چندرابابو نائیڈو کو انتخابات میں شکست کا خوف:مودی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th February 2019, 9:08 PM | ملکی خبریں |

حیدرآباد،10 ؍فروری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) وزیراعظم نریندر مودی نے طنزیہ انداز میں کہا کہ اے پی کے وزیراعلی این چندرابابونائیڈو کئی معنوں میں ان سے سینئر ہیں،چندرابابواپنے سینئرس کی پیٹھ میں خنجر گھونپنے میں سینئر ہیں جس طرح انہوں نے اپنے خسر کی پیٹھ میں خنجر گھونپا تھا۔

وزیراعظم مودی نے ضلع گنٹور میں بی جے پی کے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چندرابابو ان سے سینئر ہونے کی بات یاددلاتے ہیں لیکن ان کو یہ نہیں بھولنا چاہئے کہ وہ ایک انتخابات کے بعد دوسرے کو ہارنے میں سینئر ہیں لیکن میں اس میں ان سے سینئر نہیں ہوں۔چندرابابو جس کو گالی دے رہے ہیں اس کی گود میں بیٹھنے میں سینئر ہیں اوراے پی کے خوابوں کو چور چور کرنے میں سینئر ہیں۔

وزیراعظم نے الزام لگایا کہ نام نہاد اتحادی جماعتوں کے اجلاس کے لئے دہلی کے دورہ کیلئے چندرابابو عوامی رقم کا استعمال کرر ہے ہیں انہیں ایک ایک پیسہ کا حساب دینا پڑے گا،مودی جو تلگودیشم کی این ڈی اے سے علحدگی کے بعد پہلی مرتبہ ریاست کا دورہ کر رہے ہیں نے کہاکہ نائیڈو ریاست میں اپنی مقبولیت سے محروم ہورہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چندرابابو اپنے سن رائز کی باتیں کرتے ہیں لیکن حقیقی معنوں میں وہ اپنے بیٹے کو آگے بڑھانے یعنی (son rise)کا کام کرر ہے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ چندرابابو نائیڈو کو انتخابات میں شکست کا خوف ہے،وہ اپنے بیٹے کو سیاست میں آگے بڑھارہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ چندرابابو نے مرکز کی فلاحی اسکیمات پرخود کا اسٹیکر لگادیا ہے۔ان کا سارا وقت مودی پر نکتہ چینی میں لگ گیا ہے۔وہ ریاست کی ترقی پر توجہ نہیں دیتے۔نائیدو کو انتخابات میں ناکامی کا خوف ستارہا ہے۔وہ اے پی کے عوام پر اپنے بیٹے کو مسلط کرنا چاہتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ چندرابابو دولت کو جمع کرنا جانتے ہیں۔امراوتی اور پولاورم رقم جمع کرنے کا ذریعہ چندرابابو کیلئے بن گئے ہیں لیکن چوکیدار ریاست کولوٹنے کا ان کو موقع نہیں دے گا۔وہ عوامی دولت کے چوکیدار ہیں۔چندرابابوکو چاہئے کہ وہ صرف لوکیش کو ہی نہیں بلکہ ہر بچہ کو اپنے بچہ کی طرح دیکھے۔انہوں نے کہاکہ ریاست میں باپ۔بیٹے کی حکومت ہے اس حکومت کا خاتمہ ہونا چاہئے۔کرپشن کی طاقتوں کو آئندہ انتخابات میں شکست ہونی چاہئے۔

انہوں نے اے پی کو خصوصی درجہ کے مسئلہ پر کہا کہ ان کی حکومت نے اے پی کو خصوصی پیکیج دیا ہے جو خصوصی درجہ سے کہیں زیادہ بہتر ہے۔خصوصی پیکیج کا نائیڈو نے استقبال کیا تھا تاہم انہوں نے اس سے انحراف کردیا۔انہوں نے کہا کہ وہ اس جھوٹ کے سلسلہ پر روک لگانا چاہتے ہیں۔گزشتہ 55مہینوں میں مرکزی حکومت نے اے پی کی ترقی کے لئے مناسب فنڈس دیئے ہیں تاہم ریاستی حکومت نے ان فنڈس کامناسب انداز میں استعمال نہیں کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مایاوتی نے ملائم سنگھ کو جتانے کی اپیل کی، ’ حقیقی لیڈر ‘ قرار دیا 

برسوں پرانی دشمنی بھول کر بی ایس پی سربراہ مایاوتی اور ایس پی سرپرست ملائم سنگھ یادو نے مین پوری میں جمعہ کو انتخابی ریلی کے دوران ایک اسٹیج پر مایاوتی نے ملائم کو جتانے کی اپیل کرتے ہوئے انہیں ’ حقیقی لیڈر‘ قرار دیا۔ 1995 میں ہوئے سرخیوں میں چھائے گیسٹ ہاؤس کانڈ کے بعد ایس پی سے ...

’ نیائے ‘ معیشت میں نئی جا ن ڈالے گا،نئے روزگارپیدا کرے گا :راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے جمعہ کو کہا کہ ان کی پارٹی کی کم سے کم آمدنی منصوبہ ( نیائے) معیشت میں نئی جان ڈالنے میں مدد کرے گا اور ملک میں روزگار کے مواقع پیدا کرے گی، جو نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی مار جھیل ر ہا ہے ۔ راہل نے یہا ں ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نریندر ...

سادھوی پرگیہ کے نازیبا تبصرے پر بھاجپا گھرگئی ، صفائی پیش کرنا پڑگئی 

بی جے پی نے ممبئی حملے میں شہید ہوئے پولیس افسر ہیمنت کرکرے کو لے کرکے گئے سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر کے متنازعہ تبصرے سے پلہ جھاڑ لیا ہے۔ پارٹی نے کہا کہ بی جے پی کا واضح خیال ہے کہ ہیمنت کرکرے دہشت گردوں سے لڑتے ہوئے شہید ہوئے تھے۔بی جے پی نے انہیں ہمیشہ شہید مانا ہے۔اس سے پہلے ...

رام ولاس پاسوان مہا گٹھ بندھن میں آنا چاہتے تھے

بہار کے سابق وزیر اعلی اور ہندوستانی عوام مورچہ (ہم) کے سربراہ جتن رام مانجھی نے جمعہ کو دعوی کیا کہ لوک جن شکتی پارٹی کے سربراہ رام ولاس پاسوان مہا گٹھ بندھن میں شامل ہونا چاہتے تھے، لیکن انہوں نے ان کی انٹری پر روک لگا دی۔ پٹنہ میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے مانجھی نے کہاکہ ...

بڑھ رہی ہے بے روزگاری، بہاراوراترپردیش سمیت 11 ریاستوں میں سب سے زیادہ اضافہ

ملک میں انتخابات کا ماحول ہے اور بے روزگاری کو لے کر کانگریس مودی حکومت پر حملہ آور ہے۔دوسری طرف حکومت کا کہنا ہے کہ ملک میں کافی روزگار ہیں لیکن انہیں پیمائش کا سسٹم ابھی نہیں تیار ہوا ہے۔نوکری پر ان الزام تراشیوں کے درمیان سرکاری اعداد و شماراین ایس ایس اوکے ہیں جو ملک کی ...