قطر کی 80 ممالک کیلئے ویزا فری اسکیم؛ ہندوستانیوں کو بھی اب ملے گی فری ویزا

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 10th August 2017, 1:54 AM | خلیجی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

دوحہ 9/اگست (ایس او نیوز) قطرنے اعلان کیا ہے کہ ہندوستان سمیت  80 ممالک کے شہری اب بغیر ویزا ان کے ملک میں داخل ہو سکیں گے اور اس کا اطلاق فوری طور پر ہو گا۔ جن ممالک کے شہری اس سہولت سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں ان میں انڈیا، امریکا، برطانیہ، جنوبی افریقہ، سیچیلیس، آسٹریلیا، نیوزی لینڈ و دیگر شامل ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ان 80 ممالک کے وہ شہری جو قطر آنے کے خواہش مند ہیں انہیں پیشگی ویزا لینے کی ضرورت نہیں ہو گی بلکہ قطر پہنچنے پر ایئرپورٹ پر ہی انہیں ملٹی انٹری ویزا جاری کیا جائے گا جو بالکل مفت ہو گا۔ ویزا حاصل کرنے والے افراد کو محض اپنا پاسپورٹ دکھانا ہو گا جس کے ختم ہونے کی معیاد چھ ماہ سے زیادہ ہونی چاہیئے جبکہ ساتھ ہی انہیں ریٹرن ٹکٹ بھی پیش کرنا ہو گا۔

ان ملکوں کے شہریوں کو ایئرپورٹ پر ہی ویزے سے استثنیٰ کی سہولت دی جائے گی جو 180، 90 یا پھر 30 دن کے لیے اور قابل تجدید ہو گی۔ قطر کے قائم مقام چیئرمین برائے سیاحتی اتھارٹی حسان الابراہیم کا کہنا ہے کہ 80 ممالک کے لیے ویزا فری انٹری کی سہولت کے ساتھ قطر خطے میں سب سے زیادہ قابل رسائی ملک بن گیا ہے اور ہم ان ممالک کے شہریوں کو دعوت دیتے ہیں کہ وہ قطر آئیں اور ہماری میزبانی، ثقافت اور قومی ورثے سے محظوظ ہوں۔

قطر کی جانب سے فراہم کی جانے والی 80 ممالک کی فہرست میں پاکستان کا نام شامل نہیں ہے۔ خیال رہے کہ سعودی عرب سمیت 5 خلیجی ممالک نے دہشت گردوں کی حمایت کا الزام عائد کرکے قطر کا بائیکاٹ کر رکھا ہے اور اس پر اقتصادی پابندیاں بھی عائد کر دی ہیں جس کے بعد قطر اپنی معیشت کو مستحکم رکھنے کے لیے مختلف طریقے آزما رہا ہے۔

یاد رہے کہ تیل سے بھرا قطر 2022 میں فٹ بال ورلڈ کپ کی میزبانی کرنے جا رہا ہے.
 

 

 

ایک نظر اس پر بھی

ایک ملین سے زائد عازمین حج کی سعودی عرب آمد

سعودی عرب میں عازمین حج کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔ ڈاریکٹوریٹ جنرل برائے پاسپورٹس کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ گذشتہ روز تک فریضہ حج کی ادائی کے لیے آنے والے عازمین حج کی تعداد 11لاکھ 51ہزار 10درج کی گئی ہے۔

سائیکل سوار قافلہ حجاج کی حجاز مقدس آمد

دنیا بھر سے فریضہ حج کی ادائی کے لیے عازمین حج قافلوں کی شکل میں حجاز مقدس پہنچ رہے ہیں۔ برطانیہ سے عازمین حج کا ایک قافلہ سائیکلوں پر تین ہزار کلومیٹر کا سفر طے کرکے مدینہ منورہ پہنچا جہاں سرکاری سطح پر ان کا والہانہ استقبال کیا گیا۔

سعودی حج پروازوں کو دوحہ میں اترنے سے روکنے پر افسوس ہے،دوحہ عازمین حج کے سفر میں رکاوٹ نہ ڈالے:الشیخ عبداللہ آل ثانی

قطری حجاج کرام کے حوالے سے سعودی حکام کے ساتھ مصالحت کے لیے کوشاں قطر کے شاہی خاندان کے رکن الشیخ عبداللہ بن علی آل ثانی نے قطری حکومت کی جانب سے سعودی فضائی کمپنی کی خصوصی حج پروازوں کو دوحہ میں اترنے سے روکنے جانے پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔

سعودی ایئرلائن کی دوحہ کے لیے حج پروازیں روک دی گئیں،قطر کی ہٹ دھرمی عازمین حج کے سفر میں رکاوٹ بن گئی

سعودی عرب کی جنرل ایئر لائن آرگنائزیشن کی جانب سے کہا گیا ہے کہ قطر کی طرف سے حمد بین الاقوامی ہوائی اڈے پر اترنے کی اجازت نہ ملنے کے بعد دوحہ کے لیے حج پروازیں روک دی گئی ہیں۔

بھٹکل:مٹھلی میں شراب دکان کے خلاف خواتین سمیت سیکڑوں دیہی عوام کا احتجاج: بند نہیں کیا گیا تو سخت احتجاج کی دھمکی

تعلقہ کے مٹھلی گرام پنچایت حدود کے ریلوے اسٹیشن کے قریب شروع کی گئی نئی شراب کی دکان بند کرنے کی مانگ لے کر دیہات کے سیکڑوں مرد وخواتین بدھ کی شام دکان کا گھیراؤ کرتے ہوئے احتجاج کیا۔

بھٹکل میں نیشنل ہائی وے کی توسیع کو لے کر تنظیم اور دیگر اداروں کی مخالفت میں جئے کرناٹکا سنگھا کا میمورنڈم

بھٹکل شہر سے گزرنے والی قومی شاہراہ کی توسیع کا کام پہلے سے جس طرح طئے شدہ ہے اسی کے مطابق انجام دیاجائے ،رخ بدل کر بائی پاس کی تعمیر نہ کرنےکا مطالبہ لےکر بھٹکل جئے کرناٹکا سنگھ کے کارکنان نے منگل کی شام بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر دفتر کے ذریعے اترکنڑا ضلع ڈی سی کو میمورنڈم سونپا۔ ...

گنگولی میں کچرا ٹھکانے لگانے کا مرکز قائم کرنے کے خلاف عوام کا احتجاج

کنداپور تعلقہ کے گنگولی کے قریب باوی کٹہ علاقہ کے پورٹ یارڈ میں پنچایت کی طرف سے کچروں کو ٹھکانے لگانے  کا مرکز قائم کئے جانے کی مخالفت میں مقامی عوام نے سخت احتجاج کیا اور پنچایت آفس کے سامنے ہی دھرنے پر بیٹھ گئے۔ احتجاجیوں کا مطالبہ تھا کہ وہ کسی بھی حال ہی میں متعلقہ جگہ پر ...

بھٹکل: مجلس ِ اصلاح وتنظیم کے زیر اہتمام طالبات کے لئے منعقدہ مضمون نویسی مقابلہ جات کے نتائج

مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کے زیر اہتمام یوم ِ آزادی کی مناسبت سے ہائی اسکول ، کالج کی طالبات کے مابین اردو، کنڑا اور انگریزی زبانوں میں منعقد کئے گئے مضمون نویسی مقابلہ جات کےتنظیم کی تعلیمی و ثقافتی کمیٹی کی طر ف سے اعلان کیا گیا۔ جس کی تفصیل کچھ اس طرح ہے۔