت ہے۔ سینئر صحافی سگاتا سرینواس نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آج کے بزرگ سیاستدانوں کو ایسی روش اپنانی چاہئے جو آنے والی نسل کے لئے آسانی مہیا کراسکے۔ موجودہ بدنظمی کو دور کرنے میں بزرگ سیاست دانوں کا کلیدی کردار ضروری ہے۔ اس موقع پر بزرگ مجاہد آزادی ایچ ایس دورے سوامی اینگار کو سال رواں کے جئے پرکاش نارائن ایوارڈ سے سرفراز کیاگیا۔ اس موقع پر چتراکلا پریشد کے صدر بی ایل شنکر ، رکن کونسل شرونا اور دیگر موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی وزارت سے مہیش کا استعفیٰ منظور

پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات میں کانگریس اور بی ایس پی کے درمیان مفاہمت کی کوشش ناکام ہوجانے کے نتیجے میں ریاستی کابینہ سے استعفیٰ دینے والے بی ایس پی کے وزیر این مہیش کو استعفیٰ واپس لینے کے لئے منانے میں جے ڈی ایس قیادت کی کوشش ناکام ہوجانے کے بعد آج وزیراعلیٰ نے مہیش کا ...

ای اسٹامپ پیپر اب آن لائن دستیاب ہوگا

کسی طرح کے دستاویزات تیار کرنے کے لئے درکار ای اسٹامپ کاغذ کی دستیابی اب تک ایک بہت بڑا مسئلہ ہوا کرتی تھی، 100 روپے کے اسٹامپ پیپر کے لئے بھی بھاری رقم ادا کرکے اسے حاصل کرنا پڑتا تھا،

دیوے گوڈا سدرامیا اور ڈی کے شیوکمار ایک ساتھ انتخابی مہم چلائیں گے

سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڈا نے طے کیا ہے کہ تین لوک سبھا اور دو اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات کے مرحلے میں وہ اپنے دو کٹر سیاسی حریفوں سابق وزیراعلیٰ سدرامیا اور ریاستی وزیر آبی وسائل ڈی کے شیوکمار کے ہمراہ ایک ساتھ انتخابی مہم میں حصہ لیں گے۔