حکومت انسداد توہم پر ستی قانون لانے کی پابند: سدرامیا

Source: S.O. News Service | Published on 17th May 2017, 2:56 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو:16/مئی(ایس او نیوز) وزیر اعلیٰ سدرامیا نے آج ایک بار پھر ریاست کے مختلف ترقی پرور مٹھوں کے سربراہوں کو تیقن دیا کہ حکومت بہت جلد انسداد توہم پرستی قانون لاگو کرے گی۔عنقریب کابینہ میں اس قانون کے مسودہ کو قطعیت دی جائے گی اور اگلے لیجسلیچر اجلاس میں یہ مسودہ منظوری کیلئے پیش کیا جائے گا۔ مختلف ترقی پسند مٹھوں کے سربراہوں سے ملاقات کے دوران وزیراعلیٰ نے اس سلسلے میں ان لوگوں کی مانگ پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اخباری نمائندوں کو بتایاکہ جلد ہی یہ مسودہ تیار کرلیا جائے گا۔وزیراعلیٰ سے ملاقات کے بعد نڑوما مڑی مٹھ کے سربراہ سچدا نند سوامی نے بتایا کہ توہم پرستی عام آدمی کیلئے دن بدن دشواریوں کا سبب بنتی جارہی ہے، جلد از جلد اگر اسے روکنے کیلئے موثر قانون نہیں بنایا گیا تو معاشرہ کو لوٹنے کا سلسلہ بے قابو ہوجائے گا۔انہوں نے کہاکہ قانون کے مسئلے پر جو بھی اختلاف ہیں اسے باہی تبادلہئ خیال کے ذریعہ نمٹایا جائے۔ انہوں نے کہاکہ اکثریتی طبقے میں بہت سارے لوگ توہم پرستی کی آڑ میں بے قصوروں کو ہراساں کرنے پر اتر آئے ہیں۔اس طبقے میں توہم پرستی کے متعلق بیداری لانے کیلئے قدم اٹھائے جانے چاہئیں۔ مسودہ ترتیب دینے کیلئے قائم کابینہ کی ذیلی کمیٹی گزشتہ ایک سال سے ناکارہ ہے، اس سلسلے میں حکومت کی طرف سے تشکیل دی گئی جسٹس شیوراج پاٹل کمیٹی نے ایک سال قبل حکومت کو رپورٹ پیش کردی۔ مسودہ قانون میں متنازعہ امور کو پہلے ہی ہٹادیا گیا ہے، اسی لئے موجودہ مسودہ کو جوں کا توں منظور کرایا جائے۔ انہوں نے کہاکہ یہ تاثر غلط ہے کہ صرف ہندو توہم پرستی کو نشانہ بناکر یہ قانون ترتیب دیا گیا ہے۔انہوں نے مشورہ دیا کہ حکومت اس قانون کے مسودہ کو ویب سائٹ پر شائع کرے اور اس سلسلے میں تمام طبقات کی رائے حاصل کرنے کے بعد اگلی کارروائی کرے۔

ایک نظر اس پر بھی

ڈی کے شیوکمار پہلے وزارت سے استعفی دیں اور تحقیقات کاسامنا کریں۔کاروار میں اپوزیشن لیڈر ایشورپا کا مطالبہ

پچھلے دنوں وزیر توانائی ڈی کے شیو کمار کے مختلف ٹھکانوں پر آئی ٹی کے چھاپے اور غیر محسوب دولت کے سلسلے میں چل رہی تحقیقات کے پس منظر میں اپوزیشن لیڈر ایشورپا نے مانگ کی ہے کہ ڈی کے شیوکمار سب سے پہلے اپنے قلمدان سے مستعفی ہوجائیں اور پھر تحقیقات کریں۔

نیشنل ہائی ویزکو ڈی نوٹیفائی کرنے کا معاملہ: ریاستی حکومت شراب لابی کو راحت پہنچانا چاہتی ہے جبکہ مرکزی حکومت دامن بچارہی ہے

سپریم کورٹ کے حکم پر نیشنل اور اسٹیٹ ہائی ویز سے قریب واقع شراب خانوں کو بند کروانے کے بعد ریاستی حکومت کو بڑاخسارہ ہوا ہے جس کی بھرپائی اور شراب لابی کو راحت پہنچانے کے لئے حکومت نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ نیشنل ہائی ویز کے کچھ حصے کو ڈی نوٹیفائی کرکے اسے ریاستی ہائی ...

اسکولوں میں عوام اور والدین کے داخلے پر پابندی، لیجسلیچر کمیٹی ریاستی حکومت سے سفارش کرے گی: اگرپا

رکن کونسل وریاستی محکمۂ بہبود خواتین واطفال کی لیجسلیچر کمیٹی کے چیرمین وی ایس اگرپا نے کہا کہ اسکولوں میں عوام کے داخلے پر پابندی لگنی چاہئے۔ اسکول کے پرنسپل کی اجازت کے بغیر اسکول کے احاطہ میں والدین کے داخلے کو بھی ممنوع قرار دینے کی سفارش پر ان کی کمیٹی سنجیدگی سے غور ...

شہر سے عازمین حج کی 13 پروازیں روانہ، مکہ مکرمہ میں تمام عازمین سکون کے ساتھ مقیم

شہر بنگلور سے عازمین حج کی روانگی کا سلسلہ تکمیل کی طرح رواں دواں ہے۔ اب تک روزانہ 340 عازمین پر مشتمل بارہ پروازیں کیمپے گوڈا انٹر نیشنل ایرپورٹ سے جدہ کے شاہ عبدالعزیز ایرپورٹ پہنچ چکی ہیں۔ یہاں سے پہنچنے والے عازمین حج مکہ مکرمہ کے گرین اور عزیزیہ زمروں میں آرام سے مقیم ہیں ...

جی ایس ٹی نظام معاشی حالات کو بہتر بنانے کیلئے ہے

الگ الگ زمروں کے ٹیکس نظام کو یکجا کرتے ہوئے مرکزی حکومت کی طرف سے جی ایس ٹی کی شکل میں رائج یکساں ٹیکس نظام کا مقصد ٹیکس کی ادائیگی کو سہل بنانا ہے۔ یہ بات آج معروف ماہر معاشیات اور آئی ٹی آر اے ایف کے چیرمین ڈاکٹر پارتھا سارتھی نے کہی۔ آج یہاں ایف کے سی سی آئی ممبران سے خطاب ...

کاروار: ماؤوں اور بچوں کی اموات کی شرح میں کمی اضافہ :بنیادی وجوہات کی طرف محکمہ توجہ دے

بیماری اور دیگروجوہات کی بناء پر ضلع میں ماؤوں اور بچوں کے مرنےکی شرح میں اضافہ ہوتا جارہاہے، علاج کے جدید طریقے اور ضروری ڈاکٹروں کی موجودگی کے باوجود زچگی کے پیش تر اور زچگی کے دوران ماں ،بچے کے اموات کی شرح میں کمی نہیں ہونےسے ضلعی صحت عامہ محکمہ کے سسٹم پر دوبارہ سنجیدگی ...

بھٹکل: گنیش چترتھی کو لے کر پیس میٹنگ کا انعقاد:تہوار کے نام پر دوسروں کو تکلیف نہ دیں:ایڈیشنل ایس پی

روا ں مہینے کی 25تاریخ سے ملک بھر میں منائے جانے والے برادران وطن کے تہوار گنیش چتروتی کے موقع پر امن وا مان کی فضا بنائے رکھنے کے لئےپولیس محکمہ اور انتظامیہ کی جانب سے آج بھٹکل سرکٹ ہاؤس میں پیس میٹنگ کا انعقاد کیا گیا۔