بھاگلپورگھوٹالہ: نتیش،سشیل کمارمودی،گری راج،منوج تیواری اورشہنوازحسین مشکوک،چھوٹی مچھلیوں کوپکڑکراصل مجرم کوبچارہی سرکار،لالویادونے کارروائی کے لیے الٹی میٹم دیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th August 2017, 4:49 PM | ملکی خبریں |

پٹنہ12اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)آر جے ڈی کے صدر لالو پرساد یادو بھاگلپور میں سرکاری رقم کے گھوٹالے کے معاملے کی جانچ سی بی آئی سے کرانے کا مطالبہ کیاہے۔ ان کہا ہے کہ بہار کے نائب وزیراعلیٰ سشیل کمار مودی کوبرخاست کرکے انہیں جیل بھیجا جائے. انہوں نے اس کارروائی کے لیے نتیش کمار کو اتوار تک کا وقت دیا ہے۔ اگرچہ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ ایک کروڑ کے اس گھوٹالے میں نتیش کمار اور سشیل کمار مودی کی یکساں شرکت ہے کیونکہ یہ 2005 میں چالوہواتھا جب ان جوڑے نے بہار کی کمان سنبھال رکھی تھی۔لالو یادو نے الزام لگایا کہ چیک باؤنس ہونے کے بعد نتیش کمار نے آناََفاناََمیں رازکھلنے کے خوف سے تحقیقات ان چہیتے افسروں سے کراکر ابتدائی رپورٹ دے دی۔کچھ چھوٹی چھوٹی مچھلیوں کوپکڑا گیا لیکن بڑے مچھلیوں پر کارروائی کیوں نہیں کی گئی۔تنظیم کی خاتون منورما دیوی کے ساتھ نتیش کمار، سشیل مودی، گری راج سنگھ، شاہنواز حسین اور منوج تیواری کے علاوہ کئی بڑے افسران کی تصویریں ہیں، ان پر کیا کارروائی ہوئی۔انہوں نے کہا کہ اگر اس گھوٹالے کو نتیش کمار کا تحفظ نہیں ہے تو وہ سی بی آئی سے اس کی جانچ کرائیں۔لالویادوکے نشانے پر فی الحال سشیل کمار مودی ہیں کیونکہ انہوں نے ہی لالویادوکے خاندان پرگمنام جائیدادکاانکشاف کرکے جے ڈی یو اور آر جے ڈی کے اتحاد کو تڑوانے کا کام کیا تھااپنے کے کیس میں سی بی آئی کو توتے کہنے والے لالو پرساد یادو کو اس معاملے میں سی بی آئی کی جانچ پر ہی بھروسہ ہے۔ لالوپرساد یادو نے کہا کہ وزیر اعظم مودی نے پارلیمنٹ میں 9 اگست کو بدعنوانی بھارت چھوڈو کا نعرہ دیا تھا، ایسے میں اب وہ فیصلہ کریں کہ بہار کے بھاگلپور میں سشیل مودی کے وزیر خزانہ رہتے جو اتنا بڑا گھوٹالہ ہوا ہے اس کے بعد انہیں عہدے پر رہنے کا کیا حق ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

وزیر اعلیٰ نتیش کمارکا کشن گنج کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ;ایم پی مولانااسرارالحق قاسمی نے میمورنڈم سونپ کر سیلاب متاثرین کی فوری بازآبادکاری کامطالبہ کیا

بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار نے آج کشن گنج کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ کرکے سیلاب متاثرین سے ملاقات کی اورراحت وامداد کے کاموں کا جائزہ لیا۔اس موقع پر علاقے کے ایم مولانا اسرارالحق

حادثات سے دکھی پربھونے کہا;ریلوے کے لئے خون اور پسینہ ایک کیا، استعفی پرمودی نے انتظارکرنے کوکہا

گزشتہ پانچ دنوں میں اتر پردیش میں دو ٹرینوں کے حادثات کی اخلاقی ذمہ داری لے کر ریلوے وزیر سریش پربھو استعفی دینے کی پیشکش کی ہے،اگرچہ ان کا استعفی ابھی تک قبول نہیں ہوا تھا۔

حکومت ہماری خاموشی کو بزدلی نہ سمجھے: سید عالمگیر اشرف;رائے پور میں بورڈ کی ہنگامی میٹنگ طلب، ملک بھر میں جاری کیا پیغام،مذہب میں دخل اندازی نا قابل برداشت

مرکزی حکومت کی مسلسل مذہب میں غیر قانونی دخل اندازی حکومت کے لئے اچھا نہیں ہے۔ اپنی ناکامیوں اورمجرموں کو شہ دینے کی مجراانہ سازشوں پر پردہ ڈالنے کے لئے ملک کے