ایکشن موڈ میں کملناتھ حکومت، مدھیہ پردیش اسمبلی میں ہنگامہ کرنا ممبران اسمبلی کو پڑے گا بھاری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th January 2019, 9:47 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،6؍ جنوری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) مدھیہ پردیش میں اقتدار کی تبدیلی کے بعد اسمبلی میں اراکین اسمبلی کے ہنگامے پر لگام لگانے کی کوشش سیشن شروع ہونے سے پہلے تیز ہو گئی ہے۔

کانگریس نے اسمبلی میں ہونے والے ہنگامے کو روکنے کے لئے اراکین اسمبلی کی تنخواہ۔بھتہ کاٹنے کا تہیہ کرلیا ہے۔ پارلیمانی ڈاکٹر گووند سنگھ نے کہا ہے کہ اسمبلی بحث اور رضامندی سے چلے گی نہ کہ ہنگامے سے۔ہنگامے کے لئے سڑک ہے۔لہٰذا اسمبلی میں ہنگامہ نہ ہو اس کے لئے ہنگامہ کرنے والے ممبران اسمبلی کے تنخواہ مراعات کو کاٹا جائے گا، اس کے لئے تجویز لائی جارہی ہے۔

وہیں سابق اسمبلی اسپیکر ڈاکٹر سیتاشرن شرما کا کہنا ہے کہ سابق اسمبلی میں بھی ہنگامہ روکنے کے لئے تجویز لایا جانے والا تھا۔ایوان ہمیشہ باہمی رضامندی سے چلتے ہیں، حکومت کے رتبے سے نہیں۔جو بھی بندوبست کریں گے وہ رضامندی کی بنیاد پر ہو گی، حکومت صوابدیدی کرے گی تو اپوزیشن اس کی مخالفت کرے گا۔انتخابات سے پہلے کانگریس نے ایوان میں ہنگامہ روکنے کا بھروسہ دلایا تھا۔اسی کے تحت ہنگامہ روکنے کے لئے یہ اصول وقانون بنایا جا رہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

 گجرات:  ٹھاکر کمیونٹی کادقیانوسی قانون،لڑکیوں کے موبائل کے استعما ل پر مکمل پابندی، بھاگ کر شادی کرنے پر اہل خانہ کو بھرنا ہوگا جرمانہ 

گجرات کے بناس کا ٹھا میں ٹھا کر کمیونٹی کی طرف سے 12 دیہات میں عجیب و غریب اور دقیانوسی قوانین بنائے گئے ہیں۔ اس میں ایک اصول ایسا ہے کہ لڑکیاں اپنے پاس موبائل نہیں رکھ پائیں گی۔

 اب تمام علاقائی زبانوں میں ہون گے ڈاک محکمہ کے امتحانات، راجیہ سبھا میں ہنگامہ کے بعد حکومت نے منسوخ کیا پیپر 

ڈاک محکمہ کی گزشتہ ہفتے ہوئے ایک امتحان کا ذریعہ صرف ہندی اور انگریزی رکھنے کی مخالفت میں منگل کو راجیہ سبھا میں کئی جماعتوں کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے کاروائی کئی بار روکنا پڑی۔

پاکستانی جیل میں قید سابق ہندوستانی افسر کلبھوشن پر بین الاقوامی عدالت کا فیصلہ آج

پاکستان کی جیل میں بند ہندوستانی بحریہ کے سابق فوجی افسر کلبھوشن جادھو کے معاملے میں بدھ کو ہیگ واقع بین الاقوامی عدالت (آئی سی جے) اپنا فیصلہ سنائے گی۔ ’دی ہیگ‘ کے پیس پیلس میں 17 جولائی کو ہندوستانی وقت کے مطابق شام ساڑھے چھ بجے کھلی سماعت ہوگی جس کے بعد چیف جسٹس عبدالقوی ...