ہندو نیشنلسٹ گروپ سے اقلیتی طبقہ خوفزدہ، امریکی وزارت خارجہ کی رپورٹ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 31st May 2018, 1:01 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

واشگٹن،31؍مئی (ایس او نیوز؍ایجنسی) امریکی وزارت خارجہ نے منگل کے روز بین الاقوامی مذہبی آزادی پر ایک رپورٹ جاری کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ ہندوستان میں 2017 کے دوران ہندو نیشنلسٹ گروپ کے تشدد کے سبب اقلیتی طبقہ نے خود کو انتہائی غیر محفوظ محسوس کیا۔ اس سلسلے میں امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو نے امریکی کانگریس کے ذریعہ مجاز یافتہ 2017 کی بین الاقوامی مذہبی آزادی پر مبنی سالانہ رپورٹ جاری کی ، جس میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے چند ایک بار تشدد کے واقعات کے خلاف بولا، لیکن مقامی لیڈروں نے شاید ہی ایسا کیا۔ اور کئی بار تو ایسے بیانات دیے گئے جن کے پش پست مقصد تشدد کو نظر انداز کرنا معلوم ہوتا ہے۔

امریکی وزارت خارجہ کی اس رپورٹ میں واضح لفظوں میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ’’سول سوسائٹی کے لوگوں اور مذہبی اقلیتوں کا کہنا ہے کہ موجودہ حکومت میں مذہبی اقلیتی طبقات نے غیر ہندوؤں اور ان کی عبادت گاہوں کے خلاف تشدد میں شامل ہندو نیشنلسٹ گروپوں کے سبب خود کو کافی غیر محفوظ محسوس کیا۔‘‘ رپورٹ کے مطابق ’’افسران نے اکثر و بیشتر گئوکشی یا غیر قانونی اسمگلنگ یا گائے کے گوشت کا استعمال کرنے سے متعلق مشتبہ لوگوں (زیادہ تر مسلمانوں) پر گئو رکشکوں کے تشدد کے خلاف معاملے درج نہیں کیے۔‘‘

اس رپورٹ میں اقلیتی اداروں سے متعلق بھی باتیں کی گئی ہیں۔ اس میں لکھا گیا ہے کہ ’’حکومت نے عدالت عظمیٰ میں مسلم تعلیمی اداروں کے اقلیتی درجہ کو چیلنج پیش کرنا جاری رکھا۔ اقلیتی درجہ کی وجہ سے ان اداروں کو ملازمین کی تقرری اور نصاب سے متعلق فیصلوں میں خودمختاری حاصل ہے۔‘‘

اس رپورٹ کے ایک حصہ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ 13 جولائی کو وزیر اعظم نریندر مودی نے بیف تاجروں، بیف کے صارفین اور ڈیری کسانوں پر بھیڑ کے ذریعہ کیے گئے قاتلانہ حملے کی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ گئو رکشا کے نام پر لوگوں کی جان لینا ناقابل قبول ہے۔ اس میں کہا گیا کہ 7 اگست کو اس وقت کے نائب صدر جمہوریہ حامد انصاری نے کہا تھا کہ ملک میں دلت، مسلمان اور عیسائی خود کو کافی غیر محفوظ محسوس کر رہے ہیں۔

عیسائیوں پر مظالم سے متعلق اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بین الاقوامی غیر سرکاری تنظیم ’اوپن ڈورس‘ کے مقامی شریک کاروں کے ذریعہ حاصل اعداد و شمار کے مطابق سال کے پہلے چھ مہینے میں ہی 410 ایسے واقعات پیش آئے جن میں عیسائیوں پر ظلم ہوا، ڈرایا دھمکایا گیا یا مذہب کے نام پر ان پر حملہ کیا گیا، جب کہ 2016 کے پورے سال میں اس طرح کے کل 441 واقعات پیش آئے تھے۔ گویا کہ 2017 کے نصف حصے میں ہی عیسائیوں پر مظالم کے تقریباً اتنے واقعات پیش آئے جتنے کہ 2016 کے پورے سال میں ہوئے تھے۔ اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 2017 میں جنوری سے لے کر مئی کے درمیان وزارت داخلہ نے مذہبی طبقات کے درمیان 296 تصادم ہونے کی اطلاع دی۔ تصادم میں 44 لوگ مارے گئے اور 892 زخمی ہوئے۔

ایک نظر اس پر بھی

حلال آمدنی کے نام پر سرمایہ کاروں کو ٹھگنے کا الزام۔ہیرا گولڈ کی چیف نوہیرا شیخ حیدرآباد میں گرفتار۔ سرمایہ کاروں میں تشویش کی لہر

کئی برسوں سے ’ہیرا گولڈ‘ کے نام سے کمپنی چلانے اور حلال آمدنی کا وعدہ کرکے ہزاروں افراد سے سرمایہ کاری کروانے والی عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کو حیدرآباد پولیس نے سرمایہ کاروں کو ٹھگنے الزام میں گرفتار کرلیا ہے۔

دگ وجے سنگھ کی تقریر سے ووٹ کٹتے ہیں،وائرل ویڈیو میں اظہارخیال

مدھیہ پردیش میں اسمبلی انتخابات سے قبل سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس جنرل سکریٹری دگ وجے سنگھ کاایک ویڈیو وائرل ہو رہا ہے ، جس میں وہ مبینہ طور پر یہ کہتے ہوئے سنائی دے رہے ہیں کہ ان کی تقریر کرنے سے ووٹ کٹتے ہیں۔

مہاراشٹرا: محکمہ تعلیمات کی کتاب میں حضرت محمدؐ کی خیا لی تصویر سے ہنگامہ

حکومت مہاراشٹرا کے محکمہ تعلیمات کی جانب سے ’سر وشکشا ابھیان‘ کے بک لیٹ ’ آدرش گوشٹھی‘ ( بمعنی مثالی کہانیاں ) میں حضر ت محمدؐ کی خیا لی تصویر شائع کیے جانے پر مسلمانوں کے جذبات شدید مجروح ہوئے ہیں۔

ہوٹل میں سابق بی ایس پی رہنما کے بیٹے کی غنڈہ گردی سے پارٹی نے جھاڑا پلہ

دہلی کے پانچ ستارہ ہوٹل حیات میں ایک شخص نے سرعام غنڈہ گردی کی۔پستول لے کر لڑکی اور اس کے دوست کودھمکاتے ہوئے اس کا ویڈیو وائرل ہوا۔ملزم یوپی کے امبیڈکر نگر سے بی ایس پی کے سابق ممبر پارلیمنٹ راکیش پانڈے کابیٹاہے۔

داعش کے ہاتھوں اغوا130 شامی خاندانوں کا انجام بدستور نامعلوم

چند ہفتے قبل شام میں شدت پسند تنظیم "داعش" کے جنگجوؤں نے دیر الزور میں آندھی اور طوفان سے فائدہ اٹھا کر "البحرہ" پناہ گزین کیمپ پر حملہ کردیا تھا جس کے نتیجے میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی ہوگئے تھے جب کی داعش نے 130 خاندانوں کو یرغمال بنا لیا تھا۔

ٹرمپ کا وزیر دفاع جم میٹس کو ہٹانے کا اشارہ

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے عندیہ دیا ہے کہ وزیر دفاع جم میٹس کو بھی اْن کے عہدے سے برطرف کیا جا سکتا ہے۔صدر ٹرمپ نے اتوار کے روز امریکی ٹیلی وژ ن چینل سی بی ایس کے پروگرام 60 Minutes میں انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ اْنہیں اس بات کی کوئی خبر نہیں کہ جم میٹس عہدہ چھوڑنے والے ہیں۔

ملک کے موجودہ حالات اور دینی سرحدوں کی حفاظت ....... بقلم : محمد حارث اکرمی ندوی

   ملک کے موجودہ حالات ملت اسلامیہ ھندیہ کےلیے کچھ نئے حالات نہیں ہیں بلکہ اس سے بھی زیادہ صبر آزما حالات اس ملک اور خاص کر ملت اسلامیہ ھندیہ پر آچکے ہیں . افسوس اس بات پر ہے اتنے سنگین حالات کے باوجود ہم کچھ سبق حاصل نہیں کر رہے ہیں یہ سوچنے کی بات ہے. آج ہمارے سامنے اسلام کی بقا ...

پارلیمانی انتخابات سے قبل مسلم سیاسی جماعتوں کا وجود؛ کیا ان جماعتوں سے مسلمانوں کا بھلا ہوگا ؟

لوک سبھا انتخابات یا اسمبلی انتخابات قریب آتے ہی مسلم سیاسی پارٹیاں منظرعام  پرآجاتی ہیں، لیکن انتخابات کےعین وقت پروہ منظرعام سےغائب ہوجاتی ہیں یا پھران کا اپنا سیاسی مطلب حل ہوجاتا ہے۔ اورجو پارٹیاں الیکشن میں حصہ لیتی ہیں ایک دو پارٹیوں کو چھوڑکرکوئی بھی اپنے وجود کو ...

بھٹکل میں سواریوں کی  من چاہی پارکنگ پرمحکمہ پولس نے لگایا روک؛ سواریوں کو کیا جائے گا لاک؛ قانون کی خلاف ورزی پر جرمانہ لازمی

اترکنڑا ضلع میں بھٹکل جتنی تیز رفتاری سے ترقی کی طرف گامزن ہے اس کے ساتھ ساتھ کئی مسائل بھی جنم لے رہے ہیں، ان میں ایک طرف گنجان  ٹرافک  کا مسئلہ بڑھتا ہی جارہا ہے تو  دوسری طرف پارکنگ کی کہانی الگ ہے۔ اس دوران محکمہ پولس نے ٹرافک نظام میں بہتری لانے کے لئے  بیک وقت کئی محاذوں ...

غیر اعلان شدہ ایمرجنسی کا کالا سایہ .... ایڈیٹوریل :وارتا بھارتی ........... ترجمہ: ڈاکٹر محمد حنیف شباب

ہٹلرکے زمانے میں جرمنی کے جو دن تھے وہ بھارت میں لوٹ آئے ہیں۔ انسانی حقوق کے لئے جد وجہد کرنے والے، صحافیوں، شاعروں ادیبوں اور وکیلوں پر فاشسٹ حکومت کی ترچھی نظر پڑ گئی ہے۔ان لوگوں نے کسی کو بھی قتل نہیں کیا ہے۔کسی کی بھی جائداد نہیں لوٹی ہے۔ گائے کاگوشت کھانے کا الزام لگاکر بے ...

اسمبلی الیکشن میں فائدہ اٹھانے کے بعد کیا بی جے پی نے’ پریش میستا‘ کو بھلا دیا؟

اسمبلی الیکشن کے موقع پر ریاست کے ساحلی علاقوں میں بہت ہی زیادہ فرقہ وارانہ تناؤ اور خوف وہراس کا سبب بننے والی پریش میستا کی مشکوک موت کو جسے سنگھ پریوار قتل قرار دے رہا تھا،پورے ۹ مہینے گزر گئے۔ مگرسی بی آئی کو تحقیقات سونپنے کے بعد بھی اب تک اس معاملے کے اصل ملزمین کا پتہ چل ...

گوگل رازداری سے دیکھ رہا ہے آپ کا مستقبل؛ گوگل صرف آپ کا لوکیشن ہی نہیں آپ کے ڈیٹا سےآپ کے مستقبل کا بھی اندازہ لگاتا ہے

ان دنوں، یورپ کے  ایک ملک میں اجتماعی  عصمت دری کی وارداتیں بڑھ گئی تھیں. حکومت فکر مند تھی. حکومت نے ایسے لوگوں کی جانکاری  Google سے مانگی  جو لگاتار اجتماعی  عصمت دری سے متعلق مواد تلاش کررہے تھے. دراصل، حکومت اس طرح ایسے لوگوں کی پہچان  کرنے کی کوشش کر رہی تھی. ایسا اصل ...