سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوث77 ملزمان گرفتار;زیرحراست مشتبہ شدت پسندوں کا تعلق نو مختلف ملکوں سے ہے

Source: S.O. News Service | Published on 6th April 2017, 5:10 PM | خلیجی خبریں |

ریاض،6اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)سعودی عرب میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ فورسز نے ماہ جمادی الاخر میں دہشت گردی میں ملوث مقامی باشندوں سمیت مجموعی طور پر 77 افراد کو حراست میں لیا ہے۔گرفتار افراد میں ایک کی شہریت کی شناخت نہیں ہوسکی۔ 53 کا تعلق سعودی عرب ہی سے ہے جب کہ باقی 24 مختلف ملکوں سے تعلق رکھتے ہیں۔سعودی پولیس کیمطابق گرفتار مشتبہ دہشت گردوں میں 16 کا تعلق ترکی سے ہے۔ اس کیعلاوہ دو شامی شہری جب کہ بنگلہ دیش، مصر، بھارت، نائجیریا، نیپال اور کویت سے تعلق رکھنے والا ایک ایک شخص شامل ہے۔سعودی عرب میں دہشت گردی کی فہرست میں تین ترک باشندوں کا نام شامل ہے۔ وہ گذشتہ برس مملکت میں داخل ہوئے۔ ان میں سے ایک سے تفتیش جاری ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

ولی عہد دبئی کی جانب سے’فٹ نس چیلنج‘ میں شرکت کی دعوت

متحدہ عرب امارات کی قیادت بڑے بڑے چیلنجز کا خود مقابلہ کرنے کے ساتھ مملکت کے عوام اور امارات میں مقیم شہریوں کو نئے چیلنجز کا مقابلہ کرنے اور انہیں زندگی کے ہرشعبے میں آگے نکلنے کی صلاحیت پیدا کرنے کے لیے کوشاں ہے۔

اخوانی پروفیسروں پر سعودی یونیورسٹیوں کے دروازے بند،اخوانی نظریات سے دہشت گرد پیدا ہو رہے ہیں: ڈاکٹر سلیمان ابا الخلیل

سعودی عرب کی ایک بڑی دینی درس گاہ جامعہ الامام کے ڈائریکٹر اور سپریم علماء کونسل کے رکن ڈاکٹر سلیمان ابا الخلیل نے کہا ہے کہ یونیورسٹی نے اخوان المسلمون کے افکار سے متاثر تمام شخصیات سے معاہدے ختم کردیے ہیں۔

ولی عہد کا فلاحی تنظیموں کو 50 لاکھ ریال کا عطیہ

سعودی عرب کے ولی عہد، نائب وزیراعظم اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز نے اپنے ذاتی جیب سے حائل کے علاقے میں فلاحی شعبے میں سرگرم تنظیموں کو پچاس لاکھ ریال کی رقم عطیہ کی ہے۔