جے ڈی یوممبران پارلیمنٹ نے نائب صدر سے ملاقات کی، پارلیمانی پارٹی کے لیڈر کے عہدے سے شرد یادو کو ہٹانے کے لیے سونپا خط،آرسی پی سنگھ نئے لیڈر

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th August 2017, 11:34 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،12؍اگست(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) جے ڈی یوکے بہار میں بی جے پی کے ساتھ مل کر حکومت بنانے کے بعد جس طرح سے شرد یادو بغاوت کے راستے چل رہے ہیں اس سے صاف پتہ چل رہاہے کہ ان کے خلاف کسی بھی وقت کارروائی کی جا سکتی ہے۔ اسی کڑی میں آج جے ڈی یو کے سات راجیہ سبھا، دو لوک سبھا ممبران پارلیمنٹ اور قومی جنرل سکریٹری سنجے جھا نے صبح دس بجے نائب صدر ایم وینکیا نائیڈو سے ملاقات کر کے پارٹی کی جانب سے سونپا ہے جس میں شرد یادو کی جگہ راجیہ سبھا میں آرسی پی سنگھ کو لیڈر بنائے جانے کی بات ہے۔ اس طرح شرد یادو کی راجیہ سبھا میں لیڈر کے عہدے سے چھٹی کر دی گئی ہے۔ آپ کو بتا دیں کہ راجیہ سبھا میں جے ڈی یو کے دس ممبران پارلیمنٹ ہیں ان میں علی انور معطل کئے جا چکے ہیں۔ کیرالہ کے پی وریندر کمار بی جے پی سے اتحاد کرنے کے نتیش کمار کے فیصلے سے خود کو الگ کر چکے ہیں۔غور طلب ہے کہ شرد یادو اس وقت نتیش کے این ڈی اے میں شامل ہونے کے فیصلے کے خلاف بہار میں سفر کر رہے ہیں اور ریلیوں میں نتیش کے فیصلے کو دھوکہ بتانے سے نہیں گزر نہیں کررہے ہیں۔ اگرچہ جے ڈی یو کی جانب سے انہیں19 اگست کو قومی مجلس عاملہ کی میٹنگ میں بلایا گیا ہے تاکہ وہ اپنا موقف رکھ سکیں۔ اگروہ قومی مجلس عاملہ میں نہیں آتے ہیں توپارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی کی نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کا اثر گجرات انتخابات کے نتائج میں نظر آئے گا: اکھلیش یادو 

سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی وجہ سے تاجروں پر کافی برا اثر پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسان مخالف اور تاجر مخالف پالیسیوں کی وجہ سے بی جے پی کا گراف نیچے آتا جا رہا ہے۔

گجرات میں سات انتخابات میں دو بار ووٹنگ کے فیصدی میں کمی، دونوں بار بی جے پی کو نقصان تو کانگریس کا فائدہ 

گجرات میں ہفتہ کو پہلے مرحلہ میں19ضلعوں میں کی89نشستوں پرتقریباً 68فیصدی ووٹنگ ہوئی اس بار 2012کے اسمبلی انتخابات سے تقریباً 3فیصدی ووٹنگ ہوئی۔ 2012 میں پہلے مرحلے میں19 میں سے15 اضلاع میں ووٹنگ ہوئی تھی۔

خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ ہوئی چھیڑ خانی کو بتایا انتہائی شرمناک فعل 

قومی خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ شرمناک حادثہ قرار دیا ہے ۔زائرہ وسیم نے سوشل میڈیا کے ذریعے وستارا ایئر لائنزکی فلائٹ سے دہلی سے ممبئی جانے والی پرواز میں جس طرح ہراساں کیے جانے کی بات کہی ہے وہ بھارتی تہذیب و ثقافت کے شرم کی بات ہے ۔