فوج پر آر ایس ایس کے سربراہ کا بیان غلط :راہل کرناٹک کے انتخابی دورے کے دوران کانگریس صدر نے بھاگوت سے معافی کامطالبہ کیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th February 2018, 11:49 AM | ملکی خبریں | ریاستی خبریں |

بنگلورو/رائچور،12؍فروری(ایس او نیوز)حیدرآباد کرناٹک علاقہ میں انتخابی مہم کے دوران کانگریس صدر راہل گاندھی راحت لیتے ہوئے سڑک کے کنارے ایک چھوٹی سی ہوٹل میں دیگر کانگریس لیڈروں کے ساتھ داخل ہوکر مرچی کی بھجیاں کھائیں اور چائے بھی پی۔ اس دوران اس دیہات کے لوگوں نے پینے کے پانی کی قلت کی شکایت بھی کی۔ بھجی اور چائے کیلئے راہل نے اس چھوٹی ہوٹل کی اونر مارا مال کو دوہزار روپئے کا نوٹ بھی دیا ۔اس چھوٹی ہوٹل میں راہل کافی خوش نظر آرہے تھے۔ اپنے ساتھیوں سے مسکراتے ہوئے باتیں کررہے تھے ۔راہل کے ساتھ اس ہوٹل میں بھجیاں کھانے اور چائے پینے والے دیگر کانگریس لیڈروں میں وزیراعلیٰ سدارامیا کے پی سی سی صدر ڈاکٹر جی پرمیشور لوک سبھا میں اپوزیشن کانگریس لیڈر ملیکاراجن کھرگے کرناٹک میں کانگریس انچارج کے سی وینوگوپال سابق مرکزی وزیرورکن راجیہ سبھا ڈاکٹر کے رحمن خان ریاستی وزیر ڈی کے شیوکمار ارکان پارلیمان کے ایچ منی اپا ،ایم ویرپاموئیلی شامل ہیں۔ اس دوران راہل ان لیڈروں سے مسکراتے ہوئے باتیں کرتے کرتے بھجی کا ذائقہ لے رہے تھے۔ چائے پانی کے اس وقفہ کے بعد اپنی روایتی بس میں سوارہوکر راہل انتخابی مہم پر چل پڑے۔کانگریس صدر کے چار روزہ جنا آشیرواددورے کا آج تیسرا دن ہے ۔ اس یاترا کے دوران راہل حیدرآباد کرناٹک کے علاقے بیدر، یادگیر ،رائچور ،کوپل، بلاری اور کلبرگی اضلاع کا احاطہ کریں گے ۔ یہ علاقے 1948 تک نظام کی حکمرانی والے حیدرآباد ریاست کا حصہ تھے ۔اپنی یاترا کے دوران جیورگی میں راہل گاندھی نے آر ایس ایس کے سربراہ موہن بھاگوت کے ریمارکس پرکڑی تنقید کی موہن بھاگوت نے اپنے ریمارکس میں کہاتھاکہ ان کا سنگھ پریوار فوج سے تیز فوجی جوان تیارکرسکتا ہے ۔ راہل نے کہا کہ ملک کی فوج کے بارے میں اس طرح کے ریمارکس غلط بات ہے ۔راہل نے کہاکہ ہمارے فوجی اس ملک کے لئے اپنا خون بہارہے ہیں ۔ سرحد پر ہمیشہ کھڑے ہوکر ملک کی حفاظت کررہے ہیں وہ ملک کے لئے اپنی جانیں قربان کررہے ہیں ۔دریں اثناء اپنی پارٹی کے سربراہ کے ریمارکس پر ہورہی تنقید کے بعد آر ایس ایس نے یہ وضاحت کی ہے کہ انہوں نے سنگھ پریوار کو ملک کی فوج کے ساتھ موازنہ نہیں کیا تھا ۔ کل بہار میں آر ایس ایس ورکرس کے ایک اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے بھاگوت نے بارہا کہاتھا کہ سنگھ پریوار صرف تین دنوں میں فوجی جوان تیار کرسکتی ہے۔ جبکہ فوج یہ کام کرنے 6تا7 مہینے لیتی ہے ۔

راہل گاندھی نے آج اپنے مندروں کے دوروں کا دفاع کرتے ہوئے کہاکہ مندروں اورمذہبی مقامات کو ان کے دورے جاری رہیں گے ۔انہوں نے کہاکہ میں مندروں کو جاؤں گاجہاں کہیں مجھے مذہبی مقامات ملیں گے میں جاؤں گا۔وہاں جانے پرمجھے خوشی اورسکون ملتا ہے ۔نامہ نگاروں سے انہوں نے کہاکہ میں مندروں کا دورے جاری رکھوں گا۔

ایک نظر اس پر بھی

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ بدستور جاری

آئل مارکیٹنگ کمپنیوں نے پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں آج چھٹے دن مسلسل اضافہ جاری رہا۔ملک کے چار اہم شہروں میں دہلی، کولکاتا، ممبئی اور چنئی میں پٹرول، 10سے 12 پیسے بڑھ کرفی لیٹر اور ڈیزل 9 سے 10 پیسے فی لیٹرتک مہنگا ہوا۔ قومی راجدھانی دہلی میں پیٹرول 12 پیسے بڑھ کر 82.16 روپے فی لیٹر ...

مخلوط حکومت کوکوئی خطرہ نہیں ۔ صورتحال میڈیا کی پیداوار کوئی پارٹی نہیں چھوڑے گا ۔ جارکی ہولی برادران کے مسائل پر مشورہ کرنے سدارامیا دہلی جائیں گے

ریاستی مخلوط حکومت کی بقا کو لے کر پچھلے ایک ہفتہ سے چل رہا ڈرامہ ہنوز جاری ہے ۔ حالانکہ آج وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اور ان کے بھائی ریاستی وزیر برائے تعمیرات عامہ ایچ ڈی ریونا نے مخلوط حکومت کے مستقبل کیلئے خطرہ پیدا کرنے والے جارکی ہولی برادران سے یہاں شہر کے ایک ہوٹل میں ...

حجاج کرام کے آٹھویں اور نویں قافلوں کی بنگلورو واپسی؛ حج کمیٹی چیرمین آر روشن بیگ ائرپورٹ پر حاجیوں کے استقبال کے لئے رہےموجود

حجاج کرام کے آٹھویں اور نویں قافلوں کی آج مدینہ منورہ سے بنگلور واپسی ہوئی۔ تقریباً ہر فلائی میں 300حجاج کرام پر مشتمل قافلے 42 دن قبل بنگلور سے سفر مقدسہ پر رخصت ہوئے تھے، فریضۂ حج کی تکمیل ،مکہ مکرمہ میں عبادات اور مدینے میں روضۂ رسول ؐ پر حاضری کی سعادتوں سے سرفراز ہوکر یہ ...

مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کی آج بنگلور آمد؛ آپریشن کمل کے جواب میں بی جے پی اراکین کے استعفوں کے خدشے؛ کیا اُلٹی پڑگئیں تدبیریں ؟

مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ منگل کو  بنگلور دورہ پر آرہے ہیں۔ حالانکہ بنگلور میں ان کا کوئی سرکاری پروگرام نہیں ہے، لیکن کہا جارہاہے کہ مخلوط حکومت کو گرانے کے لئے بی جے پی کی کوششوں کی مسلسل ناکامی کے بعد اس سلسلے میں ریاستی قائدین کو چند ہدایات دینے کے لئے وزیر داخلہ کا یہ ...

کرناٹکا کی مخلوط حکومت گرانے کے بی جے پی کے منصوبے پر پھر گیا پانی؛ کرناٹک کے بی جے پی قائدین پر امت شاہ گرم؛ پوچھا ،آپریشن کمل کی صلاحت نہیں تھی تو اس میں الجھے کیوں تھے

ریاستی حکومت کو ایک دن ایک ہفتہ اور ایک ماہ میں گرانے کے لئے بی جے پی قیادت بالخصوص ریاستی بی جے پی صدر بی ایس یڈیورپا کے تمام دعوؤں کی کانگریس اور جے ڈی ایس اتحاد نے ہوا نکال دی ہے۔جن اراکین اسمبلی کو آپریشن کمل کا شکار قرار دیاجارہاتھا انہوں نے عوام کے سامنے آکر واضح کردیا ہے ...