مودی حکومت کھوکھلی اور جھوٹے وعدے کر رہی ہے،کسان اورنوجوان ٹھگے ہوئے محسوس کررہے ہیں:راہل گاندھی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th August 2017, 3:57 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

بنگلورو12اگست(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے کسانوں اور بے روزگاری کے مسائل پر آج مودی حکومت پر حملہ کرتے ہوئے الزام لگایا کہ یہ کھوکھلی اور جھوٹے وعدے کی کر رہی ہے۔راہل گاندھی نے کہاکہ ہم بڑے وعدے نہیں کرتے، اس کے بجائے ہم کام کریں گے اور دکھائیں گے۔ جب مودی جی کی سرکار آئی تھی، تب کسانوں کومکمل مددکرنے کاوعدہ کیاگیاتھالیکن ملک بھرمیں کسان خودکشی کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کرناٹک اور پنجاب میں کانگریس کی حکومتیں کسانوں کے ساتھ کھڑی رہی ہیں۔کانگریس نائب صدر نے کہاکہ جہاں کہیں کانگریس پارٹی کی حکومت ہے، آپ انہیں کسانوں کے ساتھ کھڑے دیکھیں گے کیونکہ ہمیں یقین ہے کہ کسان بھارت کومضبوط بناتے ہیں۔ اگرکسان مضبوط ہوں گے تو بھارت مضبوط ہوگا، اگر وہ کمزور ہیں تو بھارت کمزورہوگا۔ انہوں نے یہاں ریاستی کانگریس کمیٹی کے مساوات شمولیت پروگرام میں یہ کہاکہ پسماندہ حیدرآباد ۔ کرناٹک علاقے کو یوپی اے حکومت کے دوران آئین کے آرٹیکل371 (جے) میں ترمیم کے ذریعے خصوصی درجہ مہیاکرنے میں ان کے کردار کو لے کر انہیں عزت کے لیے اس پروگرام کاانعقادکیاگیاتھا۔آرٹیکل 371 (جے) کے بارے میں بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کانگریس نے لوگوں کے ساتھ اس کے لیے لڑے۔راہل گاندھی نے دعویٰ کیاکہ وزیرداخلہ کے طور پر بی جے پی کے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی آرٹیکل 371 (جے) کے خلاف تھے۔ لیکن جب کانگریس2004 میں اقتدار میں آئی تب خصوصی درجہ دیا گیا جس سے لوگوں کو کافی فائدہ ہواہے۔مودی حکومت پر جھوٹے اور کھوکھلی وعدے کرنے کاانہوں نے الزام لگایا۔ انہوں نے کہاکہ کسان جانتے ہیں کہ صرف کانگریس ہی ان کی مدد کر سکتی ہے اور بھارت میں نوجوانوں کو سمجھنا ہوگا کہ نریندر مودی حکومت انہیں روزگار مہیا نہیں کر سکتی ہے۔اب یہ ثابت ہو گیا ہے کہ نوجوان اس بات کو محسوس کر رہے ہیں۔ نوٹ بندی پرحکومت کوآڑے ہاتھوں لیتے ہوئے راہل گاندھی نے کہاکہ گزشتہ سال آٹھ نومبر کو ایسا کیا ہوا کہ نریندر مودی کو ایک خیال سوجھا، وہ ٹی وی پر آئے اور کہا بھائیو، بہنو آپ کی جیب میں جو نوٹ ہے اس پرپابندی لگارہاہوں۔پورا بھارت، سرحدی کسان، مزدور اور خواتین متاثر ہوئیں۔کانگریسی لیڈرنے کہاکہ آٹھ نومبرکونریندرمودی نے پورے ہندوستان کوکلہاڑی ماری، لوگ آج بھی اس کا اثر جھیل رہے ہیں۔ راہل گاندھی نے اگلے سال کے تعارف میں کرناٹک میں ہونے والا اسمبلی انتخابات پارٹی کے لوگوں سے متحدہوکرلڑنے کی اپیل کیَ انہوں نے اس انتخاب میں فتح حاصل کرنے کا بھروسہ جتایاَََََ۔انہوں نے کہاکہ ہمیں غریبوں، کمزور طبقے، دلت، قبائلی، پسماندہ طبقے اورضرورت مند لوگوں کے لیے کام کرنا چاہئے۔ ہم نے گزشتہ پانچ سال میں جو کام کیا ہے، اگلے پانچ سال میں اس سے زیادہ کام کریں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

ایس ڈی پی آئی ریاستی صدر عبدالحنان کی قیادت میں ایک وفد نے بابا بڈھن گری دادا پہاڑ کا دورہ کیا

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیاکے ریاستی صدر عبدالحنان کی قیادت میں ایک وفد میں بابا بڈھن گری دادا پہاڑ کا دورہ کیا جہاں گزشتہ دنوں بجرنگ دل کے غنڈوں نے دتہ ہاترا کے موقع پر بابابڈھن درگاہ کے احاطہ میں زبردستی گھس کر وہاں موجود بزرگوں کے مزاروں کو توڑ پھوڑ کر کے بے حرمتی کی تھی۔ ...

13 دسمبر کو کرناٹک اقلیتی کمیشن کی میٹنگ

کرناٹک اسٹیٹ مائنارٹیز کمیشن کے سکریٹری ایس انیس سراج کی اطلاع کے مطابق 13 دسمبر بروز چہار شنبہ صبح10:30 بجے ٹینس پویلین، پیلیس گراؤنڈ بنگلور میں ایک میٹنگ کا انعقاد عمل میں لایا گیا ہے،

بی بی ایم پی اسٹانڈنگ کمیٹیوں کے صدور کی لاپروائی سخت کارروائی کرنے وزیر اعلیٰ کی ہدایت

بروہت بنگلور مہانگر پالیکے( بی بی ایم پی) کونسل اجلاس کے دوران کارپوریٹروں کے مسائل پر متعلقہ اسٹانڈنگ کمیٹیوں کے صدور کی لاپروائی اور جواب نہ دینے پر ان کیخلاف کارروائی کرنے کے لئے وزیر اعلیٰ سدارامیا نے بی بی ایم پی کو سخت تاکید کی ہے،

بی جے پی کی نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کا اثر گجرات انتخابات کے نتائج میں نظر آئے گا: اکھلیش یادو 

سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی وجہ سے تاجروں پر کافی برا اثر پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسان مخالف اور تاجر مخالف پالیسیوں کی وجہ سے بی جے پی کا گراف نیچے آتا جا رہا ہے۔

گجرات میں سات انتخابات میں دو بار ووٹنگ کے فیصدی میں کمی، دونوں بار بی جے پی کو نقصان تو کانگریس کا فائدہ 

گجرات میں ہفتہ کو پہلے مرحلہ میں19ضلعوں میں کی89نشستوں پرتقریباً 68فیصدی ووٹنگ ہوئی اس بار 2012کے اسمبلی انتخابات سے تقریباً 3فیصدی ووٹنگ ہوئی۔ 2012 میں پہلے مرحلے میں19 میں سے15 اضلاع میں ووٹنگ ہوئی تھی۔

خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ ہوئی چھیڑ خانی کو بتایا انتہائی شرمناک فعل 

قومی خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ شرمناک حادثہ قرار دیا ہے ۔زائرہ وسیم نے سوشل میڈیا کے ذریعے وستارا ایئر لائنزکی فلائٹ سے دہلی سے ممبئی جانے والی پرواز میں جس طرح ہراساں کیے جانے کی بات کہی ہے وہ بھارتی تہذیب و ثقافت کے شرم کی بات ہے ۔