سونو نگم نے بال منڈوا کر چیلنج کو کیا قبول،کہا،کسی مذہب کے خلاف نہیں ہوں

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th April 2017, 6:06 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی19اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) مسجد کے باہر لاؤڈ اسپیکرزمعاملہ میں سنگر سونو نگم نے بدھ کو پریس کانفرنس سے خطاب کیا۔ اس کے بعد سونو نے سر بھی منڈوایا۔ بتا دیں کہ مغربی بنگال مائناریٹری یونائیٹڈ کونسل کے وائس پریسیڈنٹ سیدشاہ قادری نے سونو نگم کے خلاف چیلنج کیاتھااور کہا تھا کہ جو شخص سونو نگم کو گنجا کرے گا اور پرانے جوتے کی مالا پہنائے گا،اس کو 10 لاکھ روپے کا انعام دیا جائے گا۔یعنی خودسے ہی سونونگم نے ایک ہی چیلنج کوقبول کیا۔سیدشاہ قادری نے باقی مطالبے پوراکرنے کابھی مطالبہ کردیا۔پریس کانفرنس میں سونونے کہا کہ راستے میں جو جشن ہوتے ہیں، وہ لوگ داداگیری کرتے ہیں، ناچتے ہیں۔ ایسا کرنے سے پولیس کی تکلیف ہوجاتی ہے۔ سونو نگم بولے کہ لوگ مذہب کے نام پر شراب پیتے ہیں، فلمی گانے بجاتے ہیں۔سونو نے اپنے بیان پرکہاکہ آپ کو دانشور سمجھ کر میری بات کو اچھی طرح پیش کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ اپنے بچوں کو اچھا ماحول دیجئے۔اگرمیں کہہ رہا ہوں آپ کو یہ اس طرح کیوں لے رہے ہیں۔ سونونے کہا کہ نہ میں سیکولر ہوں اور نہ ہی میں نے دایاں ونگ ہوں نہ لیفٹ ونگ۔سونو نے کہا کہ میں بغیر پلان کئے کہہ رہا ہوں، کوئی غلطی ہے تو معاف کیجئے گا۔ میں نے ایک سوشل ٹاپک پر بات کر رہا ہوں، اس سے مذہب کا کوئی لینا دینا نہیں ہے۔ سونو نے کہا کہ یہ وہی ہے جس کا ذکر میں کر رہا تھا۔ میں نے عالم کو بلایا ہے۔ یہ کوئی چیلنج نہیں ہے، انہوں نے کہا کہ یہ بال جو دیکھ رہے ہیں میں کاٹ دوں گا۔ انہوں نے کہا کہ نہ میں ہندو ہوں، نہ مسلم، میں سب میں یقین کرتا ہوں۔ وہ بولے کہ میں اجمیر میں بھی گیا تھا، پشکر مندر بھی گیا تھا۔ اگر کسی میں دم ہے تو ایسی باتوں پر بول کر دکھائیں۔انہوں نے کہا کہ کیا میرے مسئلہ اٹھانے میں کہیں غلطی ہو گئی، کیا میری ٹائمنگ غلط ہو گئی؟۔ انہوں نے کہاکہ کیا یہ صحیح وقت نہیں تھا، یوگی کی حکومت آنے سے اس کا کیا تعلق ہے؟ سونونے کہا کہ میں نے یہ مسئلہ پکڑا ہے، باقی مسائل کو تمہیں پکڑنا ہے۔آج تک کے سوال پر سونو بولے کہ مجھے نہیں پتہ کہ مسجد کہاں ہیں، اس میں کوئی بھی حقیقت نہیں ہے کہ میں کسی کو پریشان کر رہا تھا۔سونو نے کہا کہ میں ایک بات واضح کرنا چاہتا ہوں، کچھ لوگوں نے کہا کہ محمد کیوں لکھا، محمد صاحب کیوں نہیں کہا۔ یہ انگلش کامسئلہ ہے۔ شیو کو انگلش میں شیوا، رام کو راما کہا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جیسے کسی مسلمان کی زبان میں لارڈ یسوع نہیں آرہاہے۔ سونونے کہاکہ اگر یہ کسی نے مسئلہ بنایا ہے، یہ میرا مقصد نہیں تھا کہ نبی کی مذمت کروں۔ ٹوئٹر میں انسان سوچ سمجھ کرچھوٹاچھوٹا لکھتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

سورت ریپ قتل کیس:13دن بعد 3ملزم حراست میں

گجرات کے سورت میں 13 دن پہلے 11سال کی ایک بچی کی آبروریزی کے بعد قتل کئے جانے کا معاملہ سلجھا لیا گیا ہے۔ احمد آباد کرائم برانچ نے اس معاملے میں 3 افراد کو حراست میں لیا ہے۔

یوپی:باندہ میں آبروریزی کے جرم میں سات سال کی قید

یوپی میں باندہ کی ایک عدالت نے آبروریزی کے جرم میں ایک شخص کو سات برس کی قید اور جرمانے کی سزا سنائی ہے۔استغاثہ کے مطابق بدوسہ علاقہ کے ایک گاؤں کی رہنے والی خاتون 24نومبر 2015کو اپنے گھر میں سو رہی تھی۔

آندھرا کوخصوصی ریاست کا درجہ دلانے کے لیے چندر بابو نائیڈوبھوک ہڑتال پر بیٹھے

آندھرا پردیش کے وزیر اعلی این چندرا بابو نائیڈو مرکزی حکومت کے ذریعہ ریاست کو خاص درجہ (ایس سی ایس ) نہیں دئے جانے کے خلاف آج یہاں آئی جی ایم اسٹیڈیم میں دھرم پورتا گیلری میں ایک روز ہ بھوک ہڑتال پر بیٹھے ۔

امیت شاہ کا باربار دورہ ،ریاست نہیں سیاست کیلئے بی جے پی صدر کو کرناٹک کے بارے میں معلومات ہی نہیں : کے جے جارج

بنگلورو ترقیات وزیر کے جے جارج نے کہاکہ بھارتیہ جنتاپارٹی( بی جے پی) کے قومی صدر امیت شاہ باربار کرناٹک کاجودورہ کرنے لگے ہیں وہ ریاست سے محبت اورلگاؤنہیں بلکہ جھوٹی سیاست کرنے کے مقصد سے آرہے ہیں۔

یوپی:باندہ میں آبروریزی کے جرم میں سات سال کی قید

یوپی میں باندہ کی ایک عدالت نے آبروریزی کے جرم میں ایک شخص کو سات برس کی قید اور جرمانے کی سزا سنائی ہے۔استغاثہ کے مطابق بدوسہ علاقہ کے ایک گاؤں کی رہنے والی خاتون 24نومبر 2015کو اپنے گھر میں سو رہی تھی۔

کیرالہ:کٹھوعہ ریپ کیس پر کارٹون بنانے والی درگا ملاٹھی کے گھر پر ہوئی پتھر بازی

کیرالہ کے پلکڑ کی رہائشی آرٹسٹ درگا ملاٹھی کے گھر میں کچھ نامعلوم افراد کے پتھر پھینکنے کا واقعہ سامنے آیا ہے۔رپورٹس کے مطابق درگا نے کٹھوا ریپ کیس معاملے میں دو قابل اعتراض پینٹنگ بنا کر ہندو دیوی دیوتاؤں کو اس واقعہ کے لئے ذمہ دار بتایا تھا۔اس سے پہلے فیس بک پر بھی درگا کو ...

بھٹکل: ایل ایس نائک نے لگایا کانگریس پر نظر اندازی کا الزام :پریس کانفرنس کے فوری بعد یوٹرن

گذشتہ کئی سالوں سے ہم لوگ کانگریس کے وفادار سپاہی کی طرف پارٹی استحکام میں جٹے ہوئے ہیں مگر حالیہ دنوں میں ہمیں نظر انداز کرتے ہوئے کام کئے جانے کا تعلقہ پنچایت سابق صدر ایل ایس نائک نے الزام لگایا ہے۔