مہادائی مسئلے پر کرناٹک کی قانونی جنگ ، وزیر اعلیٰ سے مشورے کے بعد آگے کی پہل : ڈی کے شیوکمار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 28th August 2018, 11:02 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،28؍اگست(ایس او نیوز) ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ڈی کے شیوکمار نے کہا ہے کہ دریائے مہادائی کے پانی کی ریاست میں تقسیم کس طرح ہو اس سلسلے میں پہل کرنے سے پہلے حال ہی میں ٹریبونل کی طرف سے صادر کئے گئے فیصلے میں کرناٹک کے ساتھ جو ناانصافی ہوئی ہے اس پر وزیراعلیٰ سے تبادلۂ خیال کیا جائے گا اور اس سلسلے میں کرناٹک کی قانونی جنگ کو آگے بڑھانے کے لئے رہنما خطوط وضع کئے جائیں گے۔

آج مہادائی طاس کے علاقوں کا محکمۂ آبی وسائل کے اراکین کے ساتھ دورہ کرنے کے بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ عنقریب وہ وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمارسوامی کے ساتھ مہادائی مسئلے پر خصوصی میٹنگ کا اہتمام کریں گے اور اس میٹنگ میں مہادائی ٹربیونل کے فیصلے سے کرناٹک کے مفادات کو جو نقصان پہنچا ہے اس کے تحفظ کے لئے آگے کی حکمت عملی وضع کرنے کے ساتھ کرناٹک کی قانونی جنگ کو کس طرح سے آگے بڑھایا جائے اس پر بھی بات چیت کی جائے گی۔

ڈی کے شیوکمار نے کہا کہ اس کے لئے ضرورت پڑے تو ایک کل جماعتی اجلاس بھی طلب کیا جائے گا جس میں مہادائی مسئلے پر ریاست کی تمام سیاسی جماعتوں کا موقف واضح ہوسکے اور پارٹی امتیازات سے بالا تر ہوکر اس معاملے میں ریاست کو انصاف دلانے کے لئے جدوجہد کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ مہادائی مسئلے پر کرناٹک کے مفادات کے تحفظ کے لئے حکومت ہر قدم اٹھانے تیار ہے۔ کابینہ میں توسیع کے متعلق اخباری نمائندوں کے کسی بھی سوال کا جواب دینے سے ڈی کے شیوکمار نے انکار کردیا۔
 

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا میں کرناٹکا کے وزیراعلیٰ کی کارکو 13 جگہوں پر روک کر تلاشی لینے کے بعد اب سابق وزیراعظم کے ہیلی کاپٹرکی بھی لی گئی تلاشی

3/اپریل کو کرناٹک کے وزیراعلیٰ کماراسوامی کی کار کو قریب 13 جگہوں پر روک کر تلاشی لینے کی کاروائی کے بعد اب اُن کے والد  اور ملک کے سابق وزیراعظم  ایچ ڈی دیوے گوڈا صاحب  کے   ہیلی کاپٹر کی تلاشی لینے کی بات سامنے آئی ہے، جس پر سیاسی لیڈران  مرکزی حکومت  پر یکطرفہ کاروائی کرنے ...

اپنے امیدوار کو بے وجہ بڑھا چڑھا کر پیش کر رہی ہے بی جے پی: ملکا ارجن کھڑگے

اپوزیشن لیڈر اور کانگریس کے موجودہ ایم پی ملکا ارجن کھڑگے نے اتوار کو یقین ظاہر کیا کہ وہ الیکشن جیت جائیں گے۔انہوں نے بی جے پی پر الزام لگایا کہ وہ محفوظ گلبرگہ پارلیمانی سیٹ سے اپنے امیدوار امیش جادھو کو بے وجہ بڑھا چڑھا کر پیش کر رہی ہے۔کھڑگے نے کہا کہ بی جے پی جادھو کے ...

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

اس بار کے انتخابات سب سے زیادہ اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ...

بنگلور سے شموگہ اور بھدراوتی لے جانے کے دوران دوکروڑ کی رقم ضبط؛ گاڑی کے ایک ٹائر میں چھپا کر رکھی گئی تھی رقم

الیکشن کا ضابطہ اخلاق لاگو ہونے کے بعد انتخابی قوانین کی خلاف ورزیوں پر نظر رکھنے والے دستے نے کرناٹکا میں اب تک غیر محسوب رقم اور دیگر اشیاء جو ضبط کی ہے اس کی مالیت کا اندزاہ 83کروڑ روپے لگایا گیا ہے۔

الیکٹرانک ووٹنگ مشینیں سخت نگرانی میں اسٹرانگ رومس منتقل

جنوبی کرناٹک کے 14 پارلیمانی حلقوں میں کل پہلے مرحلے کی پولنگ کے دوران ڈالے گئے ووٹ الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں میں قید ہیں ، اور ان الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کو مرکزی دستوں کی سیکورٹی کے تحت اسٹارنگ رومس میں قید کردیا گیا ہے۔

ملک میں بی جے پی کی لہر اور جال بالکل نہیں ہے مودی انتظامیہ کارپورٹ کارڈ فیل ہوگیا : دنیش گنڈو راؤ

ملک کے کسی بھی علاقہ میں وزیر اعظم نریندر مودی کی کوئی لہر بالکل نہیں ہے ۔مودی لہر کا جھانسہ دے کر عوام کو جال میں پھانسنے کی کوشش بی جے پی کر رہی ہے ۔یہ باتیں کے پی سی سی کے صدر دنیش گنڈو راؤ نے کہی ہیں ۔آ