کسانوں کے مطالبات کے تئیں سرکار کا رویہ مثبت ہے:دیویندر فڑنویس

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th March 2018, 9:08 PM | ملکی خبریں |

ممبئی ،12؍ مارچ (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)مہاراشٹر کے وزیر اعلی دیویندر فڑنویس نے کہا کہ ان کی حکومت ان کسانوں اور قبائلیوں کی مانگ کے تئیں’حساس اور مثبت ‘ہے جو انتظامیہ کی توجہ اپنے مسائل کی طرف کھینچنے کے لئے ناسک سے ممبئی چل کر آئے ہیں۔اسمبلی میں ایک بحث کے دورانپ فڑنویس نے یہ رائے دی۔یہ بحث اپوزیشن لیڈر رادھاکرش وکھے پاٹل کی طرف سے شروع کی گئی جنہوں نے اس طویل سفر میں شامل ہونے کے لئے کسانوں کی تعریف کی۔یہ کسان پرامن احتجاج یاترا کے ذریعے مکمل قرض معافی اور فصلوں پر گلابی کیڑوں کے ذریعہ تباہ ہوئی فصل کے لئے معاوضے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔جنوبی ممبئی کا آزاد میدان آج صبح لال ساگر میں تبدیل ہو گیا جب ہزاروں کسان گزشتہ چھ دنوں سے پڑوسی ضلع ناسک سے تقریباً 180 کلو میٹر کی دوری طے کر کے سرخ پرچم اپنے ہاتھوں میں لے کر یہاں جمع ہوئے۔کسانوں نے بغیر کسی شرط کے قرض معافی اور جنگلی زمین کو قبائلی کسانوں کو منتقل کرنے کے مطالبات کو لے کر اسمبلی احاطے کو گھیرنے کی بھی منصوبہ بندی کی ہے۔وکھے پاٹل نے ایوان میں کہاکہ وہ (مخالفت کر رہے کسان)کے جے سومیا میدان سے آزاد میدان پہنچ گئے تاکہ بورڈ امتحان میں شامل ہو رہے بچوں کو ٹریفک جام کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ممبئی کے لوگ بھی ان کی توجہ رکھ رہے ہیں۔انہوں نے مخالفت کر رہے کسانوں کے رہنما کے ساتھ ان کے مطالبات کو لے کر وزارتی کمیٹی کی ضرورت پر سوال بھی اٹھایا۔بحث میں فڑڈنویس نے کہا کہ مظاہرین کا مطالبہ بہت اہم ہے۔وزیر اعلی نے کہاکہ تقریباًقریب 90 سے 95 فیصد شرح کا غریب قبائلی ہیں۔ وہ جنگلی زمین حقوق کے لئے لڑ رہے ہیں۔ان کے پاس زمین نہیں ہے اور وہ کاشت نہیں کر سکتے۔حکومت ان کے مطالبات کے تئیں حساس اور مثبت ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اب مدرسہ تعلیم میں تبدیلی کی تیاری میں مرکزی حکومت ، بورڈ سے منظوری لینا ہوگا لازمی

فروغ انسانی وسائل کی وزارت مدرسہ تعلیم میں تبدیلی کے منصوبہ پر غور و خوض کررہی ہے۔ اس کے پیچھے وزارت کا مقصد مدارس میں پڑھنے والے طلبہ کو اچھی معیار ی تعلیم فراہم کرنا ہے۔ اس منصوبہ کے تحت تعلیمی اداروں کا مدرسہ بورڈ یا پھر اسٹیٹ بورڈ سے الحاق ضروری ہوگا۔

داعش مقدمہ ،اریب مجید کی ضمانت عرضداشت سپریم کورٹ میں داخل، ملزم کے والد کی درخواست پر جمعیۃ علماء نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا: گلزار اعظمی

ممنو ع تنظیم داعش کے رکن ہونے اور دہشت گردانہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزامات کے تحت کلیان کے ساکن اریب مجید کی ضمانت عرضداشت ملزم کے والد ڈاکڑاعجاز مجید کی درخواست پر جمعیۃ علماء نے سپریم کورٹ میں داخل کی ہے جس کا ڈائری نمبر 22076/2018 ہے، یہ اطلاع آج یہاں ملزم کو قانونی امداد ...

کولگام میں فوجی ٹکڑی پر حملہ، جوابی کارروائی میں لشکر طییہ کے دو جنگجو جاں بحق 

گورنر راج نافذ ہونے کے بعد بھی جموں و کشمیر میں جنگجوئیت میں کمی نہیں آئی ہے۔ اتوار کو کولگام میں گشت پر نکلی فوج کی ایک ٹکڑی پر گھات لگا کر بیٹھے دہشت گردوں نے حملہ کر دیا۔ حملے کے بعد دہشت گرد وہاں سے فرار ہوگئے۔

امت شاہ کے الزامات پر محبوبہ مفتی کاترکی بہ ترکی جواب، ہر فیصلہ میں بھاجپا کی حمایت شامل تھی : محبوبہ مفتی 

جموں کشمیر کی سابق وزیر اعلی محبوبہ مفتی نے اتوار کو اپنے اوپر لگے جموں اور لداخ کے علاقے کے ساتھ امتیازی سلوک کے الزامات کو مسترد کر تے ہوئے حیرت کا اظہار کیا کہ اگر یہ سچ ہے تو اب تک کسی بھی بی جے پی کے وزیر نے اس کے بارے میں کیوں نہیں کہا۔