نسل پرستی کے خاتمہ کے لیے بین نسلی شادی کو فروغ دیں:اٹھاولے

Source: S.O. News Service | By Safwan Motiya | Published on 21st July 2016, 9:12 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 21؍جولائی(ایس اونیوز/آئی این ایس انڈیا )حال ہی میں مرکزی کابینہ میں شامل کئے گئے دلت لیڈر رام داس اٹھاولے نے گجرات میں دلتوں پر حملوں جیسے واقعات نہیں دہرائے جانے پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ گائے کا تحفظ ضروری ہے لیکن انسانوں کی حفاظت کون کرے گا؟انہوں نے کہا کہ صرف قانون سے اس بات کی یقینی نہیں بنایا جاسکے گا کہ دلتوں کے خلاف جرائم نہ ہوں ۔انہوں نے مشورہ دیا کہ نسلی شادیوں کو فروغ دینے سے معاشرے میں ذات پات کو کنٹرول کرنے میں مدد ملے گی۔یہاں ایک پروگرام سے الگ انہوں نے نامہ نگاروں سے کہاکہ سبھی کو ساتھ مل کر کام کرنا چاہیے اور کسی کو واقعات کو سیاسی رنگ نہیں دیناچاہیے ۔انہوں نے کہاکہ صرف قانون سے اس بات کو یقینی نہیں بنایا جا سکے گا کہ دلتوں کے خلاف جرائم نہ ہوں ۔اس لیے لوگوں کو ساتھ کام کرنے کی ضرورت ہے، قانون اپنا کام کرے گا،جب تک سماج میں تبدیلی نہیں آئے گی نسلی شادی کو فروغ دینا چاہیے ، جب تک سماج کے دو فریقوں کو ساتھ لانے کی کوشش نہیں کی جاتی ، مجھے لگتا ہے کہ اس وقت تک نسل پرستی ختم نہیں ہوگی ۔گجرات میں ایک مردہ گائے کی کھال اتارے جانے پر دلتوں پر کئے گئے حملے کو لے کر پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اس طرح کے واقعات نہیں ہونے چاہئیں ۔سماجی انصاف اورتفویض اختیارات کے وزیرمملکت اٹھاولے نے کہاکہ پیغام یہ ہونا چاہیے کہ دلت بھی اس ملک کے شہری ہیں، ان کا بھی احترام کیا جانا چاہیے ، گا ئے کا تحفظ ضروری ہے لیکن انسانوں کی حفاظت کون کرے گا، لوگوں کو اس طرح حملہ کرنے کا حق نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

شہیدوں کے گھر ’درد کے دریا کا سیلاب‘ تھا اور مودی دریا میں شوٹنگ کر رہے تھے: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے پلوامہ دہشت گردانہ حملے والے دن وزیر اعظم نریندر مودی کے ایک چینل کے لئے فلم کی شوٹنگ کرنے سے متعلق خبروں کو لے کر جمعہ کو ان پر حملہ بولا اور الزام لگایا کہ جب شہیدوں کے گھر دردکے دریا کا سیلاب تھا تو پرائم ٹائم منسٹر 'ہنستے ہوئے دریا میں شوٹنگ کر رہے ...

عظیم اتحادملک کے لیے اچھانہیں،اپوزیشن کے پاس کوئی نظریہ اورکوئی لیڈرنہیں ہے، امت شاہ کوپھرمہاگٹھ بندھن سے شکایت،کانگریس اورلیفٹ کونشانہ بنایا

جھک کرلوجپا،شیوسینا،جدیواورڈی ایم کے کے ساتھ اتحادکرنے والی بی جے پی صدر امت شاہ نے جمعہ کو اپوزیشن پارٹیوں کے مجوزہ مہاگٹھ بندھن پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملک کے لیے اچھا نہیں ہے۔

بہار کے سابق وزیرالیاس حسین کو 22 سال پرانے کول تار گھوٹالے میں 5 سال کی سزا

مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کی خصوصی عدالت نے جمعہ کو کول تار گھوٹالے میں بہارکے سابق وزیرالیاس حسین اورچاردیگر کو پانچ سال قید کی سزا سنائی اور ایک ٹھیکیدار کو اس معاملے میں سات سال کی سزا سنائی۔