منگلورو:شرتھ مڈیوال کا کیس این آئی اے کے حوالے کرنا ضروری نہیں ہے: پرمود متالک اظہار خیال

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 18th July 2017, 1:37 AM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

مینگلور:17/جولائی (ایس اؤنیوز)آر ایس ایس کارکن شرتھ مڈیوال قتل معاملے کو  این آئی اے کے حوالے کئے جانے کے متعلق حال ہی میں دجردیہی سوامی جی نے پریس کانفرنس کے ذریعے این آئی اے کے ذریعے چھان بین کرنے مانگ کی تھی لیکن شری رام سینا کے صدر پرمود متالک نے سوامی جی کی مخالفت کرتےہوئے کہاہے کہ ریاست کی پولس شرتھ مڈیوال قتل معاملے کو سلجھانے کی اہلیت رکھتے ہیں، اس لئے معاملے کو این آئی اے کو سونپنے کی ضرورت نہیں ہے۔ 

اپنے ایک کیس کے سلسلے میں عدالت میں حاضری کے لئے پیر کو شہر پہنچے پرمود متالک اخبارنویسوں سے بات کررہے تھے، انہوں نے کہاکہ ضلعی پولس آر ایس ایس کارکن شرتھ مڈیوال قتل معاملے کی جانچ کررہی ہے، ہمیں ضلعی پولس پر اعتماد ہے اس کے علاوہ کسی اور دوسری تفتیشی ایجنسی کو کیس سونپنے کی ضرورت نہیں ہے، دکشن کنڑا ضلع  میں حالات فی الحال  معمو ل پر ہے ہر جگہ امن ہے ، اس کے باوجود سوشیل نیٹ ورک پر کچھ لوگ جھوٹی خبروں کو پھیلا رہے ہیں۔ حال ہی میں وزیر اعلیٰ کی طرف سے متالک کی گرفتاری پر دئیے گئے بیان پر پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے متالک نےکہاکہ پولس پر ہندو لیڈروں کی گرفتاری کے لئے دباؤ ڈالنا ممکن نہیں ہے ، اگر کسی کو گرفتارکرنا ہے تو پولس اپنا کام کرے گی ۔ اس سلسلے میں ہمیں زیادہ سوچنے کی ضرورت نہیں  ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل:راگھویندرا بھٹ اور وٹھل داس کو بھٹا کلنکا ایوارڈ : یوم صحافت کی مناسبت سے جرنالسٹ اسوسی ایشن کا خصوصی پروگرام

بھٹکل جرنالسٹ اسوسی ایشن کی طرف سے ہرسال یوم صحافت کے موقع پر دئیے جانےو الے ’’بھٹاکلنکا ‘‘ ضلعی ایوارڈ کے لئے ریاست کے مشہور کنڑا روزنامہ ’’پرجا وانی ‘‘ کے بھٹکل رپورٹر راگھویندر بھٹ جالی اور ہبلی زون ہوسدگنت کے وٹھل داس کامت کو منتخب کیا گیا ہے۔

منگلورو:ریاست کے تمام غیر پکوان گیس باشندوں کو مفت میں پکوان گیس کا کنکشن :انیل بھاگیہ اسکیم کا بہت جلد اجراء : وزیر یوٹی قادر

ریاست میں کئے گئے سروے کےمطابق قریب 35.50لاکھ شہریوں کے پاس پکوان گیس کی سہولت نہیں ہے، وزیرا علیٰ انیل بھاگیہ (وزیر اعلیٰ گیس اسکیم )کے تحت ان تمام مستحقین کو مفت میں پکوان گیس کا کنکشن دیاجائے گا،اس طرح پورے ملک میں ریاست کرناٹکا وہ پہلی ریاست ہوگی جس کے تمام باشندے پکوان گیس کی ...

کیا آنند اسٹونیکر کاروار سے جے ڈی ایس کے امیدوار ہونگے؟

حالانکہ اگلے اسمبلی انتخابات کے لئے ا بھی کافی عرصہ باقی ہے ، مگر امیدواری کی آس لگانا اور ٹکٹ پانے کے لئے جد وجہد کرناابھی سے سیاسی لیڈروں کے معمولات میں شامل ہوگیا ہے۔کاروار سے ملنے والی خبروں پر اگر بھروسہ کریں تو آنند اسنوٹیکر بی جے پی سے پالا بد ل کر جنتا دل میں داخل ہونے ...

لالویادوکے خاندان کے خلاف کارروائی کاسلسلہ جاری ای ڈی نے لالویادو، رابڑی،تیجسوی سمیت متعددلیڈروں پر منی لائونڈرنگ کاکیس درج

بہارمیں لالویادو خاندان پرایک اور بحران گہراگیاہے۔ رانچی اور پوری کے ہوٹلوں کو لیز پر دینے کے معاملے میں لالو، رابڑی اورتیجسوی یادو سمیت کئی لوگوں پر کیس درج کیاہے۔

کرناٹک کو بی جے پی سے پاک ریاست بنایا جائے گا: سدرامیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا نے آج یہ بات دہرائی کہ ریاست میں انتخابات کے بعد ایک بار پھر کانگریس حکومت ہی برسر اقتدار آئے گی اور کرناٹک میں بی جے پی کو پنپنے نہیں دیا جائے گا۔ ہاویری میں سرکاری پروگراموں میں شرکت کیلئے روانگی سے قبل ہبلی میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے سدرامیا ...

منگلورو:ریاست کے تمام غیر پکوان گیس باشندوں کو مفت میں پکوان گیس کا کنکشن :انیل بھاگیہ اسکیم کا بہت جلد اجراء : وزیر یوٹی قادر

ریاست میں کئے گئے سروے کےمطابق قریب 35.50لاکھ شہریوں کے پاس پکوان گیس کی سہولت نہیں ہے، وزیرا علیٰ انیل بھاگیہ (وزیر اعلیٰ گیس اسکیم )کے تحت ان تمام مستحقین کو مفت میں پکوان گیس کا کنکشن دیاجائے گا،اس طرح پورے ملک میں ریاست کرناٹکا وہ پہلی ریاست ہوگی جس کے تمام باشندے پکوان گیس کی ...

کیا آنند اسٹونیکر کاروار سے جے ڈی ایس کے امیدوار ہونگے؟

حالانکہ اگلے اسمبلی انتخابات کے لئے ا بھی کافی عرصہ باقی ہے ، مگر امیدواری کی آس لگانا اور ٹکٹ پانے کے لئے جد وجہد کرناابھی سے سیاسی لیڈروں کے معمولات میں شامل ہوگیا ہے۔کاروار سے ملنے والی خبروں پر اگر بھروسہ کریں تو آنند اسنوٹیکر بی جے پی سے پالا بد ل کر جنتا دل میں داخل ہونے ...

فرقہ وارانہ فسادات،قتل کی وارداتوں پرشوبھا کی شکایت کا شاخسانہ تفصیلی رپورٹ پیش کرنے مرکزی وزارت داخلہ کا ریاستی حکومت کو حکم

مرکزی وزارت داخلہ نے جنوبی کینرا ضلع میں ہوئے فرقہ وارانہ فسادات اور اس ضلع میں پیش آئی24قتل کی وارداتوں کے تعلق سے تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کے لئے ریاستی حکومت کو حکم دیاہے ۔