سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر وطن لوٹنے کے بعدساحلی علاقے میں ICSE اور انگریزی میڈیم اسکولوں میں بڑھ گئے بچوں کے داخلے 

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 22nd July 2018, 8:39 PM | ساحلی خبریں | خلیجی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل 22؍جولائی (ایس او نیوز) سعودی عربیہ میں غیر وطنی باشندوں اور ملازمین کے تعلق سے نئے اور سخت قوانین سے پریشان ہو کر غیر رہائشی ہندوستانیوں کے وطن واپس لوٹنے کے بعد ان کے بچوں کو اسکولوں میں داخل کرانے  کا مسئلہ بھی کافی سنگین ہوگیا ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ ریاست کرناٹک کے کسی بھی اسکول میں داخل  کرنے کی صورت میں کنڑا سبجیکٹ لینا لازمی  ہے۔ جو طلبا پرائمری اسکولوں میں داخلہ لیتے ہیں  تو اُن کے لئے زیادہ مسئلہ نہیں ہوگا، البتہ  ہائی اسکولوں میں داخلہ لینے والے  بچوں کو کنڑا معلوم نہ ہونے سے سنگین مسئلہ پیدا ہوگیا ہے۔

سعودی عربیہ کے شہروں میں  کاروبار یا ملازمت کے سلسلے میں جو ہندوستانی باشندے رہائش پذیر تھے ان میں زیادہ تعداد ساحلی کرناٹکا کی ہے اور اس میں سے ضلع جنوبی کینرا کے بعد بھٹکل  کے افراد کی کثیر تعداد  ہے۔ ایک اندازے کے مطابق ایک سال کے اندر ساحلی علاقوں  کے تقریباً ایک ہزار سے زائد   خاندان اب تک اپنے اپنے شہروں کو واپس ہوئے ہیں۔ سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر بڑی تعداد میں لوگوں کے  لوٹنے کا ایک اثر یہ ہوا ہے کہ ساحلی علاقے کے انگلش میڈیم کے  سی بی ایس سی اور  آئی سی ایس ای  نصاب والے اسکولوں میں طلبہ کے داخلوں میں اضافہ نظر آرہا ہے، وہیں کچھ بچوں نے مدرسوں کا بھی رُخ کیا ہے۔ ایسے میں اس بات کی بھی اطلاع ملی ہے کہ کچھ بچوں نے کنڑا کو ترک کرنے کے لئے گوا کے اسکولوں میں بھی داخلہ لیا ہے۔

بھٹکل کے معروف شمس انگلش میڈیم اسکول کے سکریٹری طلحہ سدی باپا نے بتایا کہ  سعودی عربیہ میں زندگی کی مشکلات سے تنگ آکرجو لوگ وہاں سے اپنے بیوی بچوں کو وطن واپس بھیج رہے ہیں اس کی وجہ سے مقامی اسکولوں میں داخلے بڑھ گئے ہیں۔ حالیہ دنوں میں ہمارے اسکول میں سعودی سے آنے والے  55 طلبا کا داخلہ ہوا ہے۔  انہوں نے بتایا کہ ان کے اسکول میں آئی سی ایس ای نصاب کے تحت تعلیم دی جاتی ہے اور اس نصاب میں  آٹھویں اور نویں میں کنڑا زبان لازمی  ہے، لیکن  میٹرک میں کنڑا ضروری نہیں ہے۔ اسکول کے ٹیچر  محمد رضا مانوی نے بتایا کہ  پرائمری بچوں کو کنڑا پڑھانا کوئی مشکل بات نہیں ہے، مگر   ہائی اسکولوں کے بچوں کو کنڑا سکھانا آسان نہیں ہے، البتہ انہوں نے بتایا کہ اسکول میں بچوں کو کنڑا کی تعلیم دینے  الگ سے کوچنگ کا انتظام کیا گیا ہے۔

کئی سالوں سے سو فیصد کامیابی درج کرنے والے بھٹکل کے نونہال سینٹرل اسکول میں ویسے تو ریاستی نصاب تعلیم  دی جاتی ہے اور کنڑا لازمی ہے، مگر ان سب کے بائوجود یہاں  بیس طلبا نے داخلہ لیا ہے۔ نونہال کی پرنسپل محترمہ  گل آفروز کولا نے بتایا کہ چونکہ سعودی عربیہ سے لوٹ کر آنے والےطلبا کنڑا سے بالکل ناواقف ہیں، لہٰذا اُنہیں کنڑا کے لئے الگ سے کلاسس شروع کئے گئے ہیں ۔

قومی تعلیمی ادارہ انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے  ماتحت  سبھی اسکولوں میں حالانکہ ریاستی نصاب تعلیم  ہے، 21 بچوں نے داخلہ لیا ہے جس میں سات بچے ہائی اسکولوں میں اور 14 پرائمری اسکولوں میں زیر تعلیم ہیں۔ اسی طرح سعودی سے لوٹنے والے  14 طلبا  کالجوں میں بھی داخل ہوئے ہیں۔

انجمن کے ایڈیشنل سکریٹری جناب اسحاق شاہ بندری نے بتایا کہ پرائمری اور ہائی اسکولوں سمیت انجمن کالج  میں بھی بچوں کو کنڑا سکھانے کے لئے خصوصی کوچنگ کا انتظام کیا گیا ہے اور ہر طرح کی سہولیات فراہم کی گئی ہے۔

اسی طرح کی  صورتحال شہر کے دوسرے معروف اور معتبر اسکولوں کی بھی ہے، جہاں سعودی سے واپس لوٹنے والے بچوں نے داخلہ لیا ہے۔  اس بات کی بھی اطلاع ملی ہے کہ سعودی سے لوٹنے والی کچھ لڑکیوں نے جامعات الصالحات میں بھی داخلہ لیا ہے۔

اُدھر مینگلور سے ملی اطلاع کے مطابق اس بار تقریباً 200افراد نے سعودی عربیہ کے اسکولوں سے اپنے بچوں کے ٹرانسفر سرٹفکیٹ نکال لیے ہیں۔ وہ سب وطن واپس لوٹ کر مینگلور  کے نجی اسکولوں میں اپنے بچوں کا داخلہ کروارہے ہیں۔ جس کی وجہ سے مینگلور کے اسکولوں میں بھی این آر آئی طلبہ کی تعداد میں اضافہ ہوجائے گا۔‘‘

منگلورو کے اینا پویا اسکول کے نمائندے نے بتایا کہ حالیہ دنوں میں ہمارے اسکول میں 20سے زائد  این آر آئی طلبہ کا داخلہ ہوا ہے۔‘‘

سعودی عربیہ سے واپس لوٹنے  والے بچوں کو  کنڑا سے ناواقفیت کے تعلق سے  پیش آنے والے  مسئلہ  سے  جب ریاست کے  وزیرتعلیم برائے ثانوی ایم رمیش کو واقف کرایا گیا تو انہوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ   ریاست کے لئے درپیش تعلیمی میدان میں یہ ایک نیا مسئلہ ہے، انہوں نے کہا کہ  میں اس وقت دہلی میں ہوں، پیر کو بنگلور لوٹتے ہی تعلیمی کمشنر سے اس مسئلہ پر گفتگو کروں گا اور متعلقہ اضلاع کی کمیٹیوں کی طرف سے حل ڈھوندھنے کی کوشش کروں گا۔

ایک نظر اس پر بھی

ہندوسماج اتسوا کے بعد کاسرگوڈ میں فرقہ وارانہ تشدد۔ پولیس نے کیا لاٹھی چارج

اتوار کے دن یہاں منعقدہ ہندوسماج اتسوا میں شرکت کے بعدواپس لوٹنے والوں پر سنگ باری کا الزام لگاتے ہوئے شرپسندوں نے مختلف مقامات پرموٹر گاڑیوں پر پتھراؤ شروع کیا جس کے بعد پولیس نے مداخلت کرتے ہوئے لاٹھی چارج کیااور صورتحال پر قابو پالیا۔

بھٹکل انجمن کا طالب العلم میسور میں منعقدہ اسٹیٹ لیول پرتیبھا کارنجی مقابلے میں دوم

میسور میں منعقدہ ریاستی سطح کے پرتیبھا کارنجی اُردو تقریری مقابلہ میں بھٹکل انجمن ہائی اسکول کا طالب العلم  خبیب احمد اکرمی ابن مولانا خواجہ معین اکرمی مدنی دوسرا مقام حاصل کرنے میں کامیاب ہوگیا ہے۔

مینگلور: چار سالہ بچی کے ساتھ جنسی عمل۔عدالت نے دی ملزم کو دس سال قید بامشقت کی سزا

چار سالہ بچی کے ساتھ جنسی عمل کرنے والے ملزم چندرا شیکھر عرف راجیش (۴۹سال)کو سیکنڈ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنس اور پوکسو اسپیشل کورٹ نے دس سال قید بامشقت اور 10ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی ہے۔

خاشقجی کے قتل میں سعودی ولی عہد کے براہِ راست ملوث ہونے کا کوئی ثبوت نہیں: پومپیو

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے ایک بار پھرباور کرایا ہے کہ سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کا صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے ساتھ براہ راست کوئی تعلق نہیں اور انہیں اس کیس میں ملوث کرنے کا کوئی ٹھوس ثبوت نہیں ملا ہے۔امریکی وزیرخارجہ نے خاشقجی قتل کیس کے حوالے سے سعودی ...

شارجہ میں منکی کمیونٹی کی خوبصورت گیٹ ٹو گیدر تقریب؛ کرناٹک کے وزراء نے کی شرکت؛ منکی میں غریبوں کے لئے چالیس مکانات دینے کا اعلان

منکی کمیونٹی (یو اے ای) کی جانب سےگذشتہ روز شارجہ میں اتحاد و ملن کے نام پر   گیٹ ٹو گیدر کی ایک خوبصورت تقریب منعقد کی گئی جس میں کرناٹک کے وزراء نے بھی شرکت کی اور  منکی کے عوام کی کثیر تعداد ایک پلیٹ فارم پر نظر آنے پر نہایت  خوشی کا اظہار کیا۔ پروگرام میں  بچوں سمیت ...

18بیرونی ممالک میں ملازمت کرنے والوں کویکم جنوری سے لازمی طور پر آن لائن رجسٹریشن کرنا ہوگا

بیرونی ممالک میں ملازمت کرنے والوں کے لئے مرکزی حکومت نے ایک نئی شرط لاگو کردی ہے جس کے مطابق یکم جنوری 2019 ؁ء سے امیگریشن چیک ناٹ ریکوائرڈECNRوالا پاسپورٹ رکھنے والے ملازمین کے لئے لازمی ہوگا کہ وہ اپنا آن لائن رجسٹر کروائیں۔

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کی دبئی آمد پر تہنیتی پروگرام؛ پہلے ملک کے اندرونی مسائل حل کرنے کی طرف توجہ ہونی چاہئے؛ گوڈا نے مودی پر کسا طنز

سابق وزیراعظم  ایچ ڈی دیوے گوڈا کی دبئی آمد کے موقع پر کرناٹکا این آر آئی فورم کی جانب سے دبئی میں گذشتہ روز دیوے گوڈا کے لئے تہنیتی پروگرام کا انعقاد کیا گیا جس میں یہ بات بھی بتائی گئی کہ ریاست کرناٹک سے وزیراعظم منتخب ہونے والے دیوے گوڈا واحد شخص ہیں۔ پروگرام میں شال اوڑھ ...

دمام میں کاسرگوڈ کے ایک شخص کی لاش کی تین سال بعد تدفین

دمام سعودی عربیہ میں تین سال قبل انتقال کرگئے پڑوسی تعلقہ  کاسرگوڈ کیرالہ کے حسینار کنہی (۵۷سال) نامی ایک شخص کی لاش کو تین سال بعد دفنایا گیا۔ بتایا جاتا ہے کہ مرحوم حسینار کنہی کے پاسپورٹ پر درج اس کے  ہندوستانی پتے میں کچھ خامیاں تھیں اور پتہ نامکمل تھا اس لئے سعودی پولیس ...

وقف بورڈ انتخابات: دولت سے نہیں اصول وضوابط کے تحت ہوں گے:ضمیراحمدخان

ریاستی وقف بورڈ کے انتخابات جلد کروانے کا کوئی امکان نظر نہیں آتا ۔ پچھلے ڈھائی سال سے اڈمنسٹریٹر کے ذریعہ بورڈ چلایا جارہا ہے ۔وقف قانون کے تحت اتنی دیر تک بورڈ کیلئے اڈمنسٹریٹر مقرر کرنے کی گنجائش ہی نہیں۔

باگلکوٹ شکر کارخانے میں دھماکہ؛ چھ ہلاک؛ کئی زخمی

  کرناٹک کے باگلكوٹ ضلع کے مدھول میں نراني شوگر لمیٹڈ میں بوائلر میں  دھماکہ   ہونے کے نتیجے  میں 6 افراد کی جان چلی گئی، جبکہ نو سالہ بچہ سمیت  آٹھ  لوگ شدید زخمی ہو گئے۔ شکر کا یہ  کارخانہ  نرانی  یونٹ کا حصہ ہے اوریہ  نراني بھائیوں اورسابق بی جے پی وزیر مرگیش  نراني اور ...

کاروار: کائیگا پلانٹ توسیعی منصوبہ۔ عوامی احتجاج کے درمیان افسران نے منعقد کیا عوامی اجلاس

کائیگا جوہری توانائی اسٹیشن میں مزید دو یونٹس کا اضافہ کرنے کے منصوبے پر عوامی رائے جاننے کے لئے سرکاری افسران نے کائیگا ٹاؤن شپ میں اجلاس منعقد کیا جبکہ ٹاؤن شپ سے باہر موجودہ اور سابق اراکین اسمبلی کی قیادت میں سیکڑوں افراد نے توسیعی منصوبے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔

بنگلورومیٹرو برڈج میں خرابی کا نائب وزیراعلیٰ پرمیشور نے معائنہ کیا

شہر کے ایم جی روڈ پر ٹرینٹی سرکل کے قریب ایم جی روڈ بیپنا ہلی میٹرو روٹ کے پلر نمبر 155کے قریب ایک بیم میں دراڑ کا آج نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے معائنہ کیا اور کہاکہ اس سلسلے میں مرمت کا کام جاری ہے۔