سعودی عرب میں شادی کی مخلوط تقریب، 281 مرد و خواتین گرفتار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 28th March 2018, 11:30 AM | خلیجی خبریں |

ریاض27مارچ(ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا ) سعودی پولیس نے شادی کی مخلوط تقریب میں شرکت کرنے پر 281 مرد اور خواتین کو گرفتار کرلیا۔عرب میڈیا رپورٹس کے مطابق مکہ میں افریقی کمیونٹی کے فارم میں منعقدہ شادی کی ایک مخلوط تقریب منعقد ہوئی جس کی اطلاع ملنے پر پولیس موقع پر پہنچ گئی اور 281 مرد و خواتین کو گرفتار کرلیا۔بتایا گیا ہے کہ زیرحراست نصف سے زائد افراد کو مملکت میں رہائش کے مروجہ قواعد و ضوابط کی خلاف ورزی پر گرفتار کیا گیا تاہم ان میں سے کسی پر شراب نوشی یا غیر قانونی مشروبات کے استعمال کے شواہد نہیں ملے۔ گرفتار افراد کے خلاف قانونی چارہ جوئی کا ا?غاز کردیا گیا ہے۔واضح رہے کہ یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ جب شادی کی مخلوط تقریب پر سعودی پولیس نے کارروائی کی ہو۔ اس سے قبل رواں سال کے شروع میں پولیس نے مرد و خواتین کی اکٹھی تقریب منعقد کرنے پر دلہن سمیت 40 مہمانوں کو گرفتار کرلیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

بحرین : 24 شیعہ افراد کو دہشت گرد گروپ تشکیل دینے پر جیل کی سزائیں ، شہریت منسوخ

بحرین میں ایک عدالت نے 24 شیعہ افراد کو ایک دہشت گرد گروپ تشکیل دینے اور تخریبی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزامات میں قصور وار قرار دے کر مختلف مدت کی قید کی سزائیں سنائی ہے اور ان تمام کی بحرین کی شہریت منسوخ کردی ہے۔

عسیر میں چیک پوسٹ پر فائرنگ سے چار سعودی سیکیورٹی اہلکار شہید

سعودی عرب میں علاقے عسیر میں چیک پوسٹ پر فائرنگ کے نتیجے میں چار سکیورٹی اہلکار شہید اور متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔ حملے کے وقت پانچ اہلکار ڈیوٹی انجام دے رہے تھے۔ فائرنگ سے تین اہلکار موقع پر جبکہ چوتھا ہسپتال منتقلی کے دوران جام شہادت نوش کر گیا۔

سعودی سیکیورٹی اہلکاروں کو شہید کرنے والا مجرم کون تھا 

سعودی عرب کے صوبے عسیر میں جمعرات کے روز ایک چیک پوسٹ پر فائرنگ کے واقعے میں چار سکیورٹی اہل کار شہید اور متعدد زخمی ہو گئے۔ اس مجرمانہ کارروائی میں شریک افراد میں 34 سالہ بندر الشہری بھی شامل تھا جو سعودی شہری دفاع کا اہل کار تھا۔ الشہری سکیورٹی فورسز کی جوابی فائرنگ کے نتیجے ...