راہل گاندھی وزیراعظم بن گئے تو غلط کیا ہے؟ دیوے گوڈا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 24th October 2018, 12:03 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

شیموگہ،24؍اکتوبر(ایس او نیوز) اے آئی سی سی کے صدر راہل گاندھی وزیر اعظم بننے کی خواہش رکھتے ہیں تو اس میں غلطی کیا ہے ؟ کیا وزیر اعظم کی خواہش کرنا منع ہے؟ یہ بات سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڈا نے کہی ۔

بروز منگل اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کمار سوامی کے بطور وزیر اعلیٰ حلف برداری کے روز غیر بی جے پی پارٹیوں کے ساتھ اتحاد کا بگل بجا دیا گیا تھا ۔ اب یہ کہنا ہے کہ بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی عظیم تر اتحاد سے دورچلی گئی ہیں بالکل غلط ہے ، یہ بی جے پی کی خوش فہمی ہے۔ تمام سکیولر پارٹیاں متحد ہیں ۔ دیوے گوڈا نے زور دے کر کہا کہ کانگریس پارٹی کو چھوڑ کر کچھ بھی نہیں کیا جاسکتا ۔ کم از کم مجھے اس سچائی کا احساس ہوگیا ہے کہ کانگریس کو چھوڑ کر کچھ بھی کرنا ممکن نہیں ہے ۔

انہوں نے سکیولر پارٹیوں کے اتحاد کی اہمیت وافادیت بتاتے ہوئے کہا کہ سکیولر پارٹیو ں کے درمیان اتحاد ہونے کے بعد ملک بھر میں 13ضمنی انتخابات ہوئے 12انتخابات میں غیر بی جے پی پارٹیوں نے جیت درج کی ہے ۔ کرناٹک میں ہورہے ضمنی انتخابات 2019ء کے پارلیمانی انتخابات میں جیت درج کرنے والے محاذ کی نشاندہی کریں گے ۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے عوام سے جو وعدے کئے وہ وفا نہیں کرسکے۔

انہوں نے ملک کی اقتصادی ومعاشی صورتحال پر قابو نہ پانے والی مودی حکومت کی دھاندلی کی وضاحت کرنا ممکن نہیں ہے ، بی جے پی کا یہ گمان ہے کہ ملک کی ترقی کیلئے ہندتوا ٹرمپ کارڈ ہے ۔ امن وامان ،بھائی چارہ اور اخلاقی اقدار کے سلسلہ میں بی جے پی کو کوئی فکر نہیں ہے ، ملک کے دبے کچلے پسماندہ طبقات کو معاشرہ کے اہم داھارے میں لانے پر کام کرنا ہوگا ۔ بی جے پی کی زیرانتظام ریاستوں میں دلت ، پسماندہ اور اقلیتی طبقات کے خلاف کھلے عام مظالم ہورہے ہیں، ان مظالم اور زیادتیوں کو کنٹرول میں لانے کی فکر بی جے پی کو کرنا چاہئے ، پھر کسی اور پارٹی کو مشورہ دینے کی کوشش کرنا چاہئے ۔

ایک نظر اس پر بھی

آندھرا پردیش اسمبلی انتخا بات میں تیلگو دیشم پارٹی کو بھاری شکست کےآثار؛ جگن موہن ریڈی کی وائی ایس آر کانگریس کو مل رہی ہے شاندار کامیابی

آندھرا پردیش میں اسمبلی انتخابات  کے ووٹوں کی گنتی جاری ہے، مگر دوپہر تک ملی اطلاع کے مطابق  یہاں وائی ایس آر کانگریس کے جگن موہن ریڈی بھاری جیت درج کرتے نظر آرہے ہیں اور برسراقتدار پارٹی تیلگودیشم صرف 29 سیٹوں پر سمیٹتی نظر آرہی ہے۔یہاں صرف ان ہی دو پارٹیوں کے درمیان راست ...

انتخابات کے دوران تشدد معاملہ:سپریم کورٹ نے بی جے پی امیدوار ارجن سنگھ کو دی راحت، 28 مئی تک گرفتاری پر لگائی روک

مغربی بنگال کے بیرکپور سے بی جے پی امیدوار ارجن سنگھ کو سپریم کورٹ سے راحت مل گئی ہے۔سپریم کورٹ نے 28 مئی تک ان کی گرفتاری پر روک لگا دی ہے۔غور طلب ہے کہ ارجن سنگھ نے کہا تھاکہ مجھ پر ریاستی حکومت نے 21 کیس درج کئے ہیں۔

رافیل معاملہ: سپریم کورٹ سے اپیل،بند لفافے میں غلط معلومات دینے والے افسران کے خلاف کارروا ئی ہونی چاہیے 

رافیل معاملے پر تنازعہ ختم ہوتا نظر نہیں آ رہا ہے۔اس معاملے میں درخواست گزار یشونت سنہا، ارون شوری اور پرشانت بھوشن نے نظر ثانی کی درخواست پر تحریری دلیلیں سپریم کورٹ میں داخل کی ہیں۔

جبل پورسیمی مقدمہ،دہشت گردی کے الزام سے نچلی عدالت سے بری ملزمین کے خلاف داخل حکومت کی اپیل خارج،جمعیۃ علماء کی کوششوں سے ملزمین کو راحت ملی: گلزار اعظمی

ممنوعہ تنظیم اسٹوڈنٹس اسلامک موومنٹ آف انڈیا (سیمی) سے تعلق رکھنے کے الزام میں گرفتار5/ مسلم نوجوانوں کی نچلی عدالت سے باعزت رہائی کے خلاف حکومت کی جانب سے داخل اپیل کو گذشتہ ہفتہ جبل پور کی سیشن عدالت نے یہ کہتے ہوئے خارج کردیا

سیٹلائٹ ری سیٹ -2بی کا کامیاب تجربہ

ہندوستانی خلائی ریسرچ تنظیم (اسرو) نے چہارشنبہ کو لانچ وہیکل پی ایس ایل وی-سی46 سے زمین کی نگرانی کرنے والے رڈار امیجنگ سیٹلائٹ آر آئی ایس ٹی۔ 2 بی کا کامیاب تجربہ کرکے ایک بار پھر بڑی کامیابی حاصل کی۔

لوک سبھا انتخابات کے نتائج؛ ملک میں پھر ایک بار مودی سرکار؛ کانگریس اور اسکی حلیف جماعتوں کو شرمناک شکست کا سامنا

لوک سبھا انتخابات کی 542 سیٹوں کے لئے  ووٹوں کی گنتی جاری ہے اور اب تک سامنےآئے رجحانات میں بی جے پی اور اس کی حلیف این  ڈی اے  کو زبردست جیت حاصل ہورہی ہے اس کے ساتھ ہی  پھر ایک بار مودی سرکار کا  اقتدار میں آنا طئے ہے۔ کانگریس اور اس کی حلیف جماعتیں اس قدر پیچھے نظر آرہی  ہیں ...

انتخابات کے دوران تشدد معاملہ:سپریم کورٹ نے بی جے پی امیدوار ارجن سنگھ کو دی راحت، 28 مئی تک گرفتاری پر لگائی روک

مغربی بنگال کے بیرکپور سے بی جے پی امیدوار ارجن سنگھ کو سپریم کورٹ سے راحت مل گئی ہے۔سپریم کورٹ نے 28 مئی تک ان کی گرفتاری پر روک لگا دی ہے۔غور طلب ہے کہ ارجن سنگھ نے کہا تھاکہ مجھ پر ریاستی حکومت نے 21 کیس درج کئے ہیں۔

رافیل معاملہ: سپریم کورٹ سے اپیل،بند لفافے میں غلط معلومات دینے والے افسران کے خلاف کارروا ئی ہونی چاہیے 

رافیل معاملے پر تنازعہ ختم ہوتا نظر نہیں آ رہا ہے۔اس معاملے میں درخواست گزار یشونت سنہا، ارون شوری اور پرشانت بھوشن نے نظر ثانی کی درخواست پر تحریری دلیلیں سپریم کورٹ میں داخل کی ہیں۔

جبل پورسیمی مقدمہ،دہشت گردی کے الزام سے نچلی عدالت سے بری ملزمین کے خلاف داخل حکومت کی اپیل خارج،جمعیۃ علماء کی کوششوں سے ملزمین کو راحت ملی: گلزار اعظمی

ممنوعہ تنظیم اسٹوڈنٹس اسلامک موومنٹ آف انڈیا (سیمی) سے تعلق رکھنے کے الزام میں گرفتار5/ مسلم نوجوانوں کی نچلی عدالت سے باعزت رہائی کے خلاف حکومت کی جانب سے داخل اپیل کو گذشتہ ہفتہ جبل پور کی سیشن عدالت نے یہ کہتے ہوئے خارج کردیا

روشن بیگ کے خلاف کاروائی سے کانگریس کا گریز؛ کیا بی جے پی کی جانب جھکاو کو دیکھتے ہوئے اُنہیں منانے کی کوشش ہورہی ہے ؟

ریاست کرناٹک کی کانگریس۔ جنتادل ایس مخلوط حکومت کی قسمت،کرناٹک میں لوک سبھاانتخابات کے نتائج کے ساتھ مربوط سمجھی جارہی ہے۔ اس صورتحال کے درمیان توقع نہیں ہے کہ کانگریس ہائی کمان ناراض لیڈرروشن بیگ کے خلاف کوئی سخت کاروائی کرے گی۔ روشن بیگ نے پارٹی کے اعلیٰ رہنمابشمول جنرل ...

بنگلور میں ووٹوں کی گنتی کے لئے پولیس کے غیر معمولی حفاظتی انتظامات

لوک سبھا انتخابات کے لئے شہر میں ووٹوں کی گنتی کے تمام انتظامات پورے کرلئے گئے ہیں۔ بنگلور کے ریٹرننگ افسر اور بی بی ایم پی کمشنر منجوناتھ پرساد اور پولیس کمشنر سنیل کمار نے آج تینوں مقامات پر گنتی کے مرکزوں میں سکیورٹی کے انتظامات کا معائنہ کرتے ہوئے اطمینان ظاہر کیا۔