اُڈپی عدالت میں سزا سنائے جانے سے مشتعل ہوکر عصمت دری کے مجرم نے سرکاری وکیل پر پھینکے جوتے!

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 14th April 2018, 3:07 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

اڈپی 14؍اپریل (ایس او نیوز)اڈپی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنس کورٹ میں جج اوروکلاء کو سکتے میں ڈالنے والا ایسا واقعہ پیش آیا جس کی مثال اس سے پہلے کبھی یہاں نہیں دیکھی گئی تھی، جس میں مجرم نے سزا سنائے جانے سے مشتعل ہوکر اپنے جوتے سرکاری وکیل پر پھینک دئے۔

موصولہ اطلاع  کے مطابق عصمت دری کے ملزم پرشانت (۲۵سال) کا جرم ثابت ہونے پر پوکسو ایکٹ کے تحت اسپیشل پوکسو ایکٹ کے جج ٹی وینکٹیش نے اسے 20سال کی قید اور 25ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی ۔ اس سے مشتعل ہوکر پرشانت نے پہلے سرکاری وکیل وجئے واسو پجاری کو گالیاں بکنی شروع کیں کہ اس کی جرح اور بحث کی وجہ سے جج نے اتنی سخت سزا سنائی ہے اور پھر اس نے اپنے پیر وں سے جوتے نکالے اورمارنے کی نیت سے سرکاری وکیل کی طرف پھینکے۔اور بھری عدالت میں ہی اس نے سرکاری وکیل کو’ زندہ نہ چھوڑنے‘ کی دھمکی بھی دے ڈالی۔

برہماور کے آرور گاوں میں رہنے والے پرشانت پر الزام تھا کہ فروری 2017کوکوٹیشورکی ایک 15سالہ لڑکی کو وہ بہلاپھسلاکر اپنے رشتے دار کے گھر لے گیا اور وہاں اس کی عصمت دری کی ۔جس کے بعد کنداپور پولیس اسٹیشن میں کیس درج ہوا۔اس وقت کے کنداپور سرکل انسپکٹر پی ایم دیواکر نے ملزم کے خلاف چارج شیٹ داخل کی تھی۔پرشانت کوعصمت دری کے اس کیس میں سخت سزا ہوئی تو وہ اپنے آپ پر قابو نہیں رکھ سکااور سرکاری وکیل پر حملہ کربیٹھا۔ پرشانت کے بارے میں معلوم ہواہے کہ برہماور پولیس اسٹیشن کے حدود میں وہ قتل کے ایک معاملے میں بھی ملزم ہے ۔اس کے علاوہ اس کے خلاف دیگر بہت سارے معاملات بھی عدالت میں زیر سماعت ہیں۔

سرکاری وکیل وجئے واسو پجاری نے جج کے سامنے بھری عدالت میں سزایافتہ مجرم کی طرف سے اپنے اوپرہونے والے حملے کو عدلیہ پر حملے کے مترادف بتایا اور کہا کہ متاثرہ افراد کو انصاف دلانے کا کام ان کی ذمہ داری ہے اور وہ اسے انجام دیتے رہیں گے۔ پولیس سپرنٹنڈنٹ لکشمن نمبرگی نے بتایا کہ سرکاری وکیل نے اڈپی پولیس اسٹیشن میں پرشانت کے خلاف اس حملے کی شکایت درج کروائی ہے۔ عدالت کی اجازت سے پولیس نے سرکاری وکیل پر پھینکے گئے جوتوں کو اپنے قبضے میں لیا ہے اور اس معاملے کی مزید تحقیقات آگے بڑھاتے ہوئے مجرم کو کاروار کی جیل میں بھیج دیا گیا ہے۔ بار ایسو سی ایشن نے بھی اس واقعے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اُڈپی:مذاہب کے تقابلی مطالعہ میں  ماہر نہال احمد اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیاکرناٹکا  (SIO) کے ریاستی صدر منتخب

گلبرگہ کے ہدایت سنٹر میں منعقدہ اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا کرناٹکا کے اسٹیٹ ایڈوائزی کونسل کی انتخابی  نشست میں  اُڈپی ضلع  سے تعلق رکھنے والے ایس آئی اؤ کے فعال و متحرک ممبر نہا ل احمد کدیور کو ایس آئی اؤ کی اگلی میقات 20196-2020کے لئے ریاستی صدر کی حیثیت سے منتخب ...

بھٹکل میں کنٹیروا فرینڈ س کے زیراہتمام خوبصورت کبڈی ٹورنامنٹ : میزبان ٹیم نے ہی جیتا خطاب

مٹھلی گرام پنچایت حدود والے  تلاند کے کٹے ویرا مہاستی میدان میں کنٹیروا فرینڈس کے زیراہتمام منعقدہ تعلقہ سطح کے 55کلو   کبڈی ٹورنامنٹ میں میزبان  کنٹیرو فرینڈس  نے فائنل  میں مہاستی منونڈو ٹیم کو شکست دیتے ہوئے خطاب جیت لیا ۔

بھٹکل میں 1009آخری رسومات امداد کی عرضیاں  باقی : دوبرسوں سے عوام امداد کے انتظار میں

آخری رسومات منصوبے کے تحت اترکنڑا ضلع کو سال 2018-2019میں 38.10لاکھ روپئے کی امداد منظور کی گئی ہے، تیسری قسط کے طورپر 20.30لاکھ روپئے منظور کئے جارہے ہیں، کل 1009عرضیوں کو معاشی امداد  باقی رہنے کی ریاست کے وزیر تحصیل آر وی دیش پانڈے نے  سرمائی اجلاس کے دوران تحریری جانکاری دی ہے۔

کرناٹکا سے گوا کے لئے  مچھلی سپلائی پابندی میں ڈھیل:چھوٹی سواریوں کے ذریعے مچھلی سپلائی کی اجازت: دیشپانڈے کی کوشش رنگ لائی  

ریاست سے گوا کوچار پہیہ سواری سمیت چھوٹی سواریوں کےذریعے مچھلی   سپلائی پر کوئی پابندی نہیں ہونے کی ریاستی کابینہ کے اسکل ڈیولپمنٹ اور تحصیل وزیر آر وی دیش پانڈے نے جانکاری دی ہے۔

مینگلور میں سابق وزیر پلّم راجو نے کیا ریفائیل معاہدے کے سلسلے میں جوائنٹ پارلیمنٹری کمیٹی کے ذریعے تحقیقات کا مطالبہ

سابق مرکزی وزیر پلّم راجو نے منگلورو میں میڈیا سے بات چیت کے دوران مطالبہ کیا کہ جنگی ہوائی جہاز ریفائیل کی خریداری میں ہوئی بدعنوانی کے تعلق سے تحقیقات کے لئے جوائنٹ پارلیمنٹری کمیٹی تشکیل دی جانی چاہیے ۔

کانگریس لیجسلیچر پارٹی میٹنگ میں سدرامیا پھر غالب، ہنگامہ خیزی کے اندیشوں کے برعکس میٹنگ میں کسی نے بھی زبان نہیں کھولی

حسب اعلان 22دسمبر کو ریاستی کابینہ میں توسیع کی تصدیق کرتے ہوئے آج سابق وزیراعلیٰ اور کانگریس لیجسلیچر پارٹی لیڈر سدرامیا نے تمام کانگریسی اراکین کو خاموش کردیا۔

مندروں کو دئے جانے والے فنڈز کو فرقہ وارنہ رنگ دینے بی جے پی کی مذموم کوشش، اسمبلی میں اسپیکر نے فرقہ پرست جماعت کی ایک نہ چلنے دی

وقفۂ سوالات میں بی جے پی رکن اسمبلی سی ٹی روی کی طرف سے سوالات تک خود کو محدود رکھنے کی بجائے ایک معاملے پر بحث شروع کرنے کی کوشش کو جب اسپیکر رمیش کمار نے روک دیا تو اس بات پر بی جے پی اراکین اور اسپیکر کے درمیان نوک جھونک شروع ہوگئی۔

ریاست کرناٹک میں 800 نئے سرویرس کا تقرر

وزیر مالگزاری آر وی دیش پانڈے نے آج ریاستی اسمبلی کو بتایاکہ ریاست بھر میں اراضی سروے کی ذمہ داری ادا کرنے کے لئے محکمے کی طرف سے 800نئے سرویرس کا تقرر کیا گیا ہے۔

پسماندہ طبقات کے سروے کی رپورٹ تیاری کے مراحل میں: پٹ رنگا شٹی

ریاستی وزیر برائے پسماندہ طبقات پٹ رنگا شٹی نے کہا ہے کہ سابقہ سدرامیا حکومت کی طرف سے درج فہرست طبقات کی ہمہ جہت ترقی کو یقینی بنانے کے مقصد سے جو سماجی ومعاشی سروے کروایا گیا تھا اس کے اعداد وشمار کو کمپیوٹرائز کرنے کا عمل جاری ہے۔