کماراسوامی کے بجٹ میں سدرامیا کی طرف سے پیش کردہ بجٹ کے تمام منصوبہ جات کو جاری رکھا گیا ہے؛ مینگلور میں وزیر یوٹی قادر کا بیان

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 5th July 2018, 8:53 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو:5/ جولائی (ایس او نیوز) کرناٹک کے وزیر اعلیٰ کمار سوامی کی طرف سے ودھان سبھا میں پیش کئے گئے بجٹ میں سابق وزیر اعلیٰ سدرامیا کی طرف سے فروری میں پیش کردہ بجٹ کے تمام منصوبہ جات کو جاری رکھا گیا ہے، آج کے بجٹ میں اضافی منصوبہ جات کا اعلان کیا گیا ہے۔ ان خیالات کااظہار ریاستی کابینہ شہری ترقیاتی اور رہائشی وزیر یوٹی قادر نے کیا۔

مینگلور میں اخبارنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر یوٹی قادر  نے کہاکہ وزیر اعلیٰ کمار سوامی نے ریاستی  معیشت کو دھیان میں رکھتے ہوئے کسانوں کے قرضہ معافی کے  منصوبے کو جاری کرتے ہوئے مضبوط قدم اٹھایا ہے۔ یوٹی قادر نے کہاکہ کسانوں کے 2لاکھ روپیوں کا قرضہ معاف کرنا ایک تاریخی قدم ہے۔ حاملہ عورتوں کو ماہانہ 1000روپئے کا وظیفہ دینے والے ’’ماتو شری ‘‘منصوبہ، بزرگوں اور عمر رسیدہ افراد کے سندھیا سرکشھا کا ماہانہ وظیفہ 600  روپیوں میں اضافہ کرتے ہوئے  1000روپئے طئے کرنا، عرضی دیتے ہی فوری معذوروں کے گھروں کی تعمیر، غریبوں کو کڈنی ، لیور، دل جیسے اعضاء کے آپریشن کے لئے 30کروڑ روپئے مختص کرنے کے علاوہ سماجی پروگرامات مظلوم طبقات کی ترقی کے لئے معاون ہونے کا خیال ظاہر کیا۔

بجٹ پر اپنا خیال ظاہر کرتے ہوئے وزیر نے کہاکہ بے روزگاروں کے لئے پرانے موبائیل کے اشیاء کی فیکٹری کا قیام ایک امید کی کرن ہے ، سرکاری اسکولوں کی عمارات کی مرمت و درستی کے لئے 150کروڑ روپئے کی امداد، مہانگر پالیکا حدود میں زائد منزلہ سواری کامپلکس جیسے منصوبے عوامی بہتری کے منصوبے ہیں انہی منصوبہ جات سے ریاست کی بھی ترقی ہوگی۔

یوٹی قادر نے بتایا کہ گذشتہ بجٹ میں دکشن کنڑا ضلع کی بنیادی سہولیا ت پر زور دیاگیا تھا، ساحلی علاقہ کے مقامات پر بوٹ ہاؤس ، تیرنے والے ریسٹورنٹ، قریب 85کروڑ روپیوں کی لاگت سے اعلیٰ ترین سکیورٹی انتظام والے جیل ، پچمی واہنی منصوبے کے تحت نیتراوتی ندی سے  پینے کے پانی اور آب  پاشی کی سہولیات مہیا کرنے منگلورو کے ہیریکل اور اڈیار کے درمیان قریب 174کروڑروپیوں کی لاگت سے ڈیم تعمیر کئے جانے کا اعلان کیا گیا تھا، ان منصوبہ جات کو بالکل ہوبہو جاری رکھا گیا ہے۔

پسماندہ ذات اور طبقات ، ایس ٹی ، ایس سی اور اقلیتوں کے لئے گذشتہ بجٹ میں پیش کئے گئے تمام منصوبے بھی  جوں کے توں جاری رہیں گے البتہ متعلقہ منصوبہ جات کے لئے وزیر اعلیٰ کمار سوامی سے زائد امداد کا مطالبہ کیا جائے گا۔یوٹی قادر نے خیال ظاہر کیا کہ  وزیر اعلیٰ نے  بہت ہی خیر خواہی کا رویہ اپنایا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل : دوست کو بچانے کی کوشش میں شیرور کا نوجوان خود جھلس گیا؛ شدید زخمی

اپنے دوست کو بچانے کی کوشش میں بھٹکل کے پڑوسی علاقہ شیرور  کا ایک نوجوان خود بری طرح جھلس جانے کی  واردات گوا کے مڈگائوں میں پیر کو پیش آئی ہے، مگر نوجوان کے بقول وہ  کسی نہ کسی طرح آج بدھ شام کو بھٹکل سرکاری اسپتال پہنچنے میں کامیاب ہوگیا، جہاں سے اُسے اب اُڈپی شفٹ کیا گیا ...

ڈوبتے دوستوں کوبچا کر خود موت کا شکار ہونے والے سرسی کے لڑکے کوحکومت کی طرف سے ’ہوئیسلا‘ بہادری ایوارڈ

ندی میں تیرنے کے دوران  ڈوبنے والے  2 دوستوں کی حفاظت کرتے ہوئے موت کا شکار ہو ئے  سرسی کے   ہیمنت ایس ایم نامی لڑکے کو  کرناٹکا حکومت نے ’ہوئیسلا‘ایوارڈ سے نوازے جانے کا اعلان کیا ہے۔

شیرور توحید پبلک اسکول میں مستقبل کے معمار ’یوم ِ اطفال ‘ کا خوبصورت پروگرام

بچے پھولوں کی طرح معصوم ہوتے ہیں ،بڑے  جو کرتے ہیں بچے بھی  وہی سیکھتے ہیں اسی لئے بڑوں کو بہترین و مثالی  نمونہ  پیش کرنا چاہئے تاکہ مستقبل میں  بچے بھی انہی  کے نقش قدم پر چل کر  بڑے بنیں۔ان خیالات کا اظہار اسکول کے استاد مولوی ضیاء الرحمن رکن الدین ندوی نےکیا۔

بھٹکل :’حضرت محمدﷺبنی نوع انسان کے عظیم رہنما ‘عنوان کے تحت جماعت اسلامی ہند کرناٹک کی 16نومبر سے ریاست گیر سیرت مہم : ہرایک انسان کو نبی ﷺ کی سیرت کا مطالعہ ضروری

آپسی عدم اعتماداور نفرت کی فضا کو دور کرتے ہوئے امن وسلامتی ، بھائی چارگی اور انسانیت کا پیغام پہنچانے جیسے  نیک مقاصد کو لے کر جماعت اسلامی ہند حلقہ کرناٹکا کے زیراہتمام 16نومبر سے 30نومبر تک ’’حضرت محمد ﷺ بنی نوع انسان کے عظیم رہنما‘‘ کے عنوان سے ریاست گیرسیرت مہم ...

جمہوریت اوردستورکے تحفظ کے لیے ووٹر فہرست میں ناموں کا اندراج لازمی سی آر ڈی ڈی پی کی ملک گیر جدوجہد

مسلمانوں کے لیے ایوان میں کم ہورہی مسلم نمائندگی سے زیادہ تشویشناک صورتحال یہ ہے کہ ملک بھر میں ووٹرس فہرست سے کروڑوں مسلمانوں کے نام غائب ہیں۔ ایک سروے کے مطابق ملک میں تقریباً 25 فیصد سے زائد اہل ووٹروں کے نام فہرست سے غائب ہیں۔ اس اہم مسئلے پر ماہر معاشیات و سچر کمیٹی کے ممبر ...