فوجی اڈوں کی میزبانی کے لیے کئی ممالک تیار ہیں:ٹرمپ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th July 2017, 12:34 PM | خلیجی خبریں | عالمی خبریں |

دبئی،16جولائی(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک بار پھر قطر کی جانب سے دہشت گردی کی حمایت پر کڑی نکتہ چینی کی ہے اور کہا ہے کہ قطر میں امریکی فوجی اڈے کی موجودگی امریکا کی مجبوری نہیں۔ خطے کے کئی دوسرے ممالک اپنے ہاں امریکی فوجی اڈوں کے قیام کے لیے تیار ہیں۔امریکی ٹیلی ویژن CBN کو دیے گئے ایک انٹرویو میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ قطر دہشت گردوں کے مالی معاون کیطور پر مشہور ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ دوحہ دہشتگردی کی معاونت فوری طور پر روک دے۔ایک سوال کے جواب میں امریکی صدر کا کہنا تھا کہ ان کے ملک کے قطر کے ساتھ اچھے تعلقات قائم ہیں۔ قطر میں امریکی فوجی اڈے کی موجودگی پر بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگرامریکا مجبور ہوا تو دوحہ میں فوجی اڈا ختم کیا جاسکتا ہے۔ دسیوں ممالک اپنے ہاں امریکی فوجی اڈے کے قیام کے لیے تیار ہیں۔امریکی صدر کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کا پیٹ بھرنے اور ان کی ضروریات پوری کرنے والے ممالک کو اپنی پالیسی بدلنا ہوگی۔ وحشی کو بھوکا رکھ کر اسے ختم کرنا ہوگا۔ دہشت گردی وحشت ہے اور اس کی مالی معاونت کا کوئی جواز نہیں۔قطر کے معاملے میں امریکی انتظامیہ کے درمیان پائے جانے والے اختلافات پر بات کرتے ہوئے صدر ٹرمپ نے کہا کہ دوحہ کے حوالے سے ان کے وزیرخارجہ ریکس ٹیلرسن کے ساتھ اختلافات معمولی نوعیت کے ہیں۔ تعبیر اور طریقہ کار پر معمولی اختلاف ہے جسے جلد ختم کردیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

متحدہ عرب امارات میں حفظ قرآن جرم، حکومت کی منظوری کے بغیر کوئی شخص قرآن حفظ نہیں کرسکتا، مساجد میں مذہبی تعلیم اور اجتماع پر بھی پابندی

مشرقی وسطیٰ کے مختلف ممالک میں داخل اندازی اور عرب کی اسلامی تنظیموں کو دہشت گرد قرار دینے کے بعد متحدہ عرب امارات قانون کے ایسے مسودہ پر کام کررہا ہے جس کی رو سے حکومت کی منظوری کے بغیر قرآن شریف کا حفظ بھی غیرقانونی ہوگا۔

سعودیہ میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن میں سب سے زیادہ تعداد پاکستانیوں کی نکلی

سعودی عرب کی وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے واضح کیا ہے کہ اقامہ و محنت قوانین اور سرحدی سلامتی کے ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والے 140 مما لک کے 758570 غیر ملکیوں نے شاہی مہلت سے فائدہ اٹھایا۔

چین علاقائی بے یقینی کے تناظر میں سعودی عرب کے ساتھ ہے:صدر ڑی جن پنگ

چین، سعودی عرب میں بڑے پیمانے پر ترقی کے عمل اور قومی سالمیت کی کوششوں کی مکمل حمایت کرتا ہے۔ علاقائی سطح پر سعودی عرب، ایران، لبنان اور یمن میں کشیدگی کے تناظر میں یہ یقین دہانی چینی صدر ڑی جن پنگ نے سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کو گذشتہ روز ٹیلی فون پر کرائی۔

امریکا: کانگریس نے عراقی ملیشیا ’النجباء‘ کو دہشت گرد قرار دیا

امریکی کانگریس نے عراق کی شیعہ ملیشیا الحشد الشعبی میں شامل ایک عسکری گروپ ’حرکۃالنجباء‘ کو دہشت گرد قرار دیتے ہوئے صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس گروپ سے وابستہ شخصیات پر 90 دن کے اندر اندر پابندیاں عاید کرنے کے احکامات جاری کریں۔