بھٹکل اسمبلی حلقے میں سیاسی موقف کے تعلق سے کینرا مسلم خلیج کاونسل کے صدر عبدالقادر باشاہ صاحب کی وضاحت

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 1st April 2018, 9:26 PM | ساحلی خبریں | خلیجی خبریں |

بھٹکل یکم اپریل (ایس او نیوز)بھٹکل حلقہ اسمبلی کے امیدوار کے بارے میں کینرا مسلم خلیج کاونسل کے اجلاس میں فیصلے کے تعلق سے کاونسل کے ذمہ داران سے براہ راست ٹیلی فون پر رابطے کے بعد جو رپورٹ ساحل آن لائن نے شائع کی تھی اس ضمن میں مختلف پہلوؤں سے عوام میں بحث اور گفتگو چل پڑی ہے اور ا س کا سیدھا مطلب یہ لیا گیا ہے کہ ہمارے صد سالہ قدیم مرکزی ادارے مجلس اصلاح و تنظیم اور اس کے سیاسی پینل کو نظر انداز کرتے ہوئے کینرا مسلم خلیج کاونسل نے اپنے طور پرفیصلہ کیا ہے اور اس سے ہماری اجتماعیت کو دھچکا لگا ہے۔

اس پس منظر میں کینرا مسلم خلیج کاونسل کے صدر جناب عبدالقادر باشاہ رکن الدین صاحب نے وضاحت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ’’ کینرا مسلم خلیج کاونسل کے مذکورہ اجلاس میں بہت سارے دیگر اہم ایجنڈوں کے ساتھ ایک ایجنڈہ’سال روں 2018تنظیم کے امیدوار کو کامیاب بنانے کے لئے کینرا کاونسل کی ممبر جماعتوں کی طرف سے اجتماعی کوشش ‘بھی تھا جس پر گفتگو کرتے ہوئے اجلاس میں شریک تمام جماعتوں نے اس بات کی نشاندہی کی کہ کرناٹکا میں کانگریس اور سدارامیا کی لیڈرشپ میں جو سیکیولرازم کی فضا بنی ہوئی ہے اس کی وجہ سے اس وقت کانگریس پارٹی کا ساتھ دینابہتر ہے۔ اس سلسلے میں گلف کی بعض بھٹکلی    جماعتوں کی طرف سے تحریری طور پر تنظیم کو مطلع کیے جانے کی بات بھی سامنے آئی۔ لہٰذا طے پایا کہ کینرا مسلم خلیج کاونسل کی جانب سے تحریری طور پرتنظیم سے گزارش کی جائے کہ اس کے ذمہ داران کانگریس کی اعلیٰ لیڈرشپ سے اپنی حکمت عملی کے ساتھ گفت وشنید کریں اور ہمارے مطالبات ان کے سامنے رکھتے ہوئے انہیں پورا کرنے کی یقین دہانی کے ساتھ سیکیولر امیدوار کی تائید کا یقین دلائیں اورفسطائی طاقت کو ابھرنے سے روکیں۔ اور اس کے بعد کینرا کی تمام جماعتیں متحد ہوکرکانگریسی امیدوار کو جتانے کے لئے کام کریں۔‘‘

صدر موصوف نے مزید واضح کیا کہ’’کینرا مسلم خلیج  کاونسل کے دستور کے مطابق تنظیم ان کے لئے مقدم ہے اور اس کو نظر انداز کرنا اور اس کے اختیارات کے برخلاف فیصلے کرنا ان کا مقصد نہیں ہے۔ صرف درپیش سیاسی حالات اورمختلف مقامات سے دستیاب رجحان کے پس منظرمیں تنظیم کے سامنے تجویز پیش کی گئی ہے۔ جو بھی حتمی فیصلہ ہوگا وہ تنظیم کے ٹیبل پر ہی لیا جائے گااور سب کے لئے قابل قبول ہوگا۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

کاروار:بس کے ذریعے غیرقانونی سپلائی کی جارہی شراب ضبط :دوخواتین پولس کی تحویل میں

کے ایس آرٹی سی بس میں غیر قانونی طورپر شراب سپلائی کے دوران چھاپہ مار کر ڈی سی بی پولس نے 20ہزار روپئے مالیت کی شراب ضبط کرلی ہے اور دو خاتون ملزموں کو گرفتارکرکے کیس درج کرلینے کا واقعہ پیش آیاہے۔

اُڈپی میں دستور بچاؤ ،ملک بچاؤ اجلاس : اقلیتوں کو منصوبہ بند طریقے سے کچلنے کی سازش کی جارہی ہے: پرکاش رائی کا خطاب

اکثریت بہت ہی منصوبہ بند سازش کے ذریعے اقلیت کو کچلنے کی کوشش کررہی ہے،ایسی گہری فریبی سازشیں ہورہی ہیں کہ شرفاء تصور بھی نہیں کرسکتے،آج ایسے فریبی بہت بڑے انسان بن گئے ہیں۔دستور کو تشکیل دینےو الے ڈاکٹر امبیڈکر کی مورتی کو زنجیروں کو جکڑ کر رکھا گیا ہے۔ مشہور فلمی ایکٹر ...

بحرین : 24 شیعہ افراد کو دہشت گرد گروپ تشکیل دینے پر جیل کی سزائیں ، شہریت منسوخ

بحرین میں ایک عدالت نے 24 شیعہ افراد کو ایک دہشت گرد گروپ تشکیل دینے اور تخریبی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزامات میں قصور وار قرار دے کر مختلف مدت کی قید کی سزائیں سنائی ہے اور ان تمام کی بحرین کی شہریت منسوخ کردی ہے۔

عسیر میں چیک پوسٹ پر فائرنگ سے چار سعودی سیکیورٹی اہلکار شہید

سعودی عرب میں علاقے عسیر میں چیک پوسٹ پر فائرنگ کے نتیجے میں چار سکیورٹی اہلکار شہید اور متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔ حملے کے وقت پانچ اہلکار ڈیوٹی انجام دے رہے تھے۔ فائرنگ سے تین اہلکار موقع پر جبکہ چوتھا ہسپتال منتقلی کے دوران جام شہادت نوش کر گیا۔

سعودی سیکیورٹی اہلکاروں کو شہید کرنے والا مجرم کون تھا 

سعودی عرب کے صوبے عسیر میں جمعرات کے روز ایک چیک پوسٹ پر فائرنگ کے واقعے میں چار سکیورٹی اہل کار شہید اور متعدد زخمی ہو گئے۔ اس مجرمانہ کارروائی میں شریک افراد میں 34 سالہ بندر الشہری بھی شامل تھا جو سعودی شہری دفاع کا اہل کار تھا۔ الشہری سکیورٹی فورسز کی جوابی فائرنگ کے نتیجے ...