نوٹ بندی کا مقصد بیکار ہو جائے گا پرانے نوٹ جمع کرانے کا دوبارہ موقع دینے سے حکومت کا صاف انکار،سپریم کورٹ میں داخل کیاحلف نامہ

Source: S.O. News Service | By Sheikh Zabih | Published on 17th July 2017, 9:33 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی18جولائی(ایس اونیوز/آئی این ایس انڈیا)مرکزی حکومت نے پرانے نوٹ تبدیل کرنے کے لیے ایک اور موقع دینے سے صاف انکارکردیاہے۔سپریم کورٹ میں داخل حلف نامے میں مرکز نے کہا کہ اگر 500اور 1000روپے کے پرانے نوٹ جمع کرانے کا دوبارہ موقع دیاگیاتوکالے دھن پر قابو پانے کے لئے کی گئی نوٹ بندی کا مقصد ہی بیکار ہو جائے گا۔ایسے میں گمنام لین دین اور نوٹ جمع کرانے میں کسی دوسرے شخص کا استعمال کرنے کے معاملے بڑھ جائیں گے اور سرکاری محکموں کو یہ پتہ لگانے میں دقت ہو گی کہ کون سے کیس حقیقی ہیں اور کون سے فرضی ہیں۔حکومت نے کہا کہ 1978میں ہوئی نوٹ بندی میں نوٹ جمع کرانے کے لئے صرف 6دن دیے گئے تھے جبکہ اس بار حکومت نے 51دن دیے جو کافی ہیں۔

نوٹ بندی کے وقت چھوٹ دیے جانے کی وجہ سے پٹرول پمپ، ریلوے، ایئر لائنز بکنگ اور ٹول پلازہ پر جم کر کالے دھن کا استعمال کیاگیا۔دراصل 4جولائی کومفادعامہ درخواستوں پر سماعت کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے مرکزی حکومت اور ریزرو بینک سے پوچھا تھا کہ جو لوگ نوٹ بندی کے دوران دیے وقت میں پرانے نوٹ جمع نہیں کرا پائے ان کے لئے کوئی ونڈوکیوں نہیں ہوسکتی؟۔ کورٹ نے کہا تھاکہ جو لوگ جائز وجوہات کے چلتے روپے بینک میں جمع نہیں کرا پائے، ان کی جائیداد حکومت اس طرح نہیں چھین سکتی ہے۔ایسے لوگوں کو پرانے نوٹ جمع کرانے کا صحیح وجہ موجود ہے، انہیں موقع دیاجاناچاہئے۔کورٹ نے یہ بھی کہا تھا کہ اگر کوئی جیل میں ہے تو وہ کس طرح روپے جمع کرائے گا۔حکومت کو چاہئے کہ ایسے لوگوں کے لئے کوئی نہ کوئی ونڈو ضرور دینی چاہئے۔مرکزی حکومت نے اس کے لئے دو ہفتے کا وقت مانگا تھا کہ کیا وہ 9نومبر، 2016سے 30دسمبر، 2016کے درمیان پرانے نوٹوں کو جمع کرنے کی کھڑکی ایک بار دوبارہ کھولنے کے لیے تیار ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

جموں کشمیر میں بی جے پی۔پی ڈی پی سرکار گرگئی؛ محبوبہ مفتی نے سونپا گورنر کو اپنا استعفیٰ

جموں کشمیر میں بی جے پی نے محبوبہ مفتی سرکار سے اپنی حمایت واپس لے لی ہے جس کے ساتھ ہی ریاست میں تین سالوں سے چلی آرہی گٹھ بندھن سرکار ختم ہوگئی ہے۔ بی جے پی کے سرکار سے  الگ ہونے کی اطلاع کے فوری  فوری بعد محبوبہ نے گورنر این این بوہرا  کو اپنا استعفیٰ سونپ دیا۔

ریاستی کانگریس لیڈروں کو نصیحت کرنے راہل گاندھی سے درخواست بہتر انتظامیہ کو یقینی بنانے دونوں پارٹیوں کے درمیان تال میل ضروری: ایچ ڈی کمار سوامی

ریاستی وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے آج دہلی میں کانگریس صدر راہل گاندھی سے ملاقات کر کے ریاست کی سیاسی صورتحال سے متعلق تبادلہ خیال کیا۔ ا س ملاقات کے دوران راہل گاندھی نے کمار سوامی کو مشورہ دیا کہ کرناٹک میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کا یہ ابتدائی دور ہے۔

کسانوں کا قرضہ معاف کرنے مرکزی حکومت سے تعاون کی اپیل 85لاکھ سے زائد کسان مشکلات کا شکار ہیں ، مصیبت کی گھڑی میں ہاتھ تھامنا مرکزی و ریاستی حکومت کاکام ہے: کمار سوامی

قرض کی دلدل میں پھنسے ہوئے کسانوں کو اوپر لانے کی خاطر کئے جارہے قرضہ معاف اسکیم کو مرکزی حکومت 50فی صد امداد فراہم کرے ، اس خیال کااظہار ریاستی وزیر اعلیٰ کمار سوامی نے کیا۔

اتر پردیش میں گئو کشی کی افواہ پر مسلم نوجوان کا پیٹ پیٹ کر قتل

ملک میں گئو کشی روکنے کے نام پر غنڈہ گردی تھمنے کا نام نہیں لے رہی ہے۔ تازہ معاملہ اتر پردیش میں پلکھوا کے بچھیڑا خرد سے سامنے آیا ہے جہاں گوکشی کی افواہ پر کچھ شرپسندوں نے قاسم نامی نوجوان کو بری طرح مارا پیٹا اور قتل کر دیا۔

سکھ زائرین کی کار ٹرک سے جا ٹکرائی ایک بچہ، تین خواتین سمیت 7ہلاک 

پنجاب کے امرتسر کے پاس سموار اسپورٹس یوٹی لیٹی وہیکل کی ٹرک سے تصادم میں سات لوگ لقمہ اجل ہوگئے ۔واضح ہو کہ مہلوکین میں تین عورت سمیت ایک بچہ بھی ہے ۔ یہ تمام افرادامرتسر کے گولڈن ٹمپل کی زیارت اور پوجا ارچنا کرکے دہلی واپس آرہے تھے۔