بیندور: ایک شخص کی مشتبہ موت کا معاملہ۔ پولیس نے اپنے طور پر درج کیا کیس۔ تحقیقات کے لئے عدالت سے مانگی اجازت

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 30th April 2018, 7:27 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بیندور 30؍اپریل (ایس او نیوز) یہاں سے قریبی گاؤں گولی ہولے میں 28اپریل کو ایک شخص کی مشتبہ حالت میں موت واقع ہونے اور خاموشی کے ساتھ اسے نذر آتش کیے جانے کی اطلاع موصول ہونے پر پولیس نے خود اپنے طور پر معاملہ درج کرلیا ہے اور اگلی تحقیقات کے لئے عدالت سے اجازت طلب کی ہے۔

بتایا جاتا ہے کہ موتیّا نائکا نامی شخص کی لاش اس کے گھر والوں نے کسی کو خبر کیے بغیر اپنے گھر کے پاس موجود زمین پر جلا ڈالی اور  پوچھنے والوں کو یہ بتایا کہ موتیّا نے خود کشی کرلی تھی۔ گاؤں میں  کھلے عام اس شبہ  کا اظہار کیا جارہا تھا  کہ شاید اس کے بھائی نے ہی اس کو قتل کردیا ہوگا اسی لئے رازداری کے ساتھ اسے نذر آتش کیا گیا ہے۔ کیونکہ گاؤں والے جانتے تھے کہ گزشتہ تین مہینے قبل اپنے والد کی موت کے بعد موتیّا نائکا ممبئی سے گھر واپس لوٹاتھا۔ وہ بری طرح شراب کا عادی ہوچکا تھااور ہمیشہ گھر والوں کے ساتھ جھگڑے کیاکرتا تھا۔ اپنی ماں سے شراب کے لئے پیسے مانگ کر بہت تنگ کیاکرتاتھا۔ گاؤں والے سوال کررہے تھے کہ اگر موتیّا نے خودکشی کی تھی تو گھر والوں نے پاس پڑوس والوں کو کیوں خبر نہیں کی۔ اس کے علاوہ اس معاملے کی اطلاع پولیس کو نہ دینے کا کیا راز ہے؟

پولیس نے افواہوں پر توجہ دیتے ہوئے اس مقام کا معائنہ کیا جہاں لاش جلائی گئی تھی۔ اس جگہ پرسوکھے اور ہرے بھرے درختوں کو کاٹنے اور لاش جلانے کے آثار دکھائی دئے۔ اس کے علاوہ اس مقام سے ایک پھاوڑا اور کُدال وغیر ہ بھی برآمد ہوئے۔البتہ آخری رسومات ادا کرنے کی مذہبی علامات کا کوئی نام ونشان وہاں پر موجود نہیں تھا۔اس بنیاد پر عوام کا شک بڑھ گیا کہ آپسی جھگڑے میں اس کے بھائی کے ہاتھوں ہی  اس کی   موت واقع ہوئی ہوگی۔

اب دیکھنا یہ ہے کہ پولیس نے رضاکارانہ طورپر اس کیس کو ہاتھ میں لینے اور تحقیقات کرنے کا جو فیصلہ کیا ہے اس کے کیا نتائج سامنے آتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں سنیل نائک کی جیت پر بی جے پی ورکروں اور لیڈروں کا شکریہ ادا کرنے خصوصی پروگرام

بھٹکل میں بی جے پی لیڈروں اور ورکروں کی کوششوں سے نوجوان چہرہ اور پہلی بار کسی انتخابات میں حصہ لینے والے  سنیل نائک کی اسمبلی انتخابات میں شاندار جیت ہوئی ہے، ان کی جیت میں اہم رول ادا کرنے والوں  کا شکریہ ادا کرنے ایک اہم پروگرام یہاں کے ایک پروگرام ہال میں  منعقد کیا گیا

30تا 40 حلقوں میں ای وی ایم سے چھیڑ چھاڑ کی گئی ہے؛کانگریسی لیڈر ہری پرساد کا الزام؛ کانگریس کا 78 سیٹوں پر محدود ہونے کا اہم سبب ای وی ایم مشین ؟

کرناٹکا اسمبلی الیکشن کے بعد ای وی ایم مشینوں سے چھیڑ چھاڑ کی خبریں ادھر ادھر سے آرہی تھیں، لیکن اب کانگریس پارٹی کی طرف سے اے آئی سی سی کے جنرل سکریٹری بی کے ہری پرساد نے باقاعدہ الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ  کم ازکم 30تا40حلقوں میں ای وی ایم سے چھیڑ چھاڑ کی گئی ہے۔ 

منگلورو سب جیل میں قیدیوں کے بیچ مارپیٹ

کوڈیال بیل میں واقع سب جیل میں قیدیوں کے بیچ مارپیٹ کی واردات پیش آئی ہے۔ کہاجاتا ہے کہ ایک سے زیادہ جرائم میں ملوث جلیل اور امتیاز نامی دو ملزم اس سب جیل میں قید ہیں اور یہ مار پیٹ ان دونوں کے درمیان پیش آئی ہے۔

بی جے پی کیخلاف کانگریس کا جاری کردہ ٹیپ جعلی، کرناٹک کانگریس رکن اسمبلی کابیان، کانگریس پریشان 

بی جے پی کے خلاف کانگریس کے ایک جاری کردہ ٹیپ سے کانگریس کی ٹکٹ پر جیت درج کرنے والے یلاپور کے رکن اسمبلی شیورام ہیبار نے پارٹی کی جانب سے جاری کردہ ٹیپ کو جعلی قرار دیاہے۔ اور اس بات کو غلط قرار دیا ہے کہ بی جے پی کی طرف سے انہیں رقم کی پیشکش کی گئی تھی اور وزارتی عہدہ دینے کا بھی ...

فتح کے جشن میں پاکستان نواز نعرے بازی کا جھوٹا ویڈیو۔ مینگلور پولس اسٹیشن میں کانگریس کی طرف سے شکایت درج

بی جے پی کے وزیراعلیٰ ایڈی یورپا کے استعفیٰ دینے اور کانگریس جے ڈی ایس محاذ کے لئے حکومت سازی کی راہ ہموار ہونے کی خوشی میں منگلور و کے کانگریس دفتر میں جشن فتح منایاگیاتھا۔ لیکن اس تعلق سے ایک ویڈیو کلپ سوشیل میڈیا پر عام ہواتھا جس میں جشن کے دوران پاکستان نواز نعرے بازی ...

۲۴؍ سالوں سے جیل میں مقید ملزم کی پیرول پر رہائی کی عرضداشت منظور؛ دیگر ملزمین کو بھی راحت ملنے کی گلزار اعظمی کو امید

گذشتہ ۲۴؍ سالوں سے جیل کی سعوبتیں جھیلنے والے ایک مسلم شخص کی پیرول پر رہائی کے لیئے جمعیۃ علماء کے توسط سے سپریم کورٹ آف انڈیا میں داخل عرضداشت پر کارروائی کرتے ہو ئے سپریم کورٹ آف انڈیا کی دو رکنی بینچ نے ملزم کو ۲۱؍ دنوں کے لیئے پیرول پر رہا کئے  جانے کے احکامات جاری کئے ...

کرناٹک انتخابات:کانگریس کے ان لیڈروں نے بگاڑ دیا بی جے پی کا کھیل

کانگریس صدر راہل گاندھی کے پارٹی کے اندر نوجوانوں کی حوصلہ افزائی کرنے اور انہیں آگے بڑھانے کی پالیسی اپنانے کے باوجود کرناٹک میں جنتا دل (ایس) کے ساتھ مخلوط حکومت بنانے کے فارمولے کو انجام تک پہنچانے کی حکمت عملی میں پارٹی کے سینئر لیڈر ہی کام آئے۔