آرامکو کے عالمی کمپنیوں سے 4.5 ارب ڈالر کے معاہدے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th November 2017, 4:43 PM | خلیجی خبریں |

ریاض10نومبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)سعودی عرب کی سرکاری پٹرولیم کمپنی ’آرامکو‘ نے متعدد عالمی فرموں کے ساتھ باہمی تعاون اور شراکت کے معاہدوں کی منظوری دی ہے۔ ان میں سے زیادہ تر گیس کی کمپنیاں شامل ہیں۔’آرامکو‘ کمپنی کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ کمپنی نے متعدد عالمی کمپنیوں کے ساتھ باہمی شراکت کے معاہدوں پر دستخط کیے ہیں۔ ان میں گیس اور خوردنی تیل کی کمپنیاں بھی شامل ہیں۔ نئے معاہدوں کی مالیت چار اعشاریہ پانچ ارب ڈال ہے۔ ان معاہدوں کا مقصد عالمی سطح پر ارامکو کے نیٹ ورک کو توسیع دینے کے ساتھ ساتھ سعودی عرب کی گیس اور خوردنی تیل کی ضروریات پوری کرنے میں معاونت اور توانائی کے متنوع شعبوں آرامکو کا کردار بڑھانا ہے۔ارامکو اور ’ٹیکنیکاس ریونیڈاس’ کے درمیان تین معاہدوں پر دستخط کئے گئے ہیں۔ ان معاہدوں کا مقصد جنوبی کاروباری زون میں گیس کے دباؤ کے پروگرام کو عمل شکل میں لانا ہے۔ نئے معاہدوں کے نتیجے میں حرض اور الحویہ میں گیس کی پیدوار بہتر بنانے میں مدد ملے گی اور آئندہ دس سال تک ان دونوں گیس فیلڈز سے گیس کی پیداوار کی مقدار بڑھائی جائے گی۔اس کے علاوہ آرامکو اور اطالوی کمپنی ’سائبم‘ کے درمیان توانائی کے شعبوں میں تعاون کے ایک نئے معاہدے کی منظوری دی گئی ہے۔ جمعرات کے روز منظور کردہ معاہدوں میں حرض اور الحویہ گیس فیلڈ میں چینی پٹرولیم کمپنی کے ساتھ تیل پائپ لائن منصوبہ شروع کرنے کا معاہدہ بھی شامل ہے۔اسی طرح ’جاکوبس انجینیرنگ‘ کمپنی کے ساتھ انجینیرنگ اور انتظامی نوعیت کے متعدد منصوبوں پر کام کے لیے معاہدے طے پائے ہیں۔ آرامکو اور نیشنل پٹرولیم کنسٹرکشن کمپنی کے درمیان السفانیہ گیس فیلڈ سے گیس پائپ لائن بچھانے اور مڈل ایسٹ ماکڈیرمٹ کمپنی کے ساتھ بجلی کی تقسیم اور برتھوں کے قیام کے معاہدوں کی منظوری دی گئی ہے۔آرامکو کے چیئرمین انجینیر امین حسن الناصر کا کہنا ہے کہ جمعرات کے روز عالمی کمپنیوں کے ساتھ طے پائے معاہدوں کے نتیجے میں سعودی عرب میں گیس کی مقامی پیداوار بڑھانے میں مدد ملے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

سعودیہ میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن میں سب سے زیادہ تعداد پاکستانیوں کی نکلی

سعودی عرب کی وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے واضح کیا ہے کہ اقامہ و محنت قوانین اور سرحدی سلامتی کے ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والے 140 مما لک کے 758570 غیر ملکیوں نے شاہی مہلت سے فائدہ اٹھایا۔

چین علاقائی بے یقینی کے تناظر میں سعودی عرب کے ساتھ ہے:صدر ڑی جن پنگ

چین، سعودی عرب میں بڑے پیمانے پر ترقی کے عمل اور قومی سالمیت کی کوششوں کی مکمل حمایت کرتا ہے۔ علاقائی سطح پر سعودی عرب، ایران، لبنان اور یمن میں کشیدگی کے تناظر میں یہ یقین دہانی چینی صدر ڑی جن پنگ نے سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کو گذشتہ روز ٹیلی فون پر کرائی۔