پارلیمنٹ میں منی کرنکاکی گونج، ممبر پارلیمنٹ نے ممتا بنرجی کو بتایا جھانسی کی رانی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 7th February 2019, 8:32 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی7فروری (ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا ) بجٹ سیشن کے چھٹے دن لوک سبھا میں صدر کے خطاب پر لائے گئے شکریہ تجویز پر بحث ہوئی۔اس بحث میں حصہ لیتے ہوئے ٹی ایم سی ایم پی دنیش ترویدی نے ممتا بنرجی کاموزانہ جھانکی کی ملکہ سے کر دیا۔انہوں نے کہا کہ جیسے برطانوی حکومت نے جھانسی کی رانی پر ظلم اور حملے کئے تھے، ٹھیک ویسے ہی حملہ آج مودی حکومت ممتا بنرجی پر کر رہی ہے۔

ترویدی نے کہا کہ کچھ دن پہلے اس ایوان میں اری فلم کی خوب بحث ہوئی تھی۔انہوں نے کہاکہ میں نے یہ ا فلم دیکھی اور اس فلم میں دکھایا گیا ہے کہ کس طرح انگریزوں نے ہندوستان کے لوگوں کو ڈرادھمکا کر ہم پر حکومت کی۔آج وہی بچا ہے اور ہمیں جھانسی کی رانی کی یاد آتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت بھی آج سی بی آئی اور ای ڈی کے نام پر مخالفین پر حملہ کرنے کا کام کر رہی ہے۔سی بی آئی اور ممتا بنرجی کے درمیان ہوئے تنازعہ کا ذکر کرتے ہوئے ٹی ایم سی ممبر پارلیمنٹ نے کہا کہ گزشتہ دنوں بنگال میں جو ہوا وہ پہلے برطانوی حکومت کرتی تھی، لیکن بنگال میں بھی ایک جھانسی کی رانی ہے جس کا نام ممتا بنرجی ہے۔ترویدی نے کہاکہ ممتا بنرجی نے کہا کہ ہم سر کٹا سکتے ہیں لیکن سر جھکا نہیں سکتے۔ممتا بنرجی نے دکھا دیا کہ ہم پر کتنے بھی حملہ کریں، ہمیں کچھ فرق نہیں پڑے گا، کیونکہ عوام ہمارے ساتھ ہے۔اس سے پہلے کانگریس لیڈر ملکا ارجن کھڑگے نے شکریہ تجویز پر بحث کے دوران مودی حکومت پر جم کر نشانہ لگایا۔

انہوں نے کہا کہ صدر کی تقریر میں وہیں سارے باتیں کہیں گئیں جن وزیراعظم عوامی جلسوں اور پارلیمنٹ کے اندر پہلے ہی بول چکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم ہمیشہ اپنی بات کہتے ہیں اور دوسروں کی بات کبھی مانتے نہیں ہیں۔کھڑگے نے کہا کہ حکومت کی کامیابیوں کاموازنہ پچھلی حکومت سے کیا گیا، ایسا کرنا زیب نہیں دیتا۔صدر کے خطاب کا سیاسی استعمال کرنا ٹھیک نہیں ہے اور یہ حکومت کے گرتے وقار کی وضاحت کرتا ہے۔واضح ہو کہ بالی وڈ اداکارہ کنگنا رانوت کی فلم منی کرنکا ناظرین کے درمیان کافی پسند کی جا رہی ہے۔یہ فلم مہارانی لکشمی کی زندگی پر مبنی ہے۔ویسے تو لکشمی کی کہانی کئی بار چھوٹے اور بڑے پردے پر دکھائی دی، لیکن اس بار کنگنا اسے ایک الگ ہی انداز میں پیش کیا ہے،وہ اس فلم کی ڈائریکٹر بھی ہیں،فلم کے جنگ کے مناظر سے لے کر موسیقی کے میں متنوع دکھائی دے رہی ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

لوک سبھا انتخابات 2019: مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلی نارائن رانے کا دعوی، اکیلے لڑیں گے عام انتخابات

لوک سبھا انتخابات میں چند ماہ کا وقت رہ گیا ہے، اور اتحاد کا بننا۔ٹوٹنا اس وقت عروج پر ہے۔ایک طرف پورا اپوزیشن وزیر اعظم نریندر مودی اور ان کی بھارتیہ جنتا پارٹی کے خلاف متحد ہونے کی کوششوں میں مصروف ہے،