دفعہ 35 اے پرکوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا، بی جے پی بوکھلاہٹ کی شکار ہے: نیشنل کانفرنس

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 17th November 2018, 12:57 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

سری نگر:17نومبر (ایس او نیوز) نیشنل کانفرنس نے بی جے پی لیڈراور وزیر اعظم دفتر میں وزیر مملکت ڈاکٹر جتیندر سنگھ کے اس بیان کو یکسر مسترد کیا ہے، جس میں انہوں نے نیشنل کانفرنس سے35 اے پریوٹرن کی وضاحت طلب کی ہے۔

پارٹی کے صوبائی صدرناصراسلم وانی نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ حالیہ بلدیاتی انتخابات میں منہ کی کھانے کے بعد بی جے پی لیڈرشپ مکمل طورپربوکھلاہٹ کی شکار ہوگئی ہےاوراپنی ناکامیوں کو چھپانے کےلئے آئے روزمن گھڑت اورفریبی بیان بازی کررہے ہیں. انہوں نے کہا کہ نیشنل کانفرنس کسی بھی صورت میں 35 اے پرکوئی سمجھوتہ کرنے کےلئے تیارنہیں۔

انہوں نے کہا کہ نیشنل کانفرنس نے گذشتہ سماعت کے دوران ریاستی حکومت کے وکلاء کی طرف غلط پیروی کرنےکے بعد ریاست کے گورنرستیہ پال ملک کوایک میمورنڈم کے ذریعے اس بات کی درخواست کی ہے کہ سپریم کورٹ میں اس وقت تک سماعت ملتوی کرنے کی استدعا کی جائے، جب تک نہ ریاست میں ایک عوامی حکومت قائم ہوجائے، جس پر گورنر صاحب نے حامی بھی بھرلی۔

ناصر اسلم وانی نے کہا کہ دفعہ35 اے کا دفاع ریاست کی عوامی منتخبہ حکومت کرے گی اوراس کی گونج پارلیمنٹ میں بھی اٹھے گی۔ انہوں نے کہا کہ اگرہم الیکشن کے بائیکاٹ کا اعلان بھی کریں گے، پھربھی عوام ہمیں انتخابات میں حصہ لینے کے لئے مجبورکریں گے، کیونکہ ریاستی عوام نے بی جے پی اس کی مقامی شاخوں اورحواریوں کےعزائم کو بخوبی بانپ لیا ہے۔عوام یہ بھی جان گئے ہیں کہ انتخابات میں نیشنل کانفرنس اوردیگر مقامی جماعتوں کی عدم شرکت سے کسی طرح بی جے پی اوراس کے حواری کشمیرمیں داخل ہونے کی کوشش کررہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم ریاست کے تشخص اورخصوصی پوزیشن کے دفاع کے لئے الیکشن لڑیں گے، جس کی حمایت ریاست کے ہرکونےسے لوگوں نے کی ہے۔

ناصراسلم وانی نے کہا کہ جتیندرسنگھ کے بیان سے بی جے پی اوراس کے حواریوں کی پریشانیاں صاف جھلک رہی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ نیشنل کانفرنس اوردیگرمقامی جماعتوں کی عدم شرکت اورکانگریس کے کمزورمقابلے کے باوجود بی جے پی ریاست میں حال ہی اختتام پذیر بلدیاتی انتخابات میں کچھ خاص نہ کرپائی اور بی جے پی کواب یہ بات ستا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جتیندرسنگھ کو یہ بات ذہن نشین کر لینی چاہئے کہ آئندہ آنے والے الیکشن بلدیاتی اور پنچایتی انتخابات کی طرح یکطرفہ مقابلہ نہیں ہوں گے اور ہم بی جے پی کو اسمبلی میں آسان راہ داری فراہم نہیں کریں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

سرمائی سیشن میں رافیل اور آر بی آئی کی خودمختاری کامسئلہ اٹھایاجائے گا:غلام نبی آزاد

کانگریس کے سینئر لیڈر غلام نبی آزاد نے پیر کو کہا کہ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں رافیل طیارے سودے کی تحقیقات کے لئے مشترکہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی)کے قیام کا مطالبہ اور ریزرو بینک کی خود مختاری اور جانچ ایجنسیوں کے مبینہ غلط استعمال سمیت کئی دیگر مسائل اٹھائے جائیں گے ۔

مودی حکومت غیر قانونی طریقے سے سوچھ توانائی کے پیسے کوکہیں اورلگارہی ہے: سیتا رام یچوری

کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم)کے سیکریٹری جنرل سیتا رام یچوری نے پیر کو الزام لگایا کہ مرکز کی بی جے پی حکومت ریاستوں کو جی ایس ٹی میں ان کے حصے کی ادائیگی کے لئے سوچھ توانائی فنڈ کی رقم غیر قانونی طور پر استعمال کر رہی ہے۔

اقلیتی تعلیمی پروگرام میں آندھرا پولیس کے ذریعہ زیادتی کی پاپولر فرنٹ نے کی مذمت

پاپولر فرنٹ آف انڈیا کے جنرل سکریٹری ایم محمد علی جناح نے آندھرا پردیش میں پاپولر فرنٹ کے ایک تقسیمِ اسکالرشپ پروگرام میں کچھ پولیس افسران کی خلل اندازی اور جھوٹے الزامات میں تنظیم کے زونل سکریٹری و دیگر ضلعی لیڈران کی من مانی گرفتاری اور انہیں زدوکوب کرنے کے طریقے کی سخت ...

کاروار : نجومی اور جوتشی سے اپنے مستقبل کو معلوم کرنے کے بجائے اپنی سوچ وفکر کو بدلیں  : کروالی اتسوا میں کرشماتی ماہر ڈاکٹر ہولیکل نٹراج  

دنیا میں فریب،دھوکہ عام بات ہے مگر دھوکہ کے جال میں پھنسنا بڑی بےو قوفی اور غلط بات ہے۔ گھر توڑ کر واستو(توہم پرستی کے چلتے گھر کے دروازے اور کھڑکیوں کے رخ کو متعین کرنےو الا نجوم ) صحیح کرنے کے بجائے اپنی ذہنی سوچ وخیال کو بدل لیجئے۔ کرشموں کا کچا چٹھا نکالنےمیں ماہر ڈاکٹر ...