بی جے پی کو اقتدار پر لانے کے لئے آر ایس ایس کی طرف سے لاشوں پر سیاست کی جاتی ہے؛ سابق بجرنگ دل لیڈرمہیندر اکمارکا خلاصہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 4th December 2018, 12:05 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو4؍دسمبر (ایس او نیوز) بجرنگ دل کے سابق لیڈر مہیندر اکمارنے آر ایس ایس پر سیدھا نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ وہ اکثر و بیشتر ہندوؤں کی موت کا سیاسی فائدہ اٹھانے کی کوشش کرتی ہے۔

مہیندرا کمار شانتی کرن باجوڈی میں منعقدہ دوروزہ ادبی فیسٹول ’جان نوڈی‘ کے اختتامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے آر ایس ایس کو مختلف زاویوں سے آڑے ہاتھوں لیا۔انہوں نے کہا کہ ’’جب شیموگہ میں ایک ہندو نوجوان کا بہیمانہ قتل ہوا تھا تو مجھ سے کہا گیا کہ میں اس قتل کو سیاسی فائدے کے لئے استعمال کروں ۔ میں نے ان کی بات نہیں مانی۔ یہ لوگ بی جے پی کو اقتدار پر لانے کے لئے یہ طریقہ کار اپناتے ہیں۔اوریہی آر ایس ایس کا یک نکاتی پروگرام ہے ۔‘‘

انہوں نے کہا کہ سماجی انتشار اور منافرت کی وجہ سے فائدہ اٹھانے کی تاک میں رہنے والے’’ راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کو ہندو لڑکیوں کی آبروریزی سے جتنی خوشی ہوتی ہے ، اتنی خوشی کسی اور کو نہیں ہوسکتی۔کیونکہ کسی مسلم نوجوان کی طرف سے ظلم و زیادتی ہوتی ہے تو اس کا بھرپور فائدہ سنگھ کی طرف سے اٹھایا جاتا ہے۔ 

مہیندرا کمار نے صاف گوئی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ’’سنگھ پریوار پسماندہ قبائل اور پسماندہ طبقات(ایس سی ؍ایس ٹی) کے نوجوانوں کو اپنے مفادات پورے کرنے کے لئے استعمال کرتا ہے۔ انہیں دوسرے طبقات کے خلاف اکساکر بدامنی کا ماحول پیدا کرتا ہے۔ پھر جب تشدد برپا ہوتا ہے تو سنگھی لیڈر غائب ہوجاتے ہیں، اور پسماندہ طبقات کے نوجوانوں جیلوں میں بند کیے جاتے ہیں۔اس کے بعد اقتدار پر آنے والے بی جے پی کے لیڈر عیش کرتے ہیں ، جبکہ ہندو تنظیموں کے لئے کام کرنے والے بہت سارے رضاکاروں کے خلاف متعدد مقدمات درج ہوجاتے ہیں۔‘‘

سابق بجرنگ دل لیڈر نے اپنی بات جاری رکھتے ہوئے کہا کہ ’’آر ایس ایس ہندودھرم کے اصولوں کے خلاف کام کرتا ہے۔ اس کے پاس ہندو سماج کے مسائل کے لئے کوئی حل نہیں ہے۔ حد یہ ہے کہ جو کوئی دلتوں کے مفاد کے لئے آواز اٹھاتا ہے اسے آر ایس ایس مخالف بتادیا جاتا ہے۔سنگھ نہ ہندوؤں کا حامی ہے اورنہ دلتوں کا۔اس کے نظریات ایک طرح کا نشہ ہے۔ جو اس کا عادی ہوجاتا ہے اس کے لئے اس سے باہر نکلنا مشکل ہوجاتا ہے۔وشوا ہندو پریشد کا مطلب پورا ہندو سماج نہیں ہے ۔ بلکہ ہندو سماج تو اس سے کہیں زیادہ وسیع تر ہے۔‘‘

ایودھیا میں ہوئے دھرم سنسد کے تعلق سے نرموہی اکھاڑا کے بیان کا حوالہ دیتے ہوئے مہیندراکمار نے کہاکہ وہ سیاسی اجلاس تھا۔وزیر اعظم نریندر مودی کی حکومت ہر محاذ پر ناکام ہوگئی ہے۔ ا ن کے ترکش میں کوئی تیر نہیں بچا ہے۔ اس لئے اس وقت عوام کے سامنے انہوں نے ایودھیا میں مندر تعمیر کا مسئلہ اچھال کر رکھ دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ’’ جب میں بجرنگ دل میں تھا تو ترقی پسند سوچ رکھنے والوں کا بڑا مخالف تھا۔مگرجب وہاں پر چل رہے چھوت چھات کی وجہ سے میں وہاں سے باہر نکلا تو میں نے محسوس کیا کہ کسی کے فرقے یا مذہب کی وجہ سے اس شخص کی مخالفت کرنادرحقیقت غداری کرنے جیسا کام ہے۔اس لئے حقیقی ہندوتوا یہی ہے کہ مظلوموں کے حق میں آواز بلند کی جائے۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

’کراولی اتسوا‘میراتھن میں افریقہ 2کھلاڑیوں نے حاصل کیا اول اور دوم مقام۔ مختلف تفریحی پروگراموں سے شائقین ہوئے لطف اندوز

’کراولی اتسوا‘ کی مناسبت سے رویندرا ناتھ ٹیگور بیچ پر منعقدہ میراتھن دوڑ میں افریقہ کے دو کھلاڑیوں نے بازی ماری۔21 کیلو میٹر کی دوڑ میں سوڈان کے سیمون نے اول مقام اور کینیا کئے پیٹیر نے دوم مقام حاصل کیا ۔ جبکہ تیسرا مقام بنگلورو کے ننجو ڈپّا کو ملا۔خواتین کی میراتھن دوڑ میں ...

پڑوسی ریاست کیرالہ کے کنّور میں انٹرنیشنل ائرپورٹ کا شاندار افتتاح؛ کیرالہ واحد ریاست جہاں ہیں چار انٹرنیشنل ائرپورٹ

ڑوسی ریاست کیرالہ کے کنّور میں انٹرنیشنل ائرپورٹ کا شاندار افتتاح عمل میں آیا جس کے ساتھ ہی کیرالہ پورے ملک میں واحد ریاست  بن گیا جہاں چار انٹرنیشنل ائرپورٹ قائم ہیں۔

بھٹکل کے نیوشمس اسکول اور ہائی اسکول طلبا کے درمیان ’ انسانیت ‘کے لئے سائیکل ریس مقابلہ

تربیت ایجوکیشن سوسائٹی کے زیر سرپرستی چلنے والے نیو شمس اسکول طلبا کے درمیان ’’انسانیت کے لئے سائیکل ریس  - 2018‘‘کے مقابلے کا سنیچر کی صبح 9بجے  ادارے کے نائب صدر انجنئیر نذیر احمد قاضی نے افتتاح کرنے کے بعد اسکول کے زیر اہتمام طلبا کے درمیان  انسانیت کے لئے سائیکل ریس مقابلہ ...

مڈکیری اور کورگ ضلع کے متاثرین کے لئے مرکزی حکومت  نے ایک پیسہ بھی نہیں دیا ہے: وزیر یوٹی قادر

ضلع کورگ کے بھیانک آفاقی  حادثے  سے متاثرہ لوگوں کی مدد کا ڈھونڈرا پیٹ رہے رکن پارلیمان پرتاپ سنہا کو شہری ترقیات اور رہائش وزیر یوٹی قادر نے آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہاکہ مڈکیری اور کورگ ضلع کے متاثرین کے لئے مرکزی حکومت کی طرف سے  ایک پیسہ بھی نہیں ملاہے، رکن پارلیمان پرتاپ ...

توہم پرستی کے مخالفین کومذہب دشمن قراردیاجارہاہے: ملیکارجن کھرگے

پارلیمان میں کانگریسی رہنما ملیکارجن کھرگے نے کہاکہ آج سماج میں توہم پرستی کی مخالفت کرنے والوں کومذہب کے دشمن کے طورپر پیش کیاجارہاہے ،یہاں کونڈجی بسپاہال میں اکھل بھارت شرن ساہتیہ پریشد اورماچی دیواسمیتی کی جانب سے اشوک دوملور کی تین مختلف زبانوں میں تحریرکردہ کتابوں ...

22دسمبر کو کابینہ میں ضرور توسیع ہوگی: دنیش گنڈو راؤ

پردیش کانگریس کمیٹی ( کے پی سی سی ) صدر دنیش گنڈو راؤ نے بتایا کہ 22دسمبر کوریاستی کابینہ میں توسیع ضرور ہوگی۔کے پی سی سی دفتر میں نامہ نگاروں سے انہوں نے کہا کہ کابینہ میں توسیع سے متعلق وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی ،نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور سمیت دونوں پارٹیوں کے لیڈروں ...

بی جے پی الزام عائد کرنے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لے: سدرشن

کے پی سی سی نائب صدر قانون سازکونسل کے سابق چیرمین وی آر سدرشن نے کہاکہ بی جے پی رہنما ؤں کو سابق وزیراعلیٰ سدارامیا کے دورمیں 35ہزار کروڑ روپئے کاگھپلہ ہونے کالزام لگانے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لینا چاہئے ۔

بلگام :پروفیسر خواجہ فرازؔبادامی کو  کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ سے فن عروض کے موضوع پر پی ایچ ڈی کی سند تفویض  

گوکاک  جے ایس ایس ڈگری کالج کے شعبہ اردو کے صدر پروفیسر خواجہ بندہ نواز انڈیکر فرازؔبادامی کو کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کی طرف سے  ’’اردو عروض اور ہندی پنگل کا تقابلی مطالعہ ‘‘کے موضوع پر ڈاکٹر آف فلاسفی (پی ایچ ڈی ) کی سند تفویض کی گئی ہے۔

بنگلور میں منعقدہ APCR کارگاہ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش؛سابق چیف جسٹس اور معروف وُکلا نے کی، یو اے پی اے کی سخت مخالفت

اسوسی ایشن فور پروٹیکشن آف سیول رائٹس (اے پی سی آر) کرناٹک چاپٹر کے زیراہتمام ریاستی سطح کے ورکشاپ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہ مسلمانوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش کااظہار کیا گیا اور سابق چیف جسٹس آف انڈیا مسٹر وینکٹ چلیّا سمیت معروف وُکلاء نے یو اے پی اے اسپیشل قانون کی سخت ...