عمرعبداللہ نے وزارت دفاع کے مبینہ تبصرے کی خبر پر مانگا جواب

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th February 2019, 1:42 PM | ملکی خبریں |

سرینگر،9؍فروری(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) نیشنل کانفرنس کے لیڈر عمر عبداللہ نے جمعہ کو کہا کہ وہ یہ دیکھنا چاہتے ہیں کہ بی جے پی سے وابستہ لوگ ان خبروں پر کس طرح صفائی دیں گے کہ رافیل سودے پر اپنائے گئے پی ایم او کے عمل کی وزارت دفاع نے مخالفت کی تھی۔

انہوں نے ایک دستاویز ٹیگ کیا جو مبینہ طور پر وزارت دفاع کا تھا جو ’دی ہندو‘ اخبار کی ایک خبر کے حصے کے طور پر شائع کیا گیا ہے۔مضمون کے مطابق فرانس حکومت کے ساتھ بات چیت میں وزیر اعظم کے دفتر (پی ایم او) کے دخل پر وزارت نے سخت اعتراض ظاہر کیا تھا۔

جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی نے کہاکہ میں یہ دیکھنا چاہتا ہوں کہ بی جے پی سے وابستہ لوگ اس پر کیا صفائی دیں گے۔وزیر دفاع تک پہنچی وزارت کی فائل کے اس نوٹ کے مطابق پی ایم او نے وزارت دفاع اورہندوستان کے مذاکرات ٹیم کے حق کو کمزور کیا، این سی این ڈی اے کی اتحادی تھی جب اٹل بہاری واجپئی وزیر اعظم تھے لیکن 2009 میں اس نے یو پی اے2 سے ہاتھ ملا لیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

کورٹ نے راجیو سکسینہ کو بیرون ملک جانے کی اجازت دینے والے عدالت کے فیصلے پر روک لگائی

سپریم کورٹ نے آگسٹا ویسٹ لینڈ ہیلی کاپٹر سودے سے منسلک منی لانڈرنگ معاملے میں سرکاری گواہ راجیو سکسینہ کو دیگر بیماریوں کا علاج کرانے کے لئے بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کے دہلی ہائی کورٹ کے حکم پر بدھ کو روک لگا دی