مبینہ اشتعال انگیز مقرر چکرورتی سولی بیلے کی بھٹکل آمد پر ایس ڈی پی آئی نے کی سخت مخالفت؛ پولس محکمہ کو دیا میمورنڈم

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 30th September 2018, 4:31 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل یکم اکتوبر (ایس او نیوز)  مُبینہ اشتعال انگیز مقرر چکرورتی سولی بیلے کی بھٹکل میں منعقدہ پروگرام میں آمد کو لے کر سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا نے  سخت مخالفت کرتے ہوئے بھٹکل محکمہ پولس کو میمورنڈم پیش کیا ہے۔

بھٹکل ٹائون پولس تھانہ کے باہر ڈی وائی ایس پی کے نام دئے گئے میمورنڈم کو بھٹکل پی ایس آئی نے وصول کیا، اس موقع پر ایس ڈی پی آئی کے ضلعی صدر محمد توفیق بیری نے   متنبہ کیا کہ چکرورتی سولی بیلے اگر بھٹکل میں آکر اشتعال انگیز خطاب کرتا ہے اور شہر کے عوام کو فساد کے لئے اُکساتا ہے تو پھر شہر کے پرامن فضا میں تشدد رونما ہونے کی صورت میں پولس اور ضلعی انتظامیہ ذمہ دار ہوگی۔ انہوں نے پولس حکام سے مطالبہ کیا کہ اُسے بھٹکل میں آنے سے روکا جائے اور بھٹکل کے امن و امان کی فضا کو بگاڑنے کی کسی  بھی طرح کی کوشش کو کامیاب نہ ہونے دیا جائے۔ 

میمورنڈم میں واضح کیا گیا ہے کہ مسلمانوں کے خلاف اور دو مذاہب کے درمیان زہر کے بیج بونے میں بدنام  اشتعال انگیز مقرر چکرورتی سولے بیلے یکم اکتوبر کو بھٹکل میں  منعقد ہونے والے پروگرام میں شریک ہونے کے لئے آرہا ہے،  پولس کے لئے ضروری ہے کہ اس کے خلاف  اشتعال انگیز بھاشن دینے کی صورت میں سخت قانونی کاروائی کی جائے، اگر پولس اس کے خلاف کاروائی نہیں کرتی تو  پھر آگے جو کچھ بھی ہوگا اُس کے لئے پولس  محکمہ اور ضلعی انتظامیہ ذمہ دار ہوگی۔

میمورنڈم پیش کرنے کے موقع پر ایس ڈی پی آئی کے اسمبلی صدر وسیم منیگار، جنرل سکریٹری محمد سفیان، ضلعی کونسل ممبر عبدالعظیم،  محمد ثاقب اور  محمد طیب موجود تھے۔

خیال رہے کہ سوامی وویکانند کے چکاگو بھاشن کے 125سال  مکمل ہونے کی یاد میں  ’’ پھر ایک بار بڑی فتح ‘‘   کے نام سے ایک ریلی نکالی گئی ہے جو   یکم اکتوبر کو بھٹکل پہنچے گی۔ اس موقع پر   یکم اکتوبر کی صبح 30-08بجے رتھ یاترا ،  پھول بازار، ماری کٹہ ، اولڈ بس اسٹانڈ اور شمس الدین سرکل سے ہوتے ہوئے گروسدھیندرا کالج میدان پہنچے گی، جہاں یوا  برگیڈ کے رہنما چکرورتی سولی بیلے کا کلیدی  خطاب ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

ایران میں گرفتار اُترکنڑا کے ماہی گیروں کی فوری رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کرناٹکا این آر آئی فورم کا دبئی میں ہندوستانی سفارت کار سے ملاقات

  ریاست کرناٹک کے ضلع اُترکنڑا کے 18 ماہی گیروں کی ایران میں گرفتاری کے بعد اُن کی رہائی کی کوششیں تیز ہوگئی ہیں۔ اس تعلق سے تازہ اطلاع یہ ہے کہ  دبئی میں موجود ماہی گیروں کے رشتہ داروں نے  کرناٹکا این آر فورم کے  اہم ذمہ دار اور قائد قوم جناب ایس ایم سید خلیل الرحمن صاحب سے ...

ریاستی وزارت سے مہیش کا استعفیٰ منظور

پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات میں کانگریس اور بی ایس پی کے درمیان مفاہمت کی کوشش ناکام ہوجانے کے نتیجے میں ریاستی کابینہ سے استعفیٰ دینے والے بی ایس پی کے وزیر این مہیش کو استعفیٰ واپس لینے کے لئے منانے میں جے ڈی ایس قیادت کی کوشش ناکام ہوجانے کے بعد آج وزیراعلیٰ نے مہیش کا ...

ای اسٹامپ پیپر اب آن لائن دستیاب ہوگا

کسی طرح کے دستاویزات تیار کرنے کے لئے درکار ای اسٹامپ کاغذ کی دستیابی اب تک ایک بہت بڑا مسئلہ ہوا کرتی تھی، 100 روپے کے اسٹامپ پیپر کے لئے بھی بھاری رقم ادا کرکے اسے حاصل کرنا پڑتا تھا،

ساحلی علاقے میں موسلادھار بارش۔ آسمانی بجلیوں سے نقصانات

ساحلی علاقے میں اور خاص کر جنوبی کینرا ضلع میں اتوار کی شام سے رات دیر گئے تک زبردست بارش ہوئی ہے۔ بادلوں کی گھن گرج کے ساتھ بجلیوں کے کڑکنے کا سلسلہ بھی جاری رہا اور بعض مقامات پر بجلی گرنے سے گھروں کونقصان پہنچنے کی اطلاعات بھی ملی ہیں۔

بھٹکل میں زائد منافع کالالچ دے کر 100کروڑ سے زائد رقم کی دھوکہ دہی کا الزام : کمپنی مالکان کے گھروں کا گھیراؤ اور احتجاج

شہر کے آزاد نگر میں واقع فلالیس نامی کمپنی کے مالکان  پر سو کروڑ سے زائد رقم لے کر فرار ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے  سینکڑوں لوگوں نے آج اُن  کے مکانوں  کا گھیراو کیا اور اپنی رقم واپس دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے احتجاج کیا۔  احتجاجیوں کا کہنا تھا کہ   فلالیس نامی جعلی کمپنی ...