ایکشن موڈ میں کملناتھ حکومت، مدھیہ پردیش اسمبلی میں ہنگامہ کرنا ممبران اسمبلی کو پڑے گا بھاری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th January 2019, 9:47 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،6؍ جنوری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) مدھیہ پردیش میں اقتدار کی تبدیلی کے بعد اسمبلی میں اراکین اسمبلی کے ہنگامے پر لگام لگانے کی کوشش سیشن شروع ہونے سے پہلے تیز ہو گئی ہے۔

کانگریس نے اسمبلی میں ہونے والے ہنگامے کو روکنے کے لئے اراکین اسمبلی کی تنخواہ۔بھتہ کاٹنے کا تہیہ کرلیا ہے۔ پارلیمانی ڈاکٹر گووند سنگھ نے کہا ہے کہ اسمبلی بحث اور رضامندی سے چلے گی نہ کہ ہنگامے سے۔ہنگامے کے لئے سڑک ہے۔لہٰذا اسمبلی میں ہنگامہ نہ ہو اس کے لئے ہنگامہ کرنے والے ممبران اسمبلی کے تنخواہ مراعات کو کاٹا جائے گا، اس کے لئے تجویز لائی جارہی ہے۔

وہیں سابق اسمبلی اسپیکر ڈاکٹر سیتاشرن شرما کا کہنا ہے کہ سابق اسمبلی میں بھی ہنگامہ روکنے کے لئے تجویز لایا جانے والا تھا۔ایوان ہمیشہ باہمی رضامندی سے چلتے ہیں، حکومت کے رتبے سے نہیں۔جو بھی بندوبست کریں گے وہ رضامندی کی بنیاد پر ہو گی، حکومت صوابدیدی کرے گی تو اپوزیشن اس کی مخالفت کرے گا۔انتخابات سے پہلے کانگریس نے ایوان میں ہنگامہ روکنے کا بھروسہ دلایا تھا۔اسی کے تحت ہنگامہ روکنے کے لئے یہ اصول وقانون بنایا جا رہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم کا اُمیدوارکون ؟ راہول گاندھی، مایاوتی یا ممتا بنرجی ؟

آنے والے لوک سبھا انتخابات میں اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم کے عہدے کا اُمیدوار کون ہوگا اس سوال کا جواب ہرکوئی تلاش کررہا ہے، ایسے میں سابق وزیر خارجہ اور کانگریس کے سابق سنئیر لیڈر نٹور سنگھ نے بڑا بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ  اس وقت بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سربراہ مایاوتی ...

مدھیہ پردیش میں 5روپے، 13روپے کی ہوئی قرض معافی، کسانوں نے کہا،اتنی کی تو ہم بیڑی پی جاتے ہیں

مدھیہ پردیش میں جے کسان زراعت منصوبہ کے تحت کسانوں کے قرض معافی کے فارم بھرنے لگے ہیں لیکن کسانوں کو اس فہرست سے لیکن جوفہرست سرکاری دفاترمیں چپکائی جارہی ہے اس سے کسان کافی پریشان ہیں،