منگلورو: بچوں کو اسکول پہنچانےکی جلدی میں ایک ہی خاندان کے پانچ افراد نے سڑک حادثے میں گنوائی جان

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th July 2018, 9:40 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو:11/ جولائی (ایس او نیوز) پیر کو ایک بھیانک سڑک حادثے میں ایک ہی خاندان کے 5افراد جاں بحق ہونے کا المناک واقعہ  پیش آیا تھا، جس کے تعلق سے ذرائع  کا کہنا ہے کہ  یہ لوگ بچوں کو اسکول روانہ کرنے  کی جلدی میں  تیزرفتاری کے ساتھ کار ڈرائیونگ کررہے تھے۔ افسوس کی بات یہ ہے کہ  جس دن یہ حادثہ ہوا، اُسی دن  دکشن کنڑا ضلعی انتظامیہ نے مینگلور میں طوفانی بارش کو دیکھتے ہوئے اسکولوں اور کالجوں میں  چھٹی کا اعلان کیا تھا۔

اطلاع کے مطابق   توکوٹو کے سی روڈ کی مکین بی فاطمہ کا خاندان  اتوار کو پالگھاٹ میں نئے گھر کی افتتاحی تقریب میں شریک ہوکر پیر کی علی الصبح مینگلور  لو ٹنے کی جلدی میں تھا  ، تاکہ مینگلور اسکولوں میں پڑھ رہے  اپنے بچوں کو وقت پر اسکول پہنچایا جاسکے۔ اسی دوران  اُپلا کے نئے بازار میں  ایک لاری بے قابو ہوکر ان کی سواری سےتیز رفتاری کے ساتھ ٹکراگئی، جس میں پانچ لوگوں کی موت واقع ہوگئی جبکہ  سات افراد شدید زخمی بھی ہوئے .

خاندانی ذرائع کے مطابق  پیر کو ضلعی انتظامیہ کی جانب سے اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی دی گئی تھی، جس کی خاندان والوں کوخبر نہیں تھی۔ پالگھاٹ کے میزبان نے انہیں کافی سمجھایا کہ وہ  نہ جائیں بلکہ وہیں قیام کریں، لیکن والدین نے بچوں کی اسکول کی خاطر نکل پڑے  اور اپنے گھر سے صرف 12کلومیٹر دور حادثہ کا شکار ہوئے۔

ابتدائی جانچ سے پتہ چلا ہے کہ   لاری کا ٹائر  پھٹنے کے نتیجے میں   لاری نے توازن کھو دیا تھا اور ان کی جیپ سے جا ٹکرائی تھی ۔حادثے میں موت کا شکار ہوئی بی فاطمہ تین بیٹوں اور پانچ بیٹیوں کی ماں ہے۔ ان کی پانچویں بیٹی رقیہ نے انہیں اپنے گھر کی افتتاح کے لئے دعوت دی تھی ،ان کے تین بیٹوں کے علاوہ سبھی لوگ تقریب میں شریک ہوئے تھے۔ انا للہ و انا الیہ راجعون

ایک نظر اس پر بھی

کاروار بوٹ حادثہ: زندہ بچنے والوں نے کیا حیرت انگیز انکشاف قریب سے گذرنے والی بوٹوں سے لوگ فوٹوز کھینچتے رہے، مدد نہیں کی؛ حادثے کی وجوہات پر ایک نظر

کاروار ساحل سمندر میں پانچ کیلو میٹر کی دوری پر واقع جزیرہ کورم گڑھ پر سالانہ ہندو مذہبی تہوار منانے کے لئے زائرین کو لے جانے والی ایک کشتی ڈوبنے کا جو حادثہ پیش آیا ہے اس کے تعلق سے کچھ حقائق اور کچھ متضاد باتیں سامنے آرہی ہیں۔ سب سے چونکا دینے والی بات یہ ہے کہ کشتی جب  اُلٹ ...

دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ میں علمائے شوافع کی جانب سے فقہی سمینار کا انعقاد ؛ علماء فقہائے شوافع نے حقیقتاً حدیث اور فقہ میں بہت نمایاں کام کیاہے: خالد سیف اللہ رحمانی 

بروز سنیچر 19؍ جنوری مجمع الامام الشافعی العالمی کی جانب سے دو روزہ پہلے فقہی سمینار کا آغاز کیا گیا اس سمینار کا افتتاحی جلسہ صبح 10؍ بجے جامعہ دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ ممبئی میں منعقد کیا گیا

بھٹکل: ریاست کے مشہور سد گنگامٹھ کے شری کمار سوامی جی کی وفات پر رابطہ ملت اترکنڑا کا اظہار تعزیت

ریاست کے قدآور ، معروف سد گنگا مٹھ کے شری کمار سوامی جی کے دارِ فانی سے کوچ کر جانے پر رابطہ ملت اترکنڑا ضلع کے عہدیداران نے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سوامی جی ملک کی ایک قوت کی مانند تھے۔

گنگولی کے آراٹے ندی میں غرق ہوکر لاپتہ ہونے والے ماہی گیر کی نعش آج برآمد

یہاں آراٹے ندی میں غرق ہوکر کل رات ایک ماہی گیر لاپتہ ہوگیا تھا، جس کی نعش آج متعلقہ ندی سے برآمد کرلی گئی ہے۔ ماہی گیر کی شناخت آراٹے کڑین باگل کے رہنے والے  کرشنا موگویرا (50) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

کنداپور میں ہوئی چوری کی واردات کے بعد پولس نے گھر میں نوکری کرنے والے میاں بیوی کوکیا گرفتار

کنداور دیہات کے سٹپاڑی کے ایک گھرمیں ہوئی  چوری کے معاملے میں کنداپور دیہی پولس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے اسی گھر میں کام کرنےو الے میاں بیوی کو صرف دو دنوں میں ہی گرفتار کر کے معاملے کو حل کرنے میں کامیابی حاصل کرلی  ہے۔

کاروار بوٹ حادثہ: زندہ بچنے والوں نے کیا حیرت انگیز انکشاف قریب سے گذرنے والی بوٹوں سے لوگ فوٹوز کھینچتے رہے، مدد نہیں کی؛ حادثے کی وجوہات پر ایک نظر

کاروار ساحل سمندر میں پانچ کیلو میٹر کی دوری پر واقع جزیرہ کورم گڑھ پر سالانہ ہندو مذہبی تہوار منانے کے لئے زائرین کو لے جانے والی ایک کشتی ڈوبنے کا جو حادثہ پیش آیا ہے اس کے تعلق سے کچھ حقائق اور کچھ متضاد باتیں سامنے آرہی ہیں۔ سب سے چونکا دینے والی بات یہ ہے کہ کشتی جب  اُلٹ ...

گرفتاری کے خوف سے رکن اسمبلی جے این گنیش روپوش

بڈدی کے ایگل ٹن ریسارٹ میں ہوسپیٹ کے رکن اسمبلی آنند سنگھ پر حملہ کرنے والے رکن اسمبلی جے این ۔ گنیش کے خلاف بڑدی پولیس تھانہ میں ایف آئی آر داخل کرنے کی خبر کے بعد سے گنیش لاپتہ ہیں ۔

وسویشوریا یونیورسٹی رجسٹرار پر200کروڑ کے گھپلے کا الزام گورنر نے چھان بین کے لئے وظیفہ یاب جج کو مقرر کیا ۔ تعاون کرنے ملزم کو ہدایت

وسویشوریا ٹکنالوجیکل یونیورسٹی (وی ٹی یو) کے رجسٹرار اب مشکل میں پڑگئے ہیں۔ گورنر واجو بھائی روڈا بھائی والا نے جو یونیورسٹی کے چانسلر بھی ہیں،200کروڑ روپئے تک کے گھوٹالے کی چھان بین کا حکم دیا ہے۔

لنگایت طبقہ کے مذہبی رہنما شیوکمارسوامی کی آخری رسومات ادا، اسلامی تعلیمات اوراردو زبان سے بھی تھی واقفیت

یاست کرناٹک کی ایک عظیم شخصیت، لنگا یت طبقہ کے مذہبی رہنما، شیوکمارسوامی جی کی آج آخری رسومات انجام دی گئیں۔ بنگلورو کے قریب واقع ٹمکورشہرمیں شیوکمارسوامی جی کولنگایت رسومات کے مطابق دفنایا گیا۔ سدگنگا مٹھ میں آج اورکل لاکھوں کی تعداد میں لوگوں نے سوامی جی کا آخری ...

ملک کو ایک باضابطہ دانشمندانہ انتخابی نظام کی ضرورت ہے آئین جمہوریت کی حفاظتی حصار ہے۔ اقلیت واکثریت کے توازن کو برقرار رکھنے پر حامد انصاری کازور

سابق نائب صدر جمہوریہ ہند حامدانصاری نے کہا کہ ملک کو ایک باضابطہ سمجھدار انتخابی نظام کی ضرورت ہے ، شفاف انتخابی ماڈیول کو فروغ کی سمت بھی کوشش ہونی چاہئے ۔