کیا سعودی شہزادہ عبدالعزیز بن فہدزندہ ہیں ؟ میڈیا میں دوسرے شہزادے کی موت کی خبر گردش کرنے کے بعد سعودی حکومت کی تردید

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 8th November 2017, 12:15 AM | خلیجی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

دبئی 7/نومبر (ایس او نیوز/ایجنسی)  سعودی عرب میں شہزادہ منصور بن مقرن کے جاں بحق ہونے کے بعد 24 گھنٹوں کے اندر  ایک اور شہزادے کی موت کی اطلاعات میڈیا میں وائرل ہوگئی تھیں، مگر سعودی وزارت انفارمیشن  نے اس خبر کو غلط بتایا ہے اور  کہا ہے کہ وہ زندہ ہیں اور بالکل ٹھیک ہیں۔

 44 سالہ شہزادہ عبدالعزیز سعودی عرب کے مرحوم بادشاہ شاہ فہد کے سب سے چھوٹے بیٹے ہیں۔ اخبارات اور دیگر ذرائع میں خبر چھپی تھی کہ  انہیں گرفتاری میں مزاحمت کے دوران گولی لگی ہے، بتایا گیا تھا کہ   سعودی عرب میں 24 گھنٹوں کے دورران دوسرا شہزادہ  جان کی بازی ہار گیا ہے، میڈیارپورٹس میںسعودی رائل کورٹ کی جانب سے  شہزادہ عبد العزیز کی موت کی تصدیق  بھی کر دی گئی تھی، مگر اب سعودی حکومت کی جانب سے اس خبر کی تردید کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ وہ زندہ ہیں اور شہزادہ عبدالعزیز کے مرنے کی  خبر میں کوئی سچائی نہیں ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز سابق ولی عہد شہزادہ مقرن کے بیٹے منصور سمیت 8 افراد ہیلی کاپٹر حادثے میں جاں بحق ہوگئے تھے۔جبکہ تین  روز قبل سعودی عرب کی اینٹی کرپشن کمیٹی نے 11 شہزادوں، 4 موجودہ وزرا سمیت 38 سے زائد افراد کو گرفتار کیا تھا،جس میں سعودی عرب کے امیر ترین شہزادے ولید بن طلال بھی شامل ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

سعودیہ میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن میں سب سے زیادہ تعداد پاکستانیوں کی نکلی

سعودی عرب کی وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے واضح کیا ہے کہ اقامہ و محنت قوانین اور سرحدی سلامتی کے ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والے 140 مما لک کے 758570 غیر ملکیوں نے شاہی مہلت سے فائدہ اٹھایا۔

چین علاقائی بے یقینی کے تناظر میں سعودی عرب کے ساتھ ہے:صدر ڑی جن پنگ

چین، سعودی عرب میں بڑے پیمانے پر ترقی کے عمل اور قومی سالمیت کی کوششوں کی مکمل حمایت کرتا ہے۔ علاقائی سطح پر سعودی عرب، ایران، لبنان اور یمن میں کشیدگی کے تناظر میں یہ یقین دہانی چینی صدر ڑی جن پنگ نے سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کو گذشتہ روز ٹیلی فون پر کرائی۔

بھٹکل کے قریب مرڈیشور ہائی وے پر لاری نے دی اسکوٹی کو ٹکر؛ خاتون پولس کانسٹیبل کی موقع پر موت

یہاں مرڈیشور نیشنل ہائی وے پر ایک تیز رفتاری کی زد میں آکر ایک خاتون پولس کانسٹیبل کی موقع پر ہی موت واقع ہوگئی جس کی شناخت مرادُولا اچاری (37) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔وہ مرڈیشور پولس تھانہ میں اپنی خدمات انجام دے رہی تھی۔