کنداپور کے 2طلباء ہال ٹکٹ لینے کے بعد حادثاتی طور پر ایک جھیل میں ڈوبنے سے ہلاک

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 23rd April 2018, 9:04 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کنداپور23؍اپریل (ایس او نیوز) اپنی آنکھوں میں زندگی کے سہانے سپنے سجائے دو نوجوان طلباء جب کالج سے اپنے ہال ٹکٹ لے کر نکلے تھے تو انہیں پتہ نہیں تھا کہ راستے میں موت ان کا انتظار کررہی ہے۔ یہ دردناک کہانی کیرتن (19سال) اور سچن(19سال) نامی دو دوستوں کی ہے جنہوں نے کالج سے نکل کر گھر جانے سے پہلے کوٹیشور مندر کے سامنے واقع جھیل میں نہانے کا فیصلہ کیا اور دونوں ڈوب کر ہلاک ہوگئے۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق یہ دونوں دوست کاگیری گورنمنٹ کالج کوٹیشور کے طالب علم تھے۔ کیرتن بی اے کے سال اول میں تھا اورسچن بی کام کے سال اول میں زیر تعلیم تھا۔کہاجاتا ہے کہ امتحان کی تیاریوں کے لئے کالج میں چھٹیاں چل رہی تھیں۔ کیرتن ، سچن اوران کے ایک اور دوست نے کالج پہنچ کر ہال ٹکٹ حاصل کرنے کے بعدکوٹیشور ٹیمپل جانے کا فیصلہ کیا۔ وہاں جھیل میں تیرنے کے لئے دو دوست پانی میں اترے جبکہ تیسرا دوست کنارے پر بیٹھا رہا۔ جب کافی دیر تک کیرتن اور سچن پانی سے باہر نہیں نکلے تو اس نے آس پاس کے لوگوں کو مطلع کیا۔فائر بریگیڈ عملے نے بڑی تلاشی کے بعد کیرتن کی لاش برآمد کرلی۔ سچن کی لاش کے لئے بڑے پیمانے پر تلاش جاری رہی۔کنداپور پولیس اسٹیشن کے انسپکٹر ہریش اور عملے نے جائے وقوع پر پہنچ کر جائزہ لیا اور معاملہ درج کرلیا۔اس المناک حادثے کی خبر عام ہوتے ہی مندر کی جھیل کے اطراف سینکڑوں لوگ جمع ہوگئے۔

ایک نظر اس پر بھی

کاروار: لاپتہ ماہی گیروں کا معاملہ۔ ڈپٹی کمشنر کے دفتر میں خصوصی اجلاس؛ بنگلہ دیشیوں کو ملازم نہ رکھنے ڈپٹی کمشنر کی تاکید

کشتی سمیت لاپتہ ماہی گیروں کے مسئلے پر ایک خصوصی جائزاتی میٹنگ ضلع شمالی کینرا کے ڈپٹی کمشنر ایس ایس نکول کے دفتر میں منعقد کی گئی، جس میں ماہی گیروں کے لیڈر، پولیس افسران اورتحقیقاتی ٹیم کے افسران شریک ہوئے۔ اس اجلاس میں ساحلی علاقے میں تحفظ اور سیکیوریٹی کے مسئلے پر بھی غور ...

ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار اسوامی کا مرکزی حکومت سے تقاضہ

شیموگہ، شرنگیری، منگلورو جیسے علاقوں سے گزرنے والی ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار ا سوامی نے مرکزی حکومت سے تقاضہ کیا ہے۔

ہبلی۔انکولہ ریلوے منصوبہ:سڑکوں پر احتجاج کرنے سے ریل آنے والی نہیں ہے۔ سپریم کورٹ کے فیصلے کا انتظار کیا جارہا ہے۔ اننت کمار ہیگڈے کا بیان

مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے نے ہبلی۔انکولہ ریلوے منصوبے میں ہورہی تاخیر کے سلسلے میں کہا کہ اس میں کوئی سیاسی کھیل نہیں ہورہا ہے، بلکہ سپریم کورٹ نے اس منصوبے پر اسٹے لگا رکھاہے اس لئے عدالت کے فیصلے کا انتظار کیا جارہا ہے۔ اس تاخیر کے خلاف راستہ روکویا احتجاجی مظاہرے کرنے سے ...

بھٹکل میں ویلفئیر پارٹی آف انڈیا کے زیراہتمام قومی صدر کی آمد پر خطاب عام : مسلمان  جب تک حکمرانی میں شامل نہیں ہونگے کوئی مسائل حل نہیں ہونگے : قاسم رسول الیاس

آزادی کے 70سالوں بعد بھی مسلمان  سیاسی طور پر بے وزن ، بے وقعت اور پسماندگی کا شکار ہیں۔ جو کل تک اقتدار کے مالک تھےآج ملکی سیاست میں ان کاکوئی کردار نہیں ہے، اس کے برعکس پچھڑے طبقات، دلت، اچھوت ، او بی سی ایک سیاسی قوت کے طورپر ابھر کر اپنی طاقت منوانے میں کامیاب ہیں ان کی ایک ...

کاروار: بوٹ سمیت لاپتہ ہونے والے ماہی گیروں کے اہل خانہ کو گزربسر کے لئے ریاستی حکومت کی طرف سے فی کس ایک لاکھ روپے کی امداد

ضلع شمالی کینرا کے ایڈیشنل ڈی سی ڈاکٹر سریش ایٹنال نے بتایا ہے کہ ملپے بندرگاہ سے ماہی گیری کے لئے نکلنے کے بعد مہاراشٹرا کے حدودمیں لاپتہ ہونے والی سوورنا تریبھوجا ماہی گیر کشتی پر موجود 7مچھیروں کے اہل خانہ کو گزربسر کے لئے ریاستی حکومت کی جانب سے عبوری راحت کے طورپر فی کس ...

ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار اسوامی کا مرکزی حکومت سے تقاضہ

شیموگہ، شرنگیری، منگلورو جیسے علاقوں سے گزرنے والی ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار ا سوامی نے مرکزی حکومت سے تقاضہ کیا ہے۔

چیتے کی کھال فروخت کرنے کے دوران کنداپور میں بھٹکل کے پانچ افراد سمیت دس گرفتار

یہاں شاستری سرکل کے قریب غیر قانونی طورپر چیتے کی کھال فروخت کرنے کے الزام میں بینگلور کی سی آئی ڈی فوریسٹ یونٹ  نے دس افراد کو گرفتار کرلیا ہے جس میں پانچ کا تعلق بھٹکل، تین کا تعلق بیندور اور ایک ایک کا تعلق ، منڈگوڈ اور  ہوناورسے ہے۔ گرفتاری کی یہ واردات جمعہ کی دوپہر کو ...