میرا انتخاب عوام کرتے ہیں کمار سوامی نہیں: سدرامیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th July 2017, 11:15 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،15؍ جولائی(ایس او نیوز)وزیر اعلیٰ سدرامیا نے سابق وزیر اعلیٰ کمار سوامی کے اس بیان پر کہ اگلے انتخابات میں سدرامیا کو منتخب نہیں کیا جائے گا۔ سخت ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ انہیں اسمبلی کیلئے عوام منتخب کرتے ہیں کمار سوامی نہیں۔ آج میسور میں اپنی رہائش گاہ پر اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہاکہ صرف کمار سوامی یا یڈیورپا کے کہہ دینے سے کچھ نہیں ہوگا ،بلکہ ریاست میں اور پورے ملک میں جمہوری نظام کے تحت عوام کو آقا کا درجہ حاصل ہے۔ انہوں نے کہاکہ کمار سوامی ہمیشہ سے بے ہودہ بیانات دینے کے عادی رہے ہیں۔ اب وہ جھوٹ بول کر اس قدر بدنام ہوچکے ہیں کہ عوام ان کے بیانات کو سنجیدگی سے بھی نہیں لیتے۔ گنڈل پیٹ اور ننجنگڈھ اسمبلی حلقہ کے ضمنی انتخابات کے نتائج کو اگلے اسمبلی انتخابات کا نقیب قرار دیتے ہوئے سدرامیا نے کہاکہ ان دونوں حلقوں میں یڈیورپا گلی گلی پہنچ کر چیخ رہے تھے کہ کانگریس کو ووٹ مت دو ، لیکن دونوں حلقوں میں ان کی کسی نے نہیں سنی۔ یہ لیڈران جو کہیں گے اسے تسلیم کرلینے عوام اتنے بھی بے وقوف نہیں ہیں۔ ضمنی انتخابات میں یہ ثابت ہوچکا ہے۔پرپنا اگراہارا سنٹرل جیل میں رشوت ستانی معاملے اور پولیس عہدیداروں کی رسہ کشی کے متعلق ایک سوال پر سدرامیا نے کہاکہ اس معاملے کی جانچ کے احکامات صادر کئے جاچکے ہیں، رپورٹ ملنے کے بعد مناسب کارروائی ضرورکی جائے گی۔سدرامیا نے کہاکہ یہ معاملہ اب سامنے آچکا ہے، تحقیقات کی ہدایت بھی دی جاچکی ہے۔غیر ضروری طور پر اس موضوع پر اگر بیان بازی نہ کی جائے تو بہتر ہے۔پچھلے برسوں کی مانند امسال بھی ریاست میں مانسون کی ناکامی اور پانی کی قلت کے سبب اکثر آبی ذخائر کے خالی رہ جانے کے متعلق ایک سوال پر سدرامیا نے کہاکہ ریاست میں مانسون کی ناکامی تشویش کا سبب ضرور ہے، کیونکہ بارش نہ ہونے کی و جہ سے ریاست کا کوئی آبی ذخیرہ بھر نہیں پایا ہے، جہاں پربھی بارش کم ہوئی ہے حکومت وہاں بادلوں کی تخم ریزی کرنے پر سنجیدگی سے غور کررہی تھی، لیکن فی الوقت تخم ریزی کے منصوبے کو ترک کردیا گیاہے۔ انہوں نے کہاکہ کسانوں کے مفادات کو ذہن میں رکھتے ہوئے حکومت نے تخم ریزی کے منصوبے کو ٹال دیا ہے۔ دکشن کنڑا ضلع میں فرقہ وارانہ کشیدگی کے متعلق سدرامیا نے کہاکہ سیاست دان اور میڈیا اگر کچھ دنوں تک اس مسئلے پر اپنی زبان بند رکھیں تو حالات خود بخود معمول پر آجائیں گے۔ فی الوقت پولیس فورس کی جدوجہد کے نتیجہ میں دکشن کنڑا ضلع کے حالات کو قابو میں کیاگیا ہے۔ غیر ضروری طور پر اب آگ نہ بھڑکائی جائے۔سدرامیا نے کہاکہ ملک میں ہندو مذہبی مفادات کی حفاظت کا بی جے پی نے ٹھیکہ نہیں لے رکھاہے۔ خاص طور پر ایسے وقت میں جبکہ پسماندہ طبقات اور دیگر کمزور طبقات سے وابستہ افراد کو نشانہ بنایا جائے۔ سدرامیا نے کہا کہ وہ فخر کے ساتھ کہتے ہیں کہ وہ خود بھی ہندو ہیں اور ان کا نام سدرامیا ہے، لیکن یہ بھی کہنا چاہیں گے کہ ہر مذہب میں رواداری اور بھائی چارگی کی جو تعلیمات عام کی گئی ہیں، اسے ہر حال میں برقرار رکھا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

عوامی سہولیات کیلئے بنگلورو میں ہیلی پیڈس کی تعمیر کا منصوبہ میڈیکل ایمر جنسی کیلئے بی بی ایم پی کا بڑا اقدام

بنگلورو بروہت مہانگر پالیکے( بی بی ایم پی) کا بجٹ23؍فروری کو پیش کیا جانے والا ہے۔ اس مرتبہ بجٹ میں عوام کی صحت پر زور دیا جائے گا۔ اس سلسلہ میں بنگلوروشہر کے محتلف مقامات پر8ہیلی پیڈس بنائے جائیں گے تاکہ ایر ایمبولینس کے ذریعہ شدید بیماروں اور حادثوں میں متاثرہ افراد کو کم سے کم ...

بی ای ایم ایل نے بوگیوں کی پہلی کھیپ بی ایم آر سی ایل کے حوالہ کردی مسافروں کے لئے جانے کی گنجائش دگناہوجائے گی۔ مضافاتی ریل کیلئے بوگیاں بی ای ایم ایل سے خریدنے کا تیقن

وزارت دفاع کے ماتحت چلنے والی ایک سرکاری کمپنی بی ای ایم ایل لمیٹڈ جو میٹرو کارس( بوگیاں) تیار کرنے والی ملک کی ایک بڑی کمپنی ہے ۔ اس کمپنی نے آج بنگلور و میٹرو ریل کا رپوریشن لمیٹڈ ( بی ایم آر سی ایل)کو پہلا کار یونٹ حوالہ کیا ۔

نمامیٹروریل:ڈیری سرکل سے ناگواراتک کاپروجیکٹ 4؍حصوں میں منقسم ٹنڈر میں لاگت سے زیادہ 3505.89؍کروڑروپئے کا مطالبہ

نمامیٹرو ٹرین کا کام اب تک بہت ہی سست رفتاری کے ساتھ چل رہاہے حالانکہ اس کے لئے کوششیں کی جارہی ہیں کہ طے شدہ وقت پر پروجیکٹ کو مکمل کرلیا جائے مگر ایسانہیں ہوپارہاہے ۔

ریاست میں بی جے پی ممبر پارلیامنٹ کے ’خون خرابہ ‘ والے بیان پر کانگریس برہم ، کارروائی کا مطالبہ

کرناٹک میں آئندہ اسمبلی انتخابات کو لے کر بی جے پی اور کانگریس دونوں پارٹیاں ایک دوسرے پر حملہ آور ہیں۔ دونوں پارٹیاں ایک دوسرے پر حملہ کرنے کا کوئی بھی موقع نہیں چھوڑ رہی ہیں۔