ہندو نیشنلسٹ گروپ سے اقلیتی طبقہ خوفزدہ، امریکی وزارت خارجہ کی رپورٹ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 31st May 2018, 1:01 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

واشگٹن،31؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) امریکی وزارت خارجہ نے منگل کے روز بین الاقوامی مذہبی آزادی پر ایک رپورٹ جاری کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ ہندوستان میں 2017 کے دوران ہندو نیشنلسٹ گروپ کے تشدد کے سبب اقلیتی طبقہ نے خود کو انتہائی غیر محفوظ محسوس کیا۔ اس سلسلے میں امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو نے امریکی کانگریس کے ذریعہ مجاز یافتہ 2017 کی بین الاقوامی مذہبی آزادی پر مبنی سالانہ رپورٹ جاری کی ، جس میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے چند ایک بار تشدد کے واقعات کے خلاف بولا، لیکن مقامی لیڈروں نے شاید ہی ایسا کیا۔ اور کئی بار تو ایسے بیانات دیے گئے جن کے پش پست مقصد تشدد کو نظر انداز کرنا معلوم ہوتا ہے۔

امریکی وزارت خارجہ کی اس رپورٹ میں واضح لفظوں میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ’’سول سوسائٹی کے لوگوں اور مذہبی اقلیتوں کا کہنا ہے کہ موجودہ حکومت میں مذہبی اقلیتی طبقات نے غیر ہندوؤں اور ان کی عبادت گاہوں کے خلاف تشدد میں شامل ہندو نیشنلسٹ گروپوں کے سبب خود کو کافی غیر محفوظ محسوس کیا۔‘‘ رپورٹ کے مطابق ’’افسران نے اکثر و بیشتر گئوکشی یا غیر قانونی اسمگلنگ یا گائے کے گوشت کا استعمال کرنے سے متعلق مشتبہ لوگوں (زیادہ تر مسلمانوں) پر گئو رکشکوں کے تشدد کے خلاف معاملے درج نہیں کیے۔‘‘

اس رپورٹ میں اقلیتی اداروں سے متعلق بھی باتیں کی گئی ہیں۔ اس میں لکھا گیا ہے کہ ’’حکومت نے عدالت عظمیٰ میں مسلم تعلیمی اداروں کے اقلیتی درجہ کو چیلنج پیش کرنا جاری رکھا۔ اقلیتی درجہ کی وجہ سے ان اداروں کو ملازمین کی تقرری اور نصاب سے متعلق فیصلوں میں خودمختاری حاصل ہے۔‘‘

اس رپورٹ کے ایک حصہ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ 13 جولائی کو وزیر اعظم نریندر مودی نے بیف تاجروں، بیف کے صارفین اور ڈیری کسانوں پر بھیڑ کے ذریعہ کیے گئے قاتلانہ حملے کی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ گئو رکشا کے نام پر لوگوں کی جان لینا ناقابل قبول ہے۔ اس میں کہا گیا کہ 7 اگست کو اس وقت کے نائب صدر جمہوریہ حامد انصاری نے کہا تھا کہ ملک میں دلت، مسلمان اور عیسائی خود کو کافی غیر محفوظ محسوس کر رہے ہیں۔

عیسائیوں پر مظالم سے متعلق اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بین الاقوامی غیر سرکاری تنظیم ’اوپن ڈورس‘ کے مقامی شریک کاروں کے ذریعہ حاصل اعداد و شمار کے مطابق سال کے پہلے چھ مہینے میں ہی 410 ایسے واقعات پیش آئے جن میں عیسائیوں پر ظلم ہوا، ڈرایا دھمکایا گیا یا مذہب کے نام پر ان پر حملہ کیا گیا، جب کہ 2016 کے پورے سال میں اس طرح کے کل 441 واقعات پیش آئے تھے۔ گویا کہ 2017 کے نصف حصے میں ہی عیسائیوں پر مظالم کے تقریباً اتنے واقعات پیش آئے جتنے کہ 2016 کے پورے سال میں ہوئے تھے۔ اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 2017 میں جنوری سے لے کر مئی کے درمیان وزارت داخلہ نے مذہبی طبقات کے درمیان 296 تصادم ہونے کی اطلاع دی۔ تصادم میں 44 لوگ مارے گئے اور 892 زخمی ہوئے۔

ایک نظر اس پر بھی

منی شنکر ایئر کی رکنیت دوبارہ بحال ،مودی کیخلاف منفی تبصرہ پرکیا گیا تھا معطل 

گجرات اسمبلی انتخابات مودی کے لیے نیچ آدمی لفظ کا استعمال کرنے پر معطل منی شنکر ایئر کی کانگریس میں بنیادی رکنیت ایک بار پھر بحال کر دی گئی ہے ۔یہ فیصلہ پارٹی کی انتظامی کمیٹی کی سفارش کے بعد لیا گیا ہے۔

سیلاب متاثرہ کیرالہ کی مدد کے لیے اکھلیش یادونے کی جذباتی اپیل 

کیرالہ اب صدی کی سب سے بڑی تباہی کا شکار ہے۔گزشتہ 100 سالوں میں کیرل نے ایسی تباہی نہیں دیکھی تھی، جس کی مار ابھی وہ جھیل رہا ہے۔ سیلاب سے تباہ کیرالہ اور وہاں کے لوگوں کے لئے چاروں طرف سے مدد کے ہاتھ اٹھ رہے ہیں۔

مظفر پورشیلٹرہوم: منجو ورماکے خلاف آرمس ایکٹ کے تحت مقدمہ درج

مظفر پورشیلٹرہوم جنسی تشدد معاملے میں بہار کی سابق سماجی فلاح وبہبودکی وزیر منجو ورما کی رہائش گاہ پر ہوئے سی بی آئی کے چھاپے کے دوران 50کارتوس ملنے کے بعد ورما اور ان کے شوہر کے خلاف ایف آئی آر درج کر لی گئی ہے۔

فرش سے عرش تک لبیک اللھم کی صدائیں،مناسک حج کا آغاز؛ عرفات پہنچنے والے لاکھوں افراد میں 175025 ہندوستانی عازمین بھی شامل

دنیا بھر سے ہر قوم و نسل کے تقریبا 30 لاکھ عازمین حج جس میں ہندوستان کے 175025 عازمین بھی شام ل ہیں،  بیت اللہ کیلئے مکہ مکرمہ میں ہیں جو عمرے کی ادائیگی کے بعد رات سے ہی بسوں اور دیگر گاڑیوں میں سوار ہوکر اور پیدل منیٰ پہنچ رہے ہیں۔

عمران خان نے پاکستانی وزیراعظم کے عہدے کا حلف لیا

پاکستان کے نو منتخب وزیر اعظم عمران خان نے ہفتہ کو ملک کے22ویں وزیر اعظم کے عہدے کا حلف لیا۔صدر ممنون حسین نے ایوان صدر (پریسیڈنٹ ہاؤس) میں منعقدہ ایک سادہ تقریب میں مسٹر خان کو وزیر اعظم کے عہدے کا حلف دلایا۔

مرحوم حضرت مولانا محمد سالم قاسمی کے کمالات و اوصاف ۔۔۔۔۔۔۔۔ بہ قلم: خورشید عالم داؤد قاسمی

دار العلوم، دیوبند کے بانی امام محمد قاسم نانوتویؒ (1832-1880) کے پڑپوتے، ریاست دکن (حیدرآباد) کی عدالتِ عالیہ کے قاضی اور مفتی اعظم مولانا حافظ محمد احمد صاحبؒ (1862-1928) کے پوتے اور بیسویں صدی میں برّ صغیر کےعالم فرید اور ملت اسلامیہ کی آبرو حکیم الاسلام قاری محمد طیب صاحب قاسمیؒ ...

اردو میڈیم اسکولوں میں نصابی  کتب فراہم نہ ہونے  سے طلبا تعلیم سے محروم ؛ کیا یہ اُردو کو ختم کرنے کی کوشش ہے ؟

اسکولوں اور ہائی اسکولوں کی شروعات ہوکر دو مہینے بیت رہے ہیں، ریاست کرناٹک کے 559سرکاری ، امدادی اور غیر امدادی اردو میڈیم اسکولوں اور ہائی اسکولوں کے لئے کتابیں فراہم نہ  ہونے سے پڑھائی نہیں ہوپارہی ہے۔ طلبا ، اساتذہ اور والدین و سرپرستان تعلیمی صورت حال سے پریشان ہیں۔

بھٹکل کڑوین کٹّا ڈیم کی تہہ میں کیچڑ اور کچرے کا ڈھیر۔گھٹتی جارہی ہے پانی ذخیرہ کی گنجائش

امسال ریاست میں کسی بھی مقام پر برسات کم ہونے کی خبرسنائی نہیں دے رہی ہے۔ عوام کے دلوں کو خوش کرنے والی بات یہ ہے کہ بہت برسوں کے بعد ہر جگی ڈیم پانی سے لبالب ہوگئے ہیں۔لیکن اکثریہ دیکھا جاتا ہے کہ جب برسات کم ہوتی ہے اور پانی کا قحط پڑ جاتا ہے تو حیران اور پریشان ہونے والے لوگ ...

سعودی عربیہ سے واپس لوٹنے والوں کو راحت دلانے کا وعدہ ؛ کیا وزیر اعلیٰ کمارا سوامی کو کسانوں کا وعدہ یاد رہا، اقلیتوں کا وعدہ بھول گئے ؟

انتخابات کے بعد سیاسی پارٹیوں کو اقتدار ملنے کی صورت میں کیے گئے وعدوں کو پورا کرنا بہت اہم ہوتا ہے۔ جنتادل (ایس) کے سکریٹری کمارا سوامی نے بھی مخلوط حکومت میں وزیرا علیٰ کا منصب سنبھالتے ہی کسانوں کا قرضہ معاف کرنے کا انتخابی وعدہ پورا کردیااور عوام کی امیدوں پر پورا اترنے کا ...