سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر وطن لوٹنے کے بعدساحلی علاقے میں ICSE اور انگریزی میڈیم اسکولوں میں بڑھ گئے بچوں کے داخلے 

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 22nd July 2018, 8:39 PM | ساحلی خبریں | خلیجی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل 22؍جولائی (ایس او نیوز) سعودی عربیہ میں غیر وطنی باشندوں اور ملازمین کے تعلق سے نئے اور سخت قوانین سے پریشان ہو کر غیر رہائشی ہندوستانیوں کے وطن واپس لوٹنے کے بعد ان کے بچوں کو اسکولوں میں داخل کرانے  کا مسئلہ بھی کافی سنگین ہوگیا ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ ریاست کرناٹک کے کسی بھی اسکول میں داخل  کرنے کی صورت میں کنڑا سبجیکٹ لینا لازمی  ہے۔ جو طلبا پرائمری اسکولوں میں داخلہ لیتے ہیں  تو اُن کے لئے زیادہ مسئلہ نہیں ہوگا، البتہ  ہائی اسکولوں میں داخلہ لینے والے  بچوں کو کنڑا معلوم نہ ہونے سے سنگین مسئلہ پیدا ہوگیا ہے۔

سعودی عربیہ کے شہروں میں  کاروبار یا ملازمت کے سلسلے میں جو ہندوستانی باشندے رہائش پذیر تھے ان میں زیادہ تعداد ساحلی کرناٹکا کی ہے اور اس میں سے ضلع جنوبی کینرا کے بعد بھٹکل  کے افراد کی کثیر تعداد  ہے۔ ایک اندازے کے مطابق ایک سال کے اندر ساحلی علاقوں  کے تقریباً ایک ہزار سے زائد   خاندان اب تک اپنے اپنے شہروں کو واپس ہوئے ہیں۔ سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر بڑی تعداد میں لوگوں کے  لوٹنے کا ایک اثر یہ ہوا ہے کہ ساحلی علاقے کے انگلش میڈیم کے  سی بی ایس سی اور  آئی سی ایس ای  نصاب والے اسکولوں میں طلبہ کے داخلوں میں اضافہ نظر آرہا ہے، وہیں کچھ بچوں نے مدرسوں کا بھی رُخ کیا ہے۔ ایسے میں اس بات کی بھی اطلاع ملی ہے کہ کچھ بچوں نے کنڑا کو ترک کرنے کے لئے گوا کے اسکولوں میں بھی داخلہ لیا ہے۔

بھٹکل کے معروف شمس انگلش میڈیم اسکول کے سکریٹری طلحہ سدی باپا نے بتایا کہ  سعودی عربیہ میں زندگی کی مشکلات سے تنگ آکرجو لوگ وہاں سے اپنے بیوی بچوں کو وطن واپس بھیج رہے ہیں اس کی وجہ سے مقامی اسکولوں میں داخلے بڑھ گئے ہیں۔ حالیہ دنوں میں ہمارے اسکول میں سعودی سے آنے والے  55 طلبا کا داخلہ ہوا ہے۔  انہوں نے بتایا کہ ان کے اسکول میں آئی سی ایس ای نصاب کے تحت تعلیم دی جاتی ہے اور اس نصاب میں  آٹھویں اور نویں میں کنڑا زبان لازمی  ہے، لیکن  میٹرک میں کنڑا ضروری نہیں ہے۔ اسکول کے ٹیچر  محمد رضا مانوی نے بتایا کہ  پرائمری بچوں کو کنڑا پڑھانا کوئی مشکل بات نہیں ہے، مگر   ہائی اسکولوں کے بچوں کو کنڑا سکھانا آسان نہیں ہے، البتہ انہوں نے بتایا کہ اسکول میں بچوں کو کنڑا کی تعلیم دینے  الگ سے کوچنگ کا انتظام کیا گیا ہے۔

کئی سالوں سے سو فیصد کامیابی درج کرنے والے بھٹکل کے نونہال سینٹرل اسکول میں ویسے تو ریاستی نصاب تعلیم  دی جاتی ہے اور کنڑا لازمی ہے، مگر ان سب کے بائوجود یہاں  بیس طلبا نے داخلہ لیا ہے۔ نونہال کی پرنسپل محترمہ  گل آفروز کولا نے بتایا کہ چونکہ سعودی عربیہ سے لوٹ کر آنے والےطلبا کنڑا سے بالکل ناواقف ہیں، لہٰذا اُنہیں کنڑا کے لئے الگ سے کلاسس شروع کئے گئے ہیں ۔

قومی تعلیمی ادارہ انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے  ماتحت  سبھی اسکولوں میں حالانکہ ریاستی نصاب تعلیم  ہے، 21 بچوں نے داخلہ لیا ہے جس میں سات بچے ہائی اسکولوں میں اور 14 پرائمری اسکولوں میں زیر تعلیم ہیں۔ اسی طرح سعودی سے لوٹنے والے  14 طلبا  کالجوں میں بھی داخل ہوئے ہیں۔

انجمن کے ایڈیشنل سکریٹری جناب اسحاق شاہ بندری نے بتایا کہ پرائمری اور ہائی اسکولوں سمیت انجمن کالج  میں بھی بچوں کو کنڑا سکھانے کے لئے خصوصی کوچنگ کا انتظام کیا گیا ہے اور ہر طرح کی سہولیات فراہم کی گئی ہے۔

اسی طرح کی  صورتحال شہر کے دوسرے معروف اور معتبر اسکولوں کی بھی ہے، جہاں سعودی سے واپس لوٹنے والے بچوں نے داخلہ لیا ہے۔  اس بات کی بھی اطلاع ملی ہے کہ سعودی سے لوٹنے والی کچھ لڑکیوں نے جامعات الصالحات میں بھی داخلہ لیا ہے۔

اُدھر مینگلور سے ملی اطلاع کے مطابق اس بار تقریباً 200افراد نے سعودی عربیہ کے اسکولوں سے اپنے بچوں کے ٹرانسفر سرٹفکیٹ نکال لیے ہیں۔ وہ سب وطن واپس لوٹ کر مینگلور  کے نجی اسکولوں میں اپنے بچوں کا داخلہ کروارہے ہیں۔ جس کی وجہ سے مینگلور کے اسکولوں میں بھی این آر آئی طلبہ کی تعداد میں اضافہ ہوجائے گا۔‘‘

منگلورو کے اینا پویا اسکول کے نمائندے نے بتایا کہ حالیہ دنوں میں ہمارے اسکول میں 20سے زائد  این آر آئی طلبہ کا داخلہ ہوا ہے۔‘‘

سعودی عربیہ سے واپس لوٹنے  والے بچوں کو  کنڑا سے ناواقفیت کے تعلق سے  پیش آنے والے  مسئلہ  سے  جب ریاست کے  وزیرتعلیم برائے ثانوی ایم رمیش کو واقف کرایا گیا تو انہوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ   ریاست کے لئے درپیش تعلیمی میدان میں یہ ایک نیا مسئلہ ہے، انہوں نے کہا کہ  میں اس وقت دہلی میں ہوں، پیر کو بنگلور لوٹتے ہی تعلیمی کمشنر سے اس مسئلہ پر گفتگو کروں گا اور متعلقہ اضلاع کی کمیٹیوں کی طرف سے حل ڈھوندھنے کی کوشش کروں گا۔

ایک نظر اس پر بھی

اسپتال قائم کرنا میری ذمہ داری نہیں ہے: کاروار میں ایم پی اننت کمار ہیگڈے کا تکبرانہ بیان

ضلع شمالی کینرا میں ایک ٹراما سینٹر اور سوپر اسپیشالٹی ہاسپٹل تعمیر کرنے کے لئے سوشیل میڈیا جو مہم چلائی جارہی ہے اور متعلقہ محکمہ جات کے افسران کو میمورنڈم دئے جارہے ہیں اس سلسلے میں ضلع کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے اب تک کسی قسم کاردعمل ظاہر نہیں کیاتھا۔ الٹے سوشیل ...

اڈپی کے موٹر بائک شوروم میں بھیانک آتشزدگی۔ فائربریگیڈ کی بروقت کارروائی سے ٹل گیا سنگین حادثہ

یہاں اندرالی ریلوے پل سے قریب واقع ہیرو ہونڈا موٹربائک کے جئے دیوا شو روم میں اتوار کی شب میں بھیانک آتشزدگی کا واقعہ پیش آیا۔ چونکہ اس شوروم سے متصل پٹرول بنک موجود ہے اس لئے حادثہ سنگین رخ اختیار کرنے کے امکانات پیدا ہوگئے تھے، لیکن فائر بریگیڈ عملے کی بروقت کارروائی کی وجہ ...

منگلورو میں ڈینگی بخار کے 40مشتبہ مریض اسپتال میں داخل۔ریاستی سطح پر% 70ملیریا کے معاملات منگلورو میں درج ہوئے

گزشتہ تین ہفتوں کے دوران منگلورو کے گجّر کیرے نامی علاقے میں ڈینگی بخار کے 40مشتبہ مریض اسپتال میں داخل کیے گئے ہیں تفتیش کے بعد ان میں سے ایک معاملے میں ڈینگی بخار کی تصدیق ہوگئی ہے۔

منگلورو ایئر پورٹ پر 20.67لاکھ روپے مالیت کا سونا ضبط

منگلورو انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر سونا اسمگلنگ کرنے کی کوشش کو ناکام بناتے ہوئے کسٹم کے افسران نے ایک مسافر کے قبضے سے 24کیریٹ کا608  گرام سونا ضبط کرلیا جو مسافر نے پیسٹ کی شکل میں اپنے مقعد میں چھپاکر رکھا تھا۔

کاروار میں شراب کے نشے میں دُھت کار چلانے کے دوران چار سواریوں کو ٹکر دینے کے بعد عوام نے نیوی اہلکار کی لی خوب خبر

نیوی اہلکار کو کاروار میں  اُس وقت عوام  کے ہاتھوں بری طرح    پٹنا پڑا جب  شراب کے نشے میں ڈرائیونگ کرنے کے دوران اس کی کار  یکے بعد دیگرے چار کاروں سے ٹکرا گئی۔ واردات  کاروار کے بِنگا میں کدمبا نیوی کے گیٹ کے قریب سنیچر شب کو  پیش آیا۔

دُبئی میں 18 برس سے کم عمر بچوں کی ویزہ مفت؛ 15 جولائی سے 15 ستمبر تک رہے گی سہولیت

 متحدہ عرب امارات میں سیاحتی سیزن کے دوران غیر مُلکی سیاحوں کے 18 برس سے کم عمر بچوں کے لیے مفت ویزے کی سہولت فراہم کی جا رہی ہے۔ یہ اعلان فیڈرل اتھارٹی فار آئیڈینٹٹی اینڈ سٹیزن شپ کی جانب سے کیا گیا ہے۔ دُبئی میں ہر سال سیاحتی سیزن کا آغاز 15 جولائی سے ہوتا ہے جو 15 ستمبر تک جاری ...

بحرین میں بھٹکل مسلم جماعت بحرین کی خوبصورت عید ملن تقریب ؛ اناس افریقہ کو بیسٹ اسٹوڈینٹ کا ایوارڈ؛ قران حفظ کرنے پر اسعدمصباح کو بھی ملا خصوصی اعزاز

بھٹکل مسلم جماعت بحرین کا عید ملن پروگرام بروز جمعرات  13جون کو منعقد ہوا، جس میں  بچوں کے پروگرام بالخصوص نظمیں، کوئیز، کھیل مقابلے نہایت دلچسپ رہے، عید ملن تقریب میں تعلیمی ایوارڈ سمیت بچوں کی ہمت آفزائی  کے لئے  بعض خصوصی انعامات  سے بھی نواز گیا جبکہ   آخر میں ریفل ...

جون 13 کو ہوگا بھٹکل مسلم جماعت بحرین کا عید ملن پروگرام؛ ممبران سے شرکت کی درخواست

بھٹکل مسلم جماعت بحرین کی عید ملن تقریب انشاء اللہ 13 جون کو مناما کے    ویندھم گرینڈ ہوٹل (Wyndham Grand Hotel, Manama)  میں  منعقد کی گئی ہے جس میں  دلچسپ اور تفریحی پروگرام پیش کئے جائیں گے۔ اس بات کی اطلاع جماعت کے جنرل سکریٹری مولوی اظہرالدین آرمار نے دی ہے۔

بھٹکل مسلم ایسوسی ایشن ریاض کی عید ملن تقریب؛ نوائطی ڈرامے، کوئیز، فینسی ڈریس سمیت کئی دلچسپ پروگرام سے حاضرین نے اُٹھایا لطف

بھٹکل مسلم ایسوسی ایشن ریاض کی طرف سے عید کی رات ٹھیک 10بجے کراون پلازہ ہوٹل میں ایک شاندار عید ملن تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں  تفریحی پروگرام، بچوں کا فینسی ڈریس ، نوائطے ڈرامے، کوئز اور ریفل ڈراء  وغیرہ جیسے مختلف پروگراموں سے  حاضرین نے خوب لطف اُٹھایا۔

دوبئی میں بھیانک سڑک حادثہ 12 ہندوستانی شہری سمیت17افراد ہلاک

دوبئی میں جمعرات کی شام کو ہوئے ایک بھیانک سڑک حادثے میں 12 ہندوستانی شہریوں سمیت 17 افراد ہلاک ہوگئے جبکہ پانچ دیگر کی حالت نازک بتائی گئی ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق بس پر  مختلف ممالک کے کل 31مسافر سوار تھے۔

آئی ایم اے معاملہ:منصورخان نے کی خودسپردگی کی پیشکش،ویڈیو پیغام میں جان کے خطرے کے خدشے کا اظہار-پولیس کمشنر کے سامنے تمام تفصیلات رکھنے کی یقین دہانی

ای ڈی کے ذریعہ سمن جاری ہونے کے تین دن کے بعد گذشتہ 8 جون سے مفرور آئی ایم اے کے منیجنگ ڈائرکٹر محمدمنصورخان نے اپنی زندگی کا ثبوت دیتے ہوئے ایک ریکارڈ ویڈیو پیغام پولیس کمشنر الوک کمار اوردیگر سرمایہ کاروں کے لئے ریلیز کیا -

لوگوں کا دکھ درد جاننے دیہات کے دورے پر نکلے وزیراعلی کمارسوامی، اسکول کی فرش پر گزاری رات

کرناٹک کے وزیر اعلی ایچ ڈی کمارسوامی گرام قیام پروگرام کے تحت دیہاتوں  کا دورہ کر رہے ہیں،وہ جمعہ کو جنوبی کرناٹک میں یادگیر ضلع میں گرمیتکل تعلقہ میں آنے والے چندرکی گاؤں پہنچے جہاں گاؤں والوں نے جم کر ان کا استقبال کیا۔ ...