آپسی سمجھوتے سے مسئلے کاحل نکلنے پرمیں بھی ایک پتھرلگانے ایودھیاآؤں :فاروق عبداللہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th January 2019, 11:27 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،5جنوری (ایس او نیوز ؍آئی این ایس انڈیا) ایودھیا میں رام جنم بھومی۔ بابری مسجد زمین تنازعہ معاملہ سپریم کورٹ کی طرف سے نئی بنچ کے پاس بھیجنے کے فیصلے کے بعدجموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا کہ ایودھیا معاملے پر بیٹھ کر حل نکالا جانا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ بھوان رام پوری دنیا کے ہیں، صرف ہندؤ ں کے نہیں،اسے عدالت میں کیوں گھسیٹا جا رہا ہے۔بتا دیں کہ سپریم کورٹ نے جمعہ کو کہا کہ اس کی طرف سے قائم ایک 3ججوں کی نئی بنچ یعنی مناسب پیٹھ رام جنم بھومی۔ بابری مسجد زمین ملکیت تنازعہ کیس کی سماعت کی تاریخ مقرر کرنے کے لئے 10جنوری کو حکم دے گا۔آگے انہوں نے کہا کہ بھگوان رام سے کسی کو عداوت نہیں ہے، نہ ہونی چاہئے،کوشش کرنی چاہئے حل کرنے کی اور بنانے کی،جس دن یہ ہو جائے گا، میں بھی ایک پتھر لگانے جاؤں گا،جلدی حل نکلناچاہیے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

مودی پھر جیتے تو ملک میں شاید انتخابات نہ ہوں: اشوک گہلوت

کانگریس کے سینئر لیڈر اور راجستھان کے وزیر اعلی اشوک گہلوت نے منگل کو نریندر مودی حکومت کے دور میں ’جمہوریت اور آئین‘ کو خطرہ ہونے کا الزام لگاتے ہوئے دعوی کیا کہ اگر عوام نے مودی کو پھر سے اقتدار سونپا، تو ہو سکتا ہے