قومی اردو کونسل ہندوستان کے طول و عرض میں اردوکافروغ چاہتی ہے: ڈاکٹر شیخ عقیل احمد گوا میں منعقدہ پریس کانفرنس میں قومی اردو کونسل کے ڈائریکٹر کا خطاب

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 8th December 2018, 2:46 AM | ملکی خبریں |

پنجی:7/دسمبر (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)حکومت ہندیہ چاہتی ہے کہ جتنی بھی ہندوستانی زبانیں ہیں ان کا فروغ ہو اور ہر کوئی اپنی مادری زبان میں تعلیم حاصل کرے۔گاندھی جی نے کہا تھا کہ ’’یوروپ کے پاس ہمیں دینے کے لیے کچھ نہیں ہے لیکن ہمارے پاس انھیں دینے کے لیے بہت کچھ ہے۔‘‘ ہماری زبان، ہماری ثقافت اور ہماری تہذیب پوری دنیا میں عزت اور وقار کی نظر سے دیکھی جاتی ہے۔ ہم ہندوستانیوں کو کسی بھی غیرملکی زبان سے مرعوب نہیں ہونا چاہیے۔ یہ باتیں قومی اردو کونسل کے ڈائرکٹر ڈاکٹر شیخ عقیل احمد نے پریس کلب، پنجی گوا میں ایک پریس کانفرنس میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ اردو زبان کی شیرینی اور مٹھاس سے کوئی بھی شخص مسحور ہوسکتا ہے۔ یہ زبان کسی خاص مذہب، فرقے یا برادری کی نہیں بلکہ پورے ملک کی زبان ہے۔ اس زبان میں جذبات کی ترجمانی سب سے بہتر انداز میں کی جاسکتی ہے۔ ڈاکٹرشیخ عقیل احمد نے کہاہے کہ عام طور پر جو شمالی ہند کے علاقے ہیں وہ کونسل کی اسکیموں سے زیادہ فیض یاب ہورہے ہیں۔ لیکن ہمارا مقصد ہے کہ اردو زبان وادب کا فروغ ہندوستان کے طول و عرض میں ہو اور ہم اسی مقصد سے یہاں گوا میں اس پروگرام کا انعقاد کررہے ہیں جس میں یہاں کی غیرسرکاری تنظیموں، اسکولوں، مدرسوں اور اداروں کے نمائندوں سے بات چیت کی جائے گی اور انھیں کونسل کی اسکیمو ں اور پروگرام سے واقف کرایا جائے گا تاکہ اس ریاست میں بھی اردو زبان و ادب کا فروغ ہو۔ ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ ہم کمپیوٹر سینٹروں میں بھی مفت اردو تعلیم فراہم کرتے ہیں۔ ہمارے کمپیوٹر سینٹر سے تربیت شدہ طلبااردوزبان اچھی طرح جانتے سمجھتے ہیں۔ گوا سے ہم نے پورے ملک میں اردو کے تئیں بیداری مہم کا آغاز کیا ہے اور ہماری کوشش ہوگی کہ شمال مشرق، انڈمان نکوبار اور جنوبی ہند کے علاقوں میں بھی اس طرح کے پروگرام کا انعقاد کیا جائے۔

ایک نظر اس پر بھی

شہیدوں کے گھر ’درد کے دریا کا سیلاب‘ تھا اور مودی دریا میں شوٹنگ کر رہے تھے: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے پلوامہ دہشت گردانہ حملے والے دن وزیر اعظم نریندر مودی کے ایک چینل کے لئے فلم کی شوٹنگ کرنے سے متعلق خبروں کو لے کر جمعہ کو ان پر حملہ بولا اور الزام لگایا کہ جب شہیدوں کے گھر دردکے دریا کا سیلاب تھا تو پرائم ٹائم منسٹر 'ہنستے ہوئے دریا میں شوٹنگ کر رہے ...

عظیم اتحادملک کے لیے اچھانہیں،اپوزیشن کے پاس کوئی نظریہ اورکوئی لیڈرنہیں ہے، امت شاہ کوپھرمہاگٹھ بندھن سے شکایت،کانگریس اورلیفٹ کونشانہ بنایا

جھک کرلوجپا،شیوسینا،جدیواورڈی ایم کے کے ساتھ اتحادکرنے والی بی جے پی صدر امت شاہ نے جمعہ کو اپوزیشن پارٹیوں کے مجوزہ مہاگٹھ بندھن پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملک کے لیے اچھا نہیں ہے۔

بہار کے سابق وزیرالیاس حسین کو 22 سال پرانے کول تار گھوٹالے میں 5 سال کی سزا

مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کی خصوصی عدالت نے جمعہ کو کول تار گھوٹالے میں بہارکے سابق وزیرالیاس حسین اورچاردیگر کو پانچ سال قید کی سزا سنائی اور ایک ٹھیکیدار کو اس معاملے میں سات سال کی سزا سنائی۔