اخوان المسلمون سے تعلق، سعودی یونیورسٹی کے متعدد ملازمین برطرف

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 22nd September 2017, 12:50 AM | خلیجی خبریں |

ریاض،21ستمبر(آئی این ایس انڈیا؍ایس او نیوز)سعودی حکام نے ملک کی ایک اہم جامعہ کے متعدد ملازمین کو اخوان المسلمون سے تعلق کے شبے میں برطرف کر دیا ہے۔ اخوان المسلون سعودی عرب میں کالعدم جماعتوں کی فہرست میں شامل ہے۔ بتایا گیا ہے کہ برطرف کیے جانے والے افراد میں مسلم رہنما، دانشور اور دیگر شامل ہیں۔ ہیومن رائٹس واچ کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ جامعہ کے ملازمین کے خلاف ایک منظم انداز سے کریک ڈاؤن گزشتہ دس روز سے جاری ہے۔ برطرف کیے جانے والے ملازمین کی تعداد تیس تک بتائی جا رہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ایرانیوں کا پیغام واضح ہے، وہ نظام کی تبدیلی چاہتے ہیں : شہزادہ رضا پہلوی

سابق شاہ ایران کے بیٹے شہزادہ رضا پہلوی نے ایران میں مظاہروں کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے باور کرایا ہے کہ ایرانی عوام 40 برس تک مذہبی آمریت کے نظام کے تحت زندگی گزارنے کے بعد اس بات پر قائل ہو چکے ہیں کہ اس نظام کی اصلاح ممکن نہیں۔

اب سو فیصد ڈیجیٹل حج؛ آن لائن اور ایپ کے ذریعے3.60 لاکھ درخواستیں موصول؛ سعودی میں مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کا بیان

امسال سے حج سو فی صد  دیجٹل  ہوگا اور لوگوں کے ابآن لائن اور موبائل ایپ کے ذریعے درخواستیں موصول کئے جارہے ہیں، اب تک  آن لائن  اور موبائیل ایپ کے ذریعہ تین لاکھ  60 ہزار درخواستیں  حج کمیٹی کو موصول ہوچکی  ہیں۔  ہمارا حج کوٹہ پچھلے سال کی طرح امسال بھی پرایویٹ ٹور اپریٹرس ...