نوٹ بندی کا مقصد بیکار ہو جائے گا پرانے نوٹ جمع کرانے کا دوبارہ موقع دینے سے حکومت کا صاف انکار،سپریم کورٹ میں داخل کیاحلف نامہ

Source: S.O. News Service | By Sheikh Zabih | Published on 17th July 2017, 9:33 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی18جولائی(ایس اونیوز/آئی این ایس انڈیا)مرکزی حکومت نے پرانے نوٹ تبدیل کرنے کے لیے ایک اور موقع دینے سے صاف انکارکردیاہے۔سپریم کورٹ میں داخل حلف نامے میں مرکز نے کہا کہ اگر 500اور 1000روپے کے پرانے نوٹ جمع کرانے کا دوبارہ موقع دیاگیاتوکالے دھن پر قابو پانے کے لئے کی گئی نوٹ بندی کا مقصد ہی بیکار ہو جائے گا۔ایسے میں گمنام لین دین اور نوٹ جمع کرانے میں کسی دوسرے شخص کا استعمال کرنے کے معاملے بڑھ جائیں گے اور سرکاری محکموں کو یہ پتہ لگانے میں دقت ہو گی کہ کون سے کیس حقیقی ہیں اور کون سے فرضی ہیں۔حکومت نے کہا کہ 1978میں ہوئی نوٹ بندی میں نوٹ جمع کرانے کے لئے صرف 6دن دیے گئے تھے جبکہ اس بار حکومت نے 51دن دیے جو کافی ہیں۔

نوٹ بندی کے وقت چھوٹ دیے جانے کی وجہ سے پٹرول پمپ، ریلوے، ایئر لائنز بکنگ اور ٹول پلازہ پر جم کر کالے دھن کا استعمال کیاگیا۔دراصل 4جولائی کومفادعامہ درخواستوں پر سماعت کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے مرکزی حکومت اور ریزرو بینک سے پوچھا تھا کہ جو لوگ نوٹ بندی کے دوران دیے وقت میں پرانے نوٹ جمع نہیں کرا پائے ان کے لئے کوئی ونڈوکیوں نہیں ہوسکتی؟۔ کورٹ نے کہا تھاکہ جو لوگ جائز وجوہات کے چلتے روپے بینک میں جمع نہیں کرا پائے، ان کی جائیداد حکومت اس طرح نہیں چھین سکتی ہے۔ایسے لوگوں کو پرانے نوٹ جمع کرانے کا صحیح وجہ موجود ہے، انہیں موقع دیاجاناچاہئے۔کورٹ نے یہ بھی کہا تھا کہ اگر کوئی جیل میں ہے تو وہ کس طرح روپے جمع کرائے گا۔حکومت کو چاہئے کہ ایسے لوگوں کے لئے کوئی نہ کوئی ونڈو ضرور دینی چاہئے۔مرکزی حکومت نے اس کے لئے دو ہفتے کا وقت مانگا تھا کہ کیا وہ 9نومبر، 2016سے 30دسمبر، 2016کے درمیان پرانے نوٹوں کو جمع کرنے کی کھڑکی ایک بار دوبارہ کھولنے کے لیے تیار ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

لو جہاد ملک کے لئے بڑا خطرہ: وی ایچ پی 

اپنے متانازعہ بیان سے مشہور وشو ہندو پریشد نے آج پھر لوجہاد کا شوشہ چھوڑتے ہوئے کہا کہ لو جہاد ملک کی سلامتی کے سامنے بڑا خطرہ ہے اور سیکولر برادری کو جہادیوں کے اس غلط کارروائیوں پر پردہ نہیں ڈالنا چاہئے۔

سی ایم شیوراج کا اعلان، مدھیہ پردیش میں نہیں دکھائی جائے گی ’پدماوتی‘فلم

سنجے لیلا بھنسالی کی فلم ’پدماوتی‘ کی ریلیز ڈیٹ اگرچہ ٹل گئی ہو لیکن اس فلم کے ساتھ تنازعہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہاہے اب وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ نے اعلان کیا ہے کہ مدھیہ پردیش میں ’پدماوتی‘فلم نہیں دکھائی جائے گی۔

بی جے پی سورج پال امّوکو بھیجا وجہ بتاؤ نوٹس، دیپکا اور بھنسالی کا سر قلم کرنے پر کیا تھا 10کروڑ کا اعلان

بی جے پی نے ہریانہ بی جے پی کے چیف میڈیا کوآرڈنیٹر کنور سورج پال امو کو وجہ بتاو نوٹس جاری کیا ہے۔امّو نے دیپکا پادکون اور سنجے لیلا بھنسالی کا سر کاٹ کر لانے والے کو دس کروڑ کا انعام دینے کا اعلان کیا تھا۔