کماراسوامی کے بجٹ میں سدرامیا کی طرف سے پیش کردہ بجٹ کے تمام منصوبہ جات کو جاری رکھا گیا ہے؛ مینگلور میں وزیر یوٹی قادر کا بیان

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 5th July 2018, 8:53 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو:5/ جولائی (ایس او نیوز) کرناٹک کے وزیر اعلیٰ کمار سوامی کی طرف سے ودھان سبھا میں پیش کئے گئے بجٹ میں سابق وزیر اعلیٰ سدرامیا کی طرف سے فروری میں پیش کردہ بجٹ کے تمام منصوبہ جات کو جاری رکھا گیا ہے، آج کے بجٹ میں اضافی منصوبہ جات کا اعلان کیا گیا ہے۔ ان خیالات کااظہار ریاستی کابینہ شہری ترقیاتی اور رہائشی وزیر یوٹی قادر نے کیا۔

مینگلور میں اخبارنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر یوٹی قادر  نے کہاکہ وزیر اعلیٰ کمار سوامی نے ریاستی  معیشت کو دھیان میں رکھتے ہوئے کسانوں کے قرضہ معافی کے  منصوبے کو جاری کرتے ہوئے مضبوط قدم اٹھایا ہے۔ یوٹی قادر نے کہاکہ کسانوں کے 2لاکھ روپیوں کا قرضہ معاف کرنا ایک تاریخی قدم ہے۔ حاملہ عورتوں کو ماہانہ 1000روپئے کا وظیفہ دینے والے ’’ماتو شری ‘‘منصوبہ، بزرگوں اور عمر رسیدہ افراد کے سندھیا سرکشھا کا ماہانہ وظیفہ 600  روپیوں میں اضافہ کرتے ہوئے  1000روپئے طئے کرنا، عرضی دیتے ہی فوری معذوروں کے گھروں کی تعمیر، غریبوں کو کڈنی ، لیور، دل جیسے اعضاء کے آپریشن کے لئے 30کروڑ روپئے مختص کرنے کے علاوہ سماجی پروگرامات مظلوم طبقات کی ترقی کے لئے معاون ہونے کا خیال ظاہر کیا۔

بجٹ پر اپنا خیال ظاہر کرتے ہوئے وزیر نے کہاکہ بے روزگاروں کے لئے پرانے موبائیل کے اشیاء کی فیکٹری کا قیام ایک امید کی کرن ہے ، سرکاری اسکولوں کی عمارات کی مرمت و درستی کے لئے 150کروڑ روپئے کی امداد، مہانگر پالیکا حدود میں زائد منزلہ سواری کامپلکس جیسے منصوبے عوامی بہتری کے منصوبے ہیں انہی منصوبہ جات سے ریاست کی بھی ترقی ہوگی۔

یوٹی قادر نے بتایا کہ گذشتہ بجٹ میں دکشن کنڑا ضلع کی بنیادی سہولیا ت پر زور دیاگیا تھا، ساحلی علاقہ کے مقامات پر بوٹ ہاؤس ، تیرنے والے ریسٹورنٹ، قریب 85کروڑ روپیوں کی لاگت سے اعلیٰ ترین سکیورٹی انتظام والے جیل ، پچمی واہنی منصوبے کے تحت نیتراوتی ندی سے  پینے کے پانی اور آب  پاشی کی سہولیات مہیا کرنے منگلورو کے ہیریکل اور اڈیار کے درمیان قریب 174کروڑروپیوں کی لاگت سے ڈیم تعمیر کئے جانے کا اعلان کیا گیا تھا، ان منصوبہ جات کو بالکل ہوبہو جاری رکھا گیا ہے۔

پسماندہ ذات اور طبقات ، ایس ٹی ، ایس سی اور اقلیتوں کے لئے گذشتہ بجٹ میں پیش کئے گئے تمام منصوبے بھی  جوں کے توں جاری رہیں گے البتہ متعلقہ منصوبہ جات کے لئے وزیر اعلیٰ کمار سوامی سے زائد امداد کا مطالبہ کیا جائے گا۔یوٹی قادر نے خیال ظاہر کیا کہ  وزیر اعلیٰ نے  بہت ہی خیر خواہی کا رویہ اپنایا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

اس بار کے انتخابات سب سے زیادہ اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ...

ہلیال میں جے ڈی ایس لیڈر کے گھر پر انتخابی افسران کا چھاپہ ۔تلاشی کے بعد خالی ہاتھ واپس لوٹے افسران؛ کیا بی جےپی کو شکست کا خوف ہے؟

پارلیمانی انتخابات کے پیش نظر چیک پوسٹس پر تلاشی مہم کے علاوہ ہلیال شہر کے گوداموں، شراب کی دکانوں، موٹر گاڑیوں کی بھی مسلسل تلاشیاں لے رہے ہیں۔

لوک سبھا انتخابات؛ اُترکنڑا میں کیا آنند، آننت کو پچھاڑ پائیں گے ؟ نامدھاری، اقلیت، مراٹھا اور پچھڑی ذات کے ووٹ نہایت فیصلہ کن

اُترکنڑا میں لوک سبھا انتخابات  کے دن جیسے جیسے قریب آتے جارہے ہیں   نامدھاری، مراٹھا، پچھڑی ذات  اور اقلیت ایک دوسرے کے قریب تر آنے کے آثار نظر آرہے ہیں،  اگر ایسا ہوا تو  اس بار کے انتخابات  نہایت فیصلہ کن ثابت ہوسکتےہیں بشرطیکہ اقلیتی ووٹرس  پورے جوش و خروش کے ساتھ  ...

بھٹکل میں بی کے ہری پرساد کا بی جے پی اور مودی پر راست حملہ، کہا؛ پسماندہ طبقات کومزید کمزور کرنے کی سازش رچی جارہی ہے

بی جے پی بھلے ہی اپنے آپ کو اقلیت مخالف پارٹی کے طور پر پیش کرتی ہو، مگر  دیکھا جائے تو یہ پارٹی حقیقتاً پسماندہ طبقات، دلت اور ادیواسیوں کو  مزید  کمزور کرنے کی سازش میں لگی ہوئی ہے اور صرف ایک طبقہ کو برسراقتدار پر لانے میں کوشاں ہے۔ یہ بات  آل انڈیا کانگریس کمیٹی (اے آئی ...

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

اس بار کے انتخابات سب سے زیادہ اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ...

بنگلور سے شموگہ اور بھدراوتی لے جانے کے دوران دوکروڑ کی رقم ضبط؛ گاڑی کے ایک ٹائر میں چھپا کر رکھی گئی تھی رقم

الیکشن کا ضابطہ اخلاق لاگو ہونے کے بعد انتخابی قوانین کی خلاف ورزیوں پر نظر رکھنے والے دستے نے کرناٹکا میں اب تک غیر محسوب رقم اور دیگر اشیاء جو ضبط کی ہے اس کی مالیت کا اندزاہ 83کروڑ روپے لگایا گیا ہے۔

الیکٹرانک ووٹنگ مشینیں سخت نگرانی میں اسٹرانگ رومس منتقل

جنوبی کرناٹک کے 14 پارلیمانی حلقوں میں کل پہلے مرحلے کی پولنگ کے دوران ڈالے گئے ووٹ الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں میں قید ہیں ، اور ان الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کو مرکزی دستوں کی سیکورٹی کے تحت اسٹارنگ رومس میں قید کردیا گیا ہے۔

ملک میں بی جے پی کی لہر اور جال بالکل نہیں ہے مودی انتظامیہ کارپورٹ کارڈ فیل ہوگیا : دنیش گنڈو راؤ

ملک کے کسی بھی علاقہ میں وزیر اعظم نریندر مودی کی کوئی لہر بالکل نہیں ہے ۔مودی لہر کا جھانسہ دے کر عوام کو جال میں پھانسنے کی کوشش بی جے پی کر رہی ہے ۔یہ باتیں کے پی سی سی کے صدر دنیش گنڈو راؤ نے کہی ہیں ۔آ

میں عہدۂ وزیر اعلیٰ کا دعویدار ضرور ہوں ، لیکن اب نہیں : سدرامیا

 سابق وزیر اعلیٰ اور ریاست میں حکمران اتحاد کی رابطہ کمیٹی کے چیرمین سدرامیا نے دوبارہ وزیر اعلیٰ بننے کے متعلق ا پنے بیان کا دفاع کیا اور کہا ہے کہ وہ سرگرم سیاست کا حصہ ہیں کوئی سنیاسی نہیں۔ سیاسی امنگوں کا اظہار کرنے سے انہیں کوئی روک نہیں سکتا۔