صدر کے عہدے سے اڈوانی کا نام ہٹانے کے لیے مودی نے کی سوچی سمجھی سیاست :لالو پرساد یادو کا خیال

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th April 2017, 6:40 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

پٹنہ، 19؍اپریل (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا ) آر جے ڈی سربراہ لالو پرساد نے آج الزام لگایا کہ سپریم کورٹ کے ذریعہ بابری مسجد شہادت کیس میں سی بی آئی کی عرضی منظور کیا جا نا اور بی جے پی کے سینئر لیڈروں لال کرشن اڈوانی، مرلی منوہر جوشی اور اوما بھارتی کے خلاف مجرمانہ سازش کے الزام کو بحال کیا جانا اڈوانی کا صدارتی امیدواری سے نام ہٹائے جانے کے لیے وزیر اعظم کی ایک سوچی سمجھی سیاست کا حصہ ہے۔پٹنہ میں صحافیوں سے خطاب کرتے ہوئے لالو نے الزام لگایا کہ جب سے صدر کے لیے اڈوانی کے نام کی بحث شروع ہوئی ہے، سی بی آئی نے خود سپریم کورٹ میں بابری مسجد شہادت کیس میں اڈوانی اور دیگر کے خلاف مقدمے کی سماعت شروع کرائے جانے کی اپیل کی تھی۔انہوں نے الزام لگایا کہ صدر کے عہدے کی امیدواری سے اڈوانی کا نام ہٹائے جانے کے لیے یہ نریندر مودی کی ایک سوچی سمجھی سیاست کا حصہ ہے۔اپنی دلیل کو ثابت کرنے کے لیے لالو نے الزام لگایا کہ یہ ثابت شدہ ہے کہ سی بی آئی وہی کرتی ہے جو مرکزی حکومت چاہتی ہے کیونکہ سی بی آئی مرکزی حکومت کے ماتحت ہوتی ہے۔لالو نے الزام لگایا کہ نریندر مودی کی مخالفت کرنے والے کسی بھی شخص کے خلاف خطرناک سیاسی کھیل کھیلنے میں بی جے پی اپنے پرائے کے درمیان بھی کوئی فرق نہیں کرتی ۔آر جے ڈی سربراہ سپریم کورٹ کے بابری مسجد کی شہادت معاملے میں سی بی آئی کی عرضی منظور کرنے اور بی جے پی کے سینئر لیڈران لال کرشن اڈوانی، مرلی منوہر جوشی اور اوما بھارتی کے خلاف مجرمانہ سازش کے الزام کو آج بحال کئے جانے پر اپنے ردعمل کا اظہار کر رہے تھے۔لالو نے چمپارن ستیہ گرہ صدسالہ تقریب کے موقع پر مشرقی چمپارن ضلع کے ہیڈکوارٹر موتیہاری میں بی جے پی کی طرف سے ’کسان کمبھ ‘کے انعقاد پر حملہ بولتے ہوئے اس پر ایک ہاتھ سے گاندھی جی کے مجسمہ پر گلہائے عقیدت پیش کرنے اور دوسرے ہاتھ سے ان کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کو سلامی دینے کا الزام لگایا۔

ایک نظر اس پر بھی

اگرپاکستانی الیکشن میں مداخلت کررہاہے تواین آئی اے کیاکررہی ہے، اسدالدین اویسی کاسوال ،بنکاک میں پاکستان کے ساتھ مجوزہ میٹنگ کی تفصیلات بتائیں مودی

حیدرآبادکے رکن پارلیمنٹ و صدر کل ہند مجلس اتحاد المسلمین بیرسڑاسد الدین اویسی نے کہا ہے کہ گجرات کے انتخابی جلسوں میں جس طرح کی زبان وزیراعظم نریندر مودی استعمال کر رہے ہیں، اس پر ان کو کوئی تعجب نہیں ہوا ہے۔

خبطی ’ وکاس‘ کا تازہ ترین سروے ، مہنگائی آسمان پر ،اشیاء خوردنی کی قیمتوں میں اضافہ ، نومبر میں شرح 15 ماہ بلند سطح پر

سبزیاں، پھل او ر انڈوں کی قیمتوں میں بے تحاشہ اضافہ کی بری خبر ہے ۔ دن رات ٹی وی ڈیبیٹ نے عوام کو اس قدر غافل اور نکما کر دیا ہے کہ آج ہونے والے ہندو۔ مسلم موضوع پر پارٹی کے بکواس ترجمان کی ہنگامہ آرائی کو تو یاد رکھتے ہیں ؛

منی شنکر ایر کا بیان غلط:لیکن مودی جی نے جو منموہن سنگھ کے بارے میں کہا وہ بھی ٹھیک نہیں:راہل گاندھی

گجرات اسمبلی انتخابی مہم کے آخری دن پریس کانفرنس کرکے کانگریس صدر راہل گاندھی نے ایک بار پھر پی ایم مودی کو نشانے پر لیا ہے۔انہوں نے صاف کہا کہ مودی جی پر منی شنکر ایر کا تبصرہ بالکل غلط تھا آخر وہ ہمارے وزیر اعظم ہیں۔

جموں و کشمیر میں برفانی تودے میں دفن ہوئے پانچ فوجی جوان، تلاشی مہم شروع 

جموں اور کشمیر میں ہوئی سموار کی شب ہوئی تازہ برفباری میں گریج خطہ سے دو جوان اور کپواڑہ ،12؍دسمبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا )کے نیل گاؤں سے تین فوجی جوان کے لا پتہ ہونے کی دردناک خبر مل رہی ہے ۔

’’بھگوا غنڈہ گردی ملک کی سلامتی کے لیے سب سے بڑا خطرہ ‘‘: آل انڈیا امامس کونسل

ہندوتواوادی اور فسطائی غنڈے نے پھر سے ملک کو شرمسار کر دیا۔ ایک نہتے اور بے قصور مزدور افراز الاسلام کو مزدوری دینے کے بہانے بلاکر پھاوڑے سے قتل کر دینا اور پھر پٹرول چھڑک کر آگ لگا کر جلا دینا ملک کے لیے ایک انتہائی شرمناک معاملہ ہے۔