مینگلور: اوکھی طوفان میں پھنسے ماہی گیروں کی مدد کو پہنچی کوسٹ گارڈ کی ٹیم

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 4th December 2017, 8:27 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

منگلورو 4؍دسمبر (ایس او نیوز)اوکھی طوفان کی وجہ سے بیچ سمندر میں پھنسے ہوئے ماہی گیروں کی مدد کے لئے کوسٹ گارڈ کی ٹیم پہنچی اور ایک بوٹ کو تیکنیکی امداد پہنچانے کے علاوہ دیگر کشتیوں پر پھنسے ہوئے ماہی گیروں کو کھانا،کپڑے ، طبی امداد وغیرہ فراہم کرنے کا کام بھی انجام دیا۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق تاتواماسی نامی بوٹ پر 22ماہی گیر پھنسے ہوئے تھے۔ اس بوٹ کے گیئر باکس میں خرابی کی وجہ سے انجن بند پڑگیا تھا اور بوٹ طوفانی موجوں پر ہچکولے کھاتے ہوئے پہاڑی چٹانوں سے ٹکرانے کی طرف بڑھ رہی تھی۔ اس موقع پر انڈین کوسٹ گارڈ شِپ امرتیاپر موجود ٹیم وہاں پہنچ گئی اور گیئر باکس کی مرمت کرتے ہوئے بوٹ کو کنارے تک لانے میں کامیاب ہوگئی۔اس کے علاوہ کوسٹ گارڈ کے شُور نامی جہاز پر موجود ٹیم نے لکشدیپ کے پاس طوفان میں پھنسے ہوئے سینٹ اینٹونی نامی جہاز کے ماہی گیروں کوکھانے پینے کا سامان ، کپڑے اور طبی ا مداد پہنچائی۔

کوسٹ گارڈ کے پی آر او نے بتایا کہ طوفانی موجوں اور خراب موسم کی وجہ سے بہت سارے ماہی گیر جہاز کاروار کی خلیج میں پناہ لیے ہوئے ہیں،جس میں تملناڈو کے 32جہازاور346ماہی گیر، کیرالہ کے 14جہاز اور103ماہی گیر، گوا کے 27جہاز اور565ماہی گیر،منگلورو کے 21جہاز اور 114ماہی گیر، ملپے کے 35جہازاور119ماہی گیر شامل ہیں۔اسی طرح منگلوربندرگاہ میں النفیسہ اورمیسا نامی دو جہاز پناہ لیے ہوئے ہیں جن پر ۹ اور۱۰ ماہی گیر بالترتیب موجود ہیں، اور یہ دونوں جہاز منگلورو کی پرانی بندرگاہ سے تعلق رکھتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ہوناور معاملہ پر وزیر اعلیٰ سے روشن بیگ کی نمائندگی،حالات پر نظر رکھنے ضلع انچارج وزیر دیش پانڈے کمٹہ روانہ

اترکنڑا کے ہوناور میں 8 دسمبر کو غیر مسلم نوجوان کی مشتبہ حالت میں نعش بازیافت ہونے کے معاملہ کو سنگھ پریوار کی جانب سے فرقہ وارانہ رنگ دینے کی جو کوششیں ہورہی ہیں،

کنداپور: آٹو رکشہ اور اسکوٹر کے بیچ تصادم ۔ ایک ہلاک

اسکوٹر اور آٹو رکشہ کے بیچ تصادم کے نتیجے میں اسکوٹر سوار ہلاک ہونے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔کہاجاتا ہے کہ جب آٹو رکشہ اسکوٹر سوار سے ٹکرایا تو اسکوٹر سوار اچھل کر سڑک پر گرگیا جس کی وجہ سے وہ شدید زخمی ہوگیا۔

ہوناور تشدد: میرا بیٹا کسی بھی تنظیم کا ممبر نہیں تھا: مہلوک کے خاندان والوں نے کیا انصاف کا مطالبہ

ساحل آن لائن کے نمائندوں نے جب ہوناور میں پریش میستا کے گھر جاکر والدین کے ساتھ تعزیت کی تو انہوں نے بتایا کہ ابھی تک کسی بھی میڈیا والوں نے اُن سے ملاقات نہٰیں کی تھی، ہم پہلے اخباری لوگ ہیں جنہوں نے گھر پہنچ کر حالات جاننے کی کوشش کی ہے۔ انہوں نے بیٹے کے قتل پر انصاف کا مطالبہ ...

’’بھگوا غنڈہ گردی ملک کی سلامتی کے لیے سب سے بڑا خطرہ ‘‘: آل انڈیا امامس کونسل

ہندوتواوادی اور فسطائی غنڈے نے پھر سے ملک کو شرمسار کر دیا۔ ایک نہتے اور بے قصور مزدور افراز الاسلام کو مزدوری دینے کے بہانے بلاکر پھاوڑے سے قتل کر دینا اور پھر پٹرول چھڑک کر آگ لگا کر جلا دینا ملک کے لیے ایک انتہائی شرمناک معاملہ ہے۔

ہوناور تشدد: میرا بیٹا کسی بھی تنظیم کا ممبر نہیں تھا: مہلوک کے خاندان والوں نے کیا انصاف کا مطالبہ

ساحل آن لائن کے نمائندوں نے جب ہوناور میں پریش میستا کے گھر جاکر والدین کے ساتھ تعزیت کی تو انہوں نے بتایا کہ ابھی تک کسی بھی میڈیا والوں نے اُن سے ملاقات نہٰیں کی تھی، ہم پہلے اخباری لوگ ہیں جنہوں نے گھر پہنچ کر حالات جاننے کی کوشش کی ہے۔ انہوں نے بیٹے کے قتل پر انصاف کا مطالبہ ...