کڈبا کے بی جے پی یوتھ لیڈر پر حملہ،حملہ آور گرفتار،ہندتووا تنظیموں کی طرف سے بند کا اعلان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th July 2017, 1:04 PM | ساحلی خبریں |

پتور ،17؍جولائی (ایس او نیوز) پتور کے کڈبا علاقے میں بی جے پی یوتھ لیڈر رمیش کلپورے(۴۵سال) پراس وقت کچھ لوگوں نے حملہ کیا جب وہ سوپر مارکیٹ سے سامان خریدنے کے بعد اپنی جیپ کی طرف بڑھ رہا تھا۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق جب چار پانچ نوجوانوں کے ایک گروہ نے رمیش پر لکڑے کے تختے سے حملہ کیا تو فوراً وہاں بھیڑ جمع ہوگئی اور حملہ آوروں کو پکڑکر پولیس کے حوالے کیا۔ حملہ آوروں کی شناخت پرکاش، ٹین سن، سنوش، لیجو اور سنتوش کے طور پر کی گئی ہے۔ رمیش کے چہرے اور ناک پر زخم آئے جسے علاج کے لئے اسپتال میں داخل کیاگیا ہے۔

عوام کا کہنا ہے کہ خوش قسمتی سے بھیڑ نے موقع پر ہی حملہ آوروں کو دھر دبوچ لیا ، ورنہ یہ حملہ بھی فرقہ وارانہ رنگ اختیار کرجاتا ۔ لیکن اس حقیقت کے باوجود کہ اس میں فرقہ واریت کی کوئی بات ہے ہی نہیں،پھر بھی بی جے پی اور ہندتوا تنظیموں نے بطوراحتجاج پتو ر بند کا اعلان کردیا۔ پتہ نہیں چل سکا کہ یہ احتجاج آخر کس کے خلاف ہونے جارہا ہے۔ 

کہا جاتا ہے کہ کڈبا پولیس اسٹیشن میں گرفتار شدہ ملزمین اور رمیش کے حامیوں کے بیچ بہت ہی گرماگرم بحث اور تکرار ہوئی اور وہاں حالات کو قابو میں کرنے کے لئے پولیس کو بڑی مشقت کرنی پڑی۔ اس سے لگتا ہے کہ یہ آپسی رنجش اور گروہی تصادم کا معاملہ ہے۔رمیش نے پولیس کے پاس اپنی شکایت میں بتایا ہے کہ حملہ آوروں نے اس کے پاس موجود 55ہزار روپے نقد، ایک سونے کا بریس لیٹ اور موبائل فون چھین لیاہے۔مگر کچھ لوگ اس بات پر تعجب کررہے ہیں کہ جب فوری طور پر موقع پر ہی حملہ آوروں کو بھیڑ نے پکڑ لیا اور پولیس کے حوالے کردیا ہے تو پھرحملہ آور نقدی ، بریس لیٹ اور موبائل وغیرہ چھین لے جانے میں کیسے کامیاب ہوگئے!

ایک نظر اس پر بھی

کمٹہ بلاک کانگریس دفتر کا ضلعی صدر بھیمنانائک کے ہاتھوں افتتاح

مورور کے قریب اُڈپی ہوٹل سےمتصل کمٹہ بلاک کانگریس کے دفتر کا ضلع کانگریس کمیٹی صدر بھیمنا نائک نے افتتاح کرنے کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کی سہولت کے لئے دفتر کا افتتاح کیاگیا ہے عوام اپنی شکایات اور مسائل کو یہاں پیش کرکے حل حاصل کرسکتےہیں۔ عوامی مسائل کے سلسلے میں ہی اس ...

بھٹکل کے اتی کرم داروں کو اراضی دستاویزات میں تاخیر کرنے پرراما موگیر برہم؛ ہزاروں آتی کرم داروں کی طرف سے احتجاج کا انتباہ

بیرونی ملک سے ضلع کو آئے تبتی(ٹبیٹین)عوام کو رہائش کے لئے ضلعی انتطامیہ نے مواقع فراہم کیا ہے۔ ضلع میں ہی پیدا ہوکر پرورش پانے والوں کو زمینی دستاویز(حق پترا) دینے کے لئے افسران ہی اہم وجہ سبب ہونے کا تعلقہ اتی کرم دارر ہوراٹ سمیتی کے صدر راما موگیر نے سخت برہمی  کااظہارکیا۔

بھٹکل اسمبلی حلقے میں کھیلا جارہا ہے ایک نیا سیاسی کھیل! کون بنے گا کانگریسی اُمیدوار ؟

یہ کوئی ہنسی مذاق کی بات ہرگز نہیں ہے۔بھٹکل کی موجودہ جو صورتحال ہے اس میں ایک بڑا سیاسی گیم دکھائی دے رہاہے۔ کیونکہ 2018کے اسمبلی انتخابات کی تیاریوں میں لگی ہوئی سیاسی پارٹیاں اپنا امیدوار کون ہوگا اس پر توجہ دینے کے ساتھ ساتھ مخالف پارٹیوں سے کون امیدوار بننے پر ان کی جیت کے ...