بھٹکل کا ایک نوجوان نو ماہ سے سعودی عربیہ کے ایک اسپتال میں ایڈمٹ؛ اسپتال کا بل ایک کروڑ روپیہ؛ سشما سوراج سے طلب کی گئی مدد

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 19th January 2017, 1:20 AM | ساحلی خبریں | ملکی خبریں | خلیجی خبریں |

بھٹکل 18 جنوری (ایس او نیوز)  بھٹکل کا ایک نوجوان گذشتہ نو ماہ سے سعودی عربیہ کے دارالحکومت ریاض کے ایک اسپتال میں زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا ہے اور بتایا گیا ہے کہ اُسے واپس بھٹکل لانے کے لئے گھر والوں کے پاس اسپتال کی فیس بھرنے کی رقم نہیں ہے جو قریب ایک کروڑ روپیہ سے تجاوز کرچکی ہے۔ اس تعلق سے خبر ملی ہے کہ ریاض میں موجود کافی لوگوں نے اس نوجوان کو واپس انڈیا بھیجنے کی کوشش کی تھی، مگر سب کوشش رائیگاں گئی، مگر اب اس تعلق سے جب  وزیر خارجہ محترمہ سشما سوراج کو ٹویٹ کیا گیا تو انہوں نے فوری ریاض میں واقع انڈین ایمباسی سے رابطہ کرتے ہوئے کچھ ہی گھنٹوں میں جواب دیا کہ انڈین ایمباسی کے ایک آفسر سے رابطہ کریں۔

بھٹکل حنیف آباد میں رہائش پذیر جناب محمد علی صاحب کے داماد ماکڑے ابوبکر (40) ریاض کی ایک کورئیر کمپنی میں ملازمت کرتا تھا، قریب نو ماہ قبل وہ پیدل چلتے ہوئے سڑک  پار کررہا تھا کہ اچانک ایک تیز رفتار کار اس سے ٹکراگئی۔ ٹکر اتنی شدید تھی کہ ابوبکر اُسی وقت کومہ میں چلاگیا۔ بتایا گیا ہے کہ سعودی نیشنل ڈرائیور کو پولس نے اُسی وقت حراست میں لے لیا اور ابوبکر کو کنگ فہد سرکاری اسپتال ریاض میں بھرتی کیا گیا، مگر ابوبکر کی حالت میں کوئی سدھار نہیں آیا،  اِدھر اس کے گھروالے بے حد پریشان ہوگئے، انہوں نے ابوبکر کو واپس انڈیا لانے کی کوشش کی، مگر بتایا گیا ہے کہ ریاض میں اُس کے کفیل نے ایک بار بھی اسپتال آکر کاغذی کاروائی مکمل نہیں کی، اُس کی رضامندی نہ ہونے کی وجہ سے وہ اسپتال میں ہی پڑا رہا۔ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے جناب محمد علی نے بتایا کہ ریاض میں موجود بھٹکل کے ڈاکٹر ظہیر کولا نے کافی کوشش کی کہ اُسے واپس انڈیا بھیجا جائے، مگر کوشش کامیاب نہ ہوسکی، انہوں نے یہ بھی بتایا کہ مرڈیشور اور گنگولی جماعت کے ذمہ داران نے بھی اس سلسلے میں کافی کوشش کی، مگر کامیابی نہیں ملی۔ اس ضمن میں اب محمد علی  صاحب نے ہیبلے پنچایت کے ممبر سید علی کے توسط سے ساحل آن لائن سے رابطہ کیا اورتعاؤن کرنے کی درخواست کی۔

 اس ضمن میں ساحل آن لائن کی جانب سے وزیرخارجہ محترمہ سشما سوراج کو ٹویٹ کیا گیا اور واقعے کی جانکاری دیتے ہوئے بتایا گیا کہ گھروالوں کے پاس اسپتال کی فیس بھرنے کے لئے رقم نہیں ہے اور یہ شخص نوماہ سے اسپتال میں کومہ کی حالت میں زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا ہے۔ محترمہ کو ٹویٹ کرتے ہوئے اُن سے تعاؤن کی درخواست کی گئی، جس پر محترمہ سشما سوراج نے فوری  جواب دیتے ہوئے ریاض میں واقع  انڈین ایمباسی کے روم نمبر 115 میں مسٹر ٹی ٹی جارج سے رابطہ کرنے کے لئے کہا۔ انڈین ایمباسی سے بھی فوری طور پر جواب موصول ہوا اور انہوں نے اپنا ای میل اڈرس فراہم کرتے ہوئے تمام تفصیلات بھی ای میل کے ذریعے روانہ کرنے کے لئے کہا، جس کے بعدایک اور ٹویٹ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ریاض میں موجود اُس کے رشتہ دارکے ساتھ انڈین ایمباسی کے ایک آفسر کو اسپتال بھیجا جائے گا، برائے کرم فوری کسی رشتہ دار کو انڈین ایمباسی میں ٹی ٹی جارج سے رابطہ کرنے کے لئے کہا جائے۔ مزید ٹویٹ کا جواب دیتے ہوئے ریاض میں موجود انڈین ایمباسی کی طرف سے شام کو ٹویٹ کیا گیا کہ ابوبکر کی جانب سے متعلقہ آفسر سے ابھی تک کسی نے رابطہ نہیں کیا ہے۔

 

اُدھر سعودی عربیہ میں ابوبکر کے ایک بھائی مسعود دمام میں ملازمت کرتے ہیں، اُنہیں فوری طور پر متعلقہ آفسر سے رابطہ کرنے کے لئے کہا گیا تھا، مگر انہوں نے بتایا کہ وہ آج ڈیوٹی پر ہونے کی بنا پر ریاض نہیں پہنچ سکے ہیں، البتہ کل کمپنی سے چھٹی لے کر ریاض پہنچیں گے اورانڈین ایمباسی میں متعلقہ آفسر سے رابطہ کریں گے۔

 

اس ضمن میں ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے بھٹکل مسلم جماعت ریاض کے جنرل سکریٹری ڈاکٹر ظہیر کولا نے بتایا کہ کنگ خالد سرکاری اسپتال کا بل اس وقت قریب پانچ لاکھ ریال تک پہنچ چکا ہے جو قریب ایک کروڑ ہندوستانی رقم ہوتی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ابتداء میں انہوں نے اور ڈاکٹر وسیم منانے کافی کوشش کی تھی کہ شدید طور پر زخمی ابوبکر کو انڈیا روانہ کریں، مگر اُس کے کفیل سے بار بار رابطہ کرنے کے باؤجود وہ اسپتال نہیں آیا، جس کی وجہ سے کوئی کوشش کامیاب نہیں ہوسکی،اس سلسلے میں شیرور کے شفیع صاحب نے بھی کافی بھاگ دوڑ کی تھی، بعد میں گنگولی جماعت اور دیگر اداروں کے ذمہ داران کی طرف سے کوشش جاری تھی، مگر اُسے اسپتال سے ڈسچارج کرکے انڈیا بھیجنا ممکن نہ ہوسکا۔ ڈاکٹر ظہیر کولا کے مطابق اسپتال کا بل بھرنے کے بعد اُسے فلائٹ پر انڈیا بھیجنے کے لئے بھی قریب پچاس ہزار کا خرچہ آسکتا ہے۔ البتہ انہوں نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ وزیرخارجہ محترمہ سشما سوراج سے رابطہ کرنے پر اُس کی جانب سے مثبت جواب موصول ہوا ہے اور انڈین ایمباسی اگر اس ضمن میں مداخلت کرتی ہے تو کام بن سکتا ہے۔ ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر ظہیر کولانے یقین دلایا کہ وہ کل جمعرات کو متعلقہ آفسرسے خود  رابطہ کریں گے۔

ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے جناب محمد علی نے بتایا کہ ابوبکر اُن کے داماد ہیں جن کا تعلق پڑوسی علاقہ شیرور سے ہے، ابوبکر کو دو لڑکے اور دو لڑکیاں ہیں، ایک لڑکا اس وقت بھٹکل انجمن ہائی اسکول میں میٹرک میں اور دوسر اتوحید اسکول شیرور میں اول درجہ میں تعلیم حاصل کررہا ہے، ایک لڑکی بھٹکل انجمن گرلز ہائی اسکول میں آٹھویں کلاس میں اور دوسری لڑکی سرکاری اسکول شیرور میں چھٹی کلاس میں پڑھ رہی ہیں۔

اب  یہ دیکھنا باقی ہے کہ محترمہ سشما سوراج سے رابطہ کرنے کے بعد انڈین ایمباسی کی مداخلت پراور بھٹکل مسلم جماعت ریاض کے تعائون سےشدید طور پر زخمی ابوبکر کو انڈیا روانہ کرنا ممکن ہوگا یا نہیں۔
 

ایک نظر اس پر بھی

اترکنڑا ورکنگ جرنالسٹ اسوسی ایشن کے زیرا ہتمام ماحولیاتی تحفظ ورکشاپ کا انعقاد

ماحولیات سے لگاؤ، تحفظ،چیلنج اور حل کے سلسلے میں منعقد کیا گیا یہ ورکشاپ بہت ہی مفید ہے، اس ورکشاپ سے عوام ماحولیات کے متعلق جوبھی غلط فہمی ہے اس کو دور کرنے میں معاون ہونے کا رکن اسمبلی سنیل نائک نے خیال ظاہرکیا۔

بھٹکل کی لائن اسپورٹس سنٹر’اسکوائر آر ایس اے T20ٹورنامنٹ‘ کی چمپئین:فائنل میں 40رنوں سے رایل کو شکست

منکی کے کوچاپو میدان میں آر ایس اے منکی کی طرف سے منعقدہ ٹی 20کرکٹ ٹورنامنٹ کے فائنل مقابلے میں لائنس اسپورٹس سنٹر نے رایل اسپورٹس سنٹر کو 40رنوں سے شکست دے کر ’اسکوائر آر ایس اے چمپئین ٹروفی ‘ کا خطاب جیتا۔

گوجر تحریک آٹھویں دن بھی جاری

گوجر سمیت پانچ ذاتوں کو ریزرویشن سے متعلق بل اسمبلی میں منظور کئے جانے کے بعد بھی راجستھان میں گوجروں کی تحریک جمعہ کو آٹھویں دن جاری رہی۔

مذہب کی بنیادپربے قصورلوگوں پرحملے شہادتوں کی تعظیم نہیں، ہجومی تشدد: عمر عبداللہ اور محبوبہ مفتی نے سخت تنقیدکی

جموں و کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ عمر عبداللہ اور محبوبہ مفتی نے جمعرات کو لیتہ پورہ پلوامہ میں سی آرپی ایف کے قافلہ پر ہوئے خود کش دھماکے کے تناظر میں جمعہ کے روز جموں میں پیش آئے ہجومی تشدد کے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے جموں اور دیگر ریاستوں میں قیام پذیر ...

کیرالہ کی این آر آئی خاتون نے منگلورو ایئرپورٹ اسٹاف پر لگایا ،جان بوجھ کر پاسپورٹ پھاڑنے کا الزام؛ ائرپورٹ ڈائرکٹر نے الزام کو کیا خارج

 پڑوسی ریاست کیرالہ۔  کاسرکوڈ کے  ایک این آر آئی نے   الزام لگایا ہے کہ منگلورو انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر سیکیوریٹی اسٹاف نے جان بوجھ کر اس کی بیوی کا پاسپورٹ اُس وقت   پھاڑ دیا جب وہ اپنے دو چھوٹے بچوں کے ساتھ دبئی روانہ ہونے کے لئے پہنچی تھی۔پاسپورٹ پھاڑنے کے بعد  ائرپورٹ ...

دبئی کے قریب عجمان میں منعقدہ نوائط پریمیر لیگ کرکٹ ٹورنامنٹ میں ڈی وی ایس یونائٹیڈ کی شاندار جیت؛ الکریمی چیلنجرس کو فائنل میں شکست

دبئی کے قریب عجمان کے  ایڈن گارڈن میدان میں منعقدہ ایز ٹیکس نوائط پرئمیر لیگ (این پی ایل)  کرکٹ کا پہلا ٹورنامنٹ  ڈی وی ایس یونائیٹید نے جیت لیا، جس کے ساتھ ہی  پانچ ٹیموں پر مشتمل یہ ٹورنامنٹ کامیابی کے ساتھ اختتام پذیر ہوا۔

نوہیرا شیخ کے خلاف چارج شیٹ داخل ہونے پر دبئی سے سرمایہ لگانے والوں نے کیا خیر مقدم، لیکن رقم واپس ملنے کے تعلق سے شش و پنج برقرار

’ہیرا گروپ‘ کی پونزی اسکیم میں سرمایہ لگاکر فریب کھانے والے خلیجی ممالک میں مقیم افراد نے کمپنی کی سی ای او   نوہیرا شیخ کے خلاف ممبئی میں چارج شیٹ داخل کیے جانے کا خیر مقد م کیا ہے۔ مگر ان میں سے بہت سارے لوگ اپنی رقم واپس ملنے کے تعلق سے زیادہ پُر امید بھی نظر نہیں آرہے ہیں۔

دبئی میں راہل نے اخبار نویسوں سے کہا؛ ’بی جے پی مشتعل اور غیر روادار؛ کررہی ہے ہمارے اداروں کو برباد؛ مگر ہم اب اُنہیں ایسا کرنے دیں گے

متحدہ عرب امارات کے دورہ پر پہنچے راہل گاندھی نے دبئی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مودی حکومت پر راست حملہ کیا اور  کہ  ’’بی جے پی مشتعل اور غیر روادار ہو رہی ہے اور ہمارے اداروں کو برباد کر رہی ہے، جیسا کہ  سپریم کورٹ ، ریزرو بینک اور الیکشن کمیشن   آف انڈیا  میں ...

دبئی میں راہول گاندھی نے کہا؛ میں آپ کے من کی بات سننے آیا ہوں؛ ہزاروں کی بھیڑ میں راہول کا چل گیا جادو؛ راہول۔راہول کے نعرے

کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے کہاکہ آئندہ برس ہونے والے عام انتخابات کے بعد مرکز میں ان کی حکومت بننے پر آندھراپردیش کو خصوصی ریاست کا درجہ دیا جائے گا۔متحدہ عرب امارات کے اپنے پہلے دورہ پر آئے مسٹر گاندھی نے جمعہ کو شرمک کالونی میں رہنے والے ہندوستانیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا ...

ایران سے رہا ہونے والے سبھی ہندوستانی ماہی گیر خیروعافیت کے ساتھ دبئی پہنچ گئے

کل منگل کو ایرانی عدالت کے حکم سے رہا ہونے والے ضلع اُتر کنڑا کے 18 ماہی گیر سمیت جملہ 28 ماہی گیروں کی دونوں بوٹ  آج بدھ رات کو خیر و عافیت کے ساتھ دبئی پہنچ گئی۔ جس کے ساتھ ہی سبھی ماہی گیروں کے گھروالوں اور دوست احباب میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے۔