منگلورو: بچوں کو اسکول پہنچانےکی جلدی میں ایک ہی خاندان کے پانچ افراد نے سڑک حادثے میں گنوائی جان

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th July 2018, 9:40 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو:11/ جولائی (ایس او نیوز) پیر کو ایک بھیانک سڑک حادثے میں ایک ہی خاندان کے 5افراد جاں بحق ہونے کا المناک واقعہ  پیش آیا تھا، جس کے تعلق سے ذرائع  کا کہنا ہے کہ  یہ لوگ بچوں کو اسکول روانہ کرنے  کی جلدی میں  تیزرفتاری کے ساتھ کار ڈرائیونگ کررہے تھے۔ افسوس کی بات یہ ہے کہ  جس دن یہ حادثہ ہوا، اُسی دن  دکشن کنڑا ضلعی انتظامیہ نے مینگلور میں طوفانی بارش کو دیکھتے ہوئے اسکولوں اور کالجوں میں  چھٹی کا اعلان کیا تھا۔

اطلاع کے مطابق   توکوٹو کے سی روڈ کی مکین بی فاطمہ کا خاندان  اتوار کو پالگھاٹ میں نئے گھر کی افتتاحی تقریب میں شریک ہوکر پیر کی علی الصبح مینگلور  لو ٹنے کی جلدی میں تھا  ، تاکہ مینگلور اسکولوں میں پڑھ رہے  اپنے بچوں کو وقت پر اسکول پہنچایا جاسکے۔ اسی دوران  اُپلا کے نئے بازار میں  ایک لاری بے قابو ہوکر ان کی سواری سےتیز رفتاری کے ساتھ ٹکراگئی، جس میں پانچ لوگوں کی موت واقع ہوگئی جبکہ  سات افراد شدید زخمی بھی ہوئے .

خاندانی ذرائع کے مطابق  پیر کو ضلعی انتظامیہ کی جانب سے اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی دی گئی تھی، جس کی خاندان والوں کوخبر نہیں تھی۔ پالگھاٹ کے میزبان نے انہیں کافی سمجھایا کہ وہ  نہ جائیں بلکہ وہیں قیام کریں، لیکن والدین نے بچوں کی اسکول کی خاطر نکل پڑے  اور اپنے گھر سے صرف 12کلومیٹر دور حادثہ کا شکار ہوئے۔

ابتدائی جانچ سے پتہ چلا ہے کہ   لاری کا ٹائر  پھٹنے کے نتیجے میں   لاری نے توازن کھو دیا تھا اور ان کی جیپ سے جا ٹکرائی تھی ۔حادثے میں موت کا شکار ہوئی بی فاطمہ تین بیٹوں اور پانچ بیٹیوں کی ماں ہے۔ ان کی پانچویں بیٹی رقیہ نے انہیں اپنے گھر کی افتتاح کے لئے دعوت دی تھی ،ان کے تین بیٹوں کے علاوہ سبھی لوگ تقریب میں شریک ہوئے تھے۔ انا للہ و انا الیہ راجعون

ایک نظر اس پر بھی

اڈپی: شیرور مٹھ لکشمی ورا تیرتھا سوامی منی پال اسپتال میں انتقال کرگئے؛ کھانے میں زہر دے کر مارنے کا شبہ؛ صاف شفاف چھان بین کا مطالبہ

مشہور و معروف شیرور مٹھ کے لکشمی وراتیرتھا سوامی(۵۵سال) منی پالاسپتال میں علاج کے دوران انتقال کرگئے ۔ ان کی موت پر شک و  شبہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ ان کی موت غیرفطری طور پر ہوئی ہے اور شک ہے کہ انہیں زہر دے کر مارا گیا ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی میں صفائی کرمچاری پرہاتھ اُٹھانے کا الزام؛ کام بند کرکے کیا گیا احتجاج؛ صلح صفائی کے بعد معاملہ حل

بھٹکل ٹائون میونسپالٹی کے ایک صفائی کرمچاری پر میونسپالٹی کے ہی ایک آفسر کے ذریعے ہاتھ اُٹھانے کا الزام عائد کرتے ہوئے  سبھی صفائی کرمچاریوں نے آج جمعرات کو احتجاج کرتے ہوئے کام کاج بند کردیا۔ مگر قریب تین گھنٹوں بعد  آپسی صلح صفائی کے بعد معاملہ حل کرلیا گیا۔

بھٹکل : کتابوں کا مطالعہ انسان کو اعلیٰ مقام پر لے جاتاہے: بیلکے ہائی اسکول میں شیوانی شانتا رام کا خطاب

کتابیں طلبا کی عقل و شعور کی قوت میں اضافہ کرتی ہیں ، عقل کا بہترین استعمال کرنے میں معاون وممد ہوتی ہیں، کتابوں کے مطالعہ سے انسان اعلیٰ مقام تک پہنچ سکتاہے۔ ان خیالات کااظہار بھٹکل کی صنعت کار شیوانی شانتارام نے کیا۔

منگلورومیسکام مزدوروں کو لگا ہائی ٹینشن وائر کا جھٹکا۔ ایک ہلاک 8شدید زخمی

مارائوور بس اسٹائنڈ  کے قریب  الیکٹرک کا نیا کھمبا نصب کرنے میں مصروف منگلورو الیکٹرک سپلائی کمپنی (میسکام) کے مزدور ہائی ٹینشن وائر کی زد میں آنے سے ایک کی موقع پر ہی موت واقع ہوگئی جبکہ بجلی کے جھٹکے لگنے سے دیگر 8مزدور شدید زخمی ہوگئے ،جنہیں علاج کے لئے نجی اسپتال لے جایا ...

اڈپی: شیرور مٹھ لکشمی ورا تیرتھا سوامی منی پال اسپتال میں انتقال کرگئے؛ کھانے میں زہر دے کر مارنے کا شبہ؛ صاف شفاف چھان بین کا مطالبہ

مشہور و معروف شیرور مٹھ کے لکشمی وراتیرتھا سوامی(۵۵سال) منی پالاسپتال میں علاج کے دوران انتقال کرگئے ۔ ان کی موت پر شک و  شبہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ ان کی موت غیرفطری طور پر ہوئی ہے اور شک ہے کہ انہیں زہر دے کر مارا گیا ہے۔

تین مسلم نوجوان دہشت گردانہ کارروائیوں میں ملوث ہونے کے الزامات سے بری 

مسلم نوجوانوں کو قانونی امدادفراہم کرنے والی تنظیم جمعیۃ علمائے مہاراشٹر (ارشد مدنی) کو آج اس وقت ایک بار پھر کامیابی حاصل ہوئی جب کرناٹک کے شہربلاری کی نچلی عدالت نے تین مسلم نوجوانوں کو دہشت گردی کے الزامات سے باعزت بری کردیا۔

ریاست میں اسمارٹ سٹی منصوبے پر کام میں تیزی جلد، رسل مارکیٹ اور کے آر مارکیٹ کی تجدید منصوبے میں شامل: یو ٹی قادر

ریاستی وزیر برائے شہری ترقیات یوٹی قادر نے کہا ہے کہ مرکزی وریاستی حکومتوں کے اشتراک سے اسمارٹ سٹی منصوبے کو تیزی سے آگے بڑھانے کے مقصد سے آج محکمے کے اعلیٰ افسروں کے ساتھ ایک میٹنگ کی گئی۔