کشمیر:حافظ سعید سے فنڈ لینے کاالزام، گیلانی سے پوچھ گچھ کے لئے سرینگر پہنچی این آئی اے کی ٹیم

Source: S.O. News Service | Published on 19th May 2017, 10:50 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی19مئی(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)قومی جانچ ایجنسی (این آئی اے)کی ایک ٹیم جمعہ کو یہاں پہونچی، جو علیحدگی پسند لیڈر سید علی شاہ گیلانی کے ساتھ ساتھ مبینہ مجرمانہ سرگرمیوں اور لشکر طیبہ کے سرغنہ حافظ سعید سے پیسہ لینے میں شامل ہونے کے ملزم تین دوسرے لوگوں سے پوچھ گچھ کر سکتی ہے۔جانچ ایجنسی نے گیلانی اور نعیم خان، فاروق احمد ڈار عرف بٹا کراٹے اور تحریک حریت کے غازی جاوید بابا کے خلاف ابتدائی تفتیش شروع کی ہے۔نعیم کوٹیلی ویژن پر ایک اسٹنگ آپریشن میں مبینہ طور پر پاکستان کے دہشت گرد تنظیموں سے پیسہ لینے کی بات قبول کرتے ہوئے دیکھاگیاتھا۔این آئی اے کے ایک ترجمان نے کہا کہ علیحدگی پسندوں کو وادی کشمیرمیں سیکورٹی فورسز پر پتھراؤ کرنے، سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے اور اسکولوں اور دیگر سرکاری تنصیبات کو جلانے سمیت ودونسک سرگرمیوں کے لئے پاکستان واقع لشکر طیبہ کے سربراہ سعیدسے فنڈز مل رہا ہے۔انہوں نے کہاکہ این آئی اے نے ایک ٹی وی رپورٹر اور وادی کشمیر میں سرگرمیاں چلارہے علیحدگی پسندتنظیموں کے رہنماؤں کے درمیان اس سلسلے میں بات چیت کی ریکارڈنگ کے ساتھ منسلک ایک خبرکانوٹس بھی لیاہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کشمیر میں موبائل انٹرنیٹ سروس معطل

ترال میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ تصادم میں سبزار احمد بھٹ کے مارے جانے کے پیش نظر احتیاطی طور پر آج وادی کشمیرمیں موبائل انٹرنیٹ سروس معطل کر دی گئی۔

یوگی حکومت لاء اینڈرآرڈرلاگو کرنے میں بری طرح ناکام،ہرطرف خوف کا ماحول، دلتوں کودبایا جارہا ہے؛ کانگریس نائب صدر کا الزام

کانگریس نائب صدر راہل گاندھی ہفتہ کو نسلی تشدد سے متاثر سہارنپور کے متاثر خاندانوں سے ملنے پہنچے۔یہاں انہوں نے کچھ متاثرہ خاندانوں سے ملاقات کی۔

پانڈیچری کے وزیراعلیٰ کا مویشیوں کی فروخت پرپابندی سے متعلق نوٹیفیکشن واپس لینے کامطالبہ؛ حکومت کوکھانے پینے کی پسندپربندشیں مسلط کرنے کاکوئی حق نہیں

پانڈیچیری کے وزیراعلیٰ وی نارائن سامی نے ذبح کے لئے مویشیوں کی فروخت پرپابندی لگانے کے نوٹیفکیشن جاری کرنے پرمرکزی حکومت کوآڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ حکومت کو لوگوں کے کھانے پینے کی پسندپربندشیں مسلط کرنے کاکوئی حق نہیں ہے۔