کنداپور پولیس اسٹیشن کے اندر دوگروہوں کے درمیان مارپیٹ ۔2خواتین زخمی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th December 2017, 9:29 PM | ساحلی خبریں |

کنداپور،6؍دسمبر (ایس او نیوز) شیڈول کاسٹ کے دو گروہ جو اپنا تنازعہ حل کرنے کے لئے پولیس اسٹیشن میں آئے تھے، پولیس عملے کے سامنے ہی آپس میں مارپیٹ پر اتر آئے جس کے نتیجے میں 2خواتین زخمی ہوگئیں، جن کو علاج کے لئے اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔

کہا جاتا ہے کہ کوٹا گرام پنچایت میں دلتوں کے اندر قانونی بیدار لانے اور مختلف سرکاری اسکیموں سے متعلقہ سہولتیں فراہم کرنے کے لئے ایک کیمپ منعقد کیا گیا تھا۔اس پروگرام میں پنچایت ترقیاتی افسر اور سکریٹری موجود نہ رہنے کو مسئلہ بناتے ہوئے دلتوں کے ایک گروپ نے مذکورہ پروگرام منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا۔ پنچایت کے اراکین نے ان کا مطالبہ نہ مانتے ہوئے پہلے سے طے شدہ پروگرام کو آگے بڑھایا۔ایڈوکیٹ منجوناتھ گیلیار نے جب قانونی معلومات پر اپنا لیکچر شروع کیا تو ایک دلت لیڈر شیام نے بار بار رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کی جس سے ایڈوکیٹ منجوناتھ اور شیام کے بیچ زبانی تکرار شروع ہوگئی۔ اس موقع پرایک دلت تنظیم سے وابستہ کچھ لوگ وہاں پہنچے اور ہنگامہ کھڑا کردیا۔

پھراس کے بعد دلتوں کے ایک گروپ نے کوٹا پولیس اسٹیشن پہنچ کر پنچایت صدر ونیتا سریدھر اچار کے خلاف شکایت کرتے ہوئے کہا کہ اس نے ہنگامے کے دوران دلتوں کا مذاق اڑایا ہے اس لئے اسے معافی مانگنی چاہیے ورنہ دلتوں کے تحفظ سے متعلق قانون کے تحت اس کے خلاف کیس درج کردیا جائے۔ اس مطالبے پر دلت سنگھرش سمیتی کے اعتراض سے دو گروہوں کے درمیان اختلاف پیدا ہوگیا اوراس دوران آرتی نامی ایک خاتون نے ایک دلت لیڈر پر حملہ کردیا۔ اس کے ساتھ ہی پولیس اسٹیشن کے اندر ہی دوگروہوں کے بیچ مارپیٹ شروع ہوگئی۔ پولیس نے بڑی مشکل سے اس ہنگامے پر قابو پایا او ردونوں زخمی خواتین کو علاج کے لئے اسپتال میں منتقل کردیا۔

ایک نظر اس پر بھی

ہوناور:پریش میستاکی پراسرار موت کے معاملے میں نیا خلاصہ۔ واردات سے پہلے بند کردیا گیا تھا سی سی کیمرہ !

ہوناور میں فرقہ وارانہ کشیدگی کے دوران پریش میستانامی نوجوان کی پراسرار موت کو سنگھ پریوار کی طرف سے فرقہ وارانہ قتل قرار دیا جارہا تھا۔لیکن سی بی آئی کی تحقیقات دوران اس معاملے نے اب ایک نیا رخ لے لیا ہے۔

بھٹکل میں تنظیم میڈیا ورکشاپ کا شاندار اختتامی اجلاس۔ میڈیا کی معتبر شخصیات اور علماء کا خطاب۔ ورکشاپ کے شرکاء کو انعامات اور اسناد کی تقسیم

صحافت کے پیشے میں دلچسپی رکھنے والوں کے لئے مجلس اصلاح وتنظیم کی میڈیا واچ کمیٹی کی نگرانی میں منعقد ہونے والے ہونے پانچ روزہ ورکشاپ کے اختتام پر ایک شاندار اختتامی اجلاس بندر روڈ سیکنڈ کراس پر واقع المدینہ ہال میں منعقد ہوا۔

بھٹکل میں گھر کی چھت سے گرنے والا بچہ علاج کارگر نہ ہونے سے ہلاک۔ڈاکٹر پر غفلت برتنے کا الزام۔ ڈاکٹر نے طلب کی معذرت

بھٹکل سرکاری اسپتال میں بدھ کو  عوام نے بچے کی ایک نعش لے کر ایک ڈاکٹر کا گھیراو کیا اور اُس پر غفلت  برتنے کا الزام عائد کرتے ہوئے  اُسے  آڑے ہاتھوں لیا۔ عوام کا الزام تھا کہ ڈاکٹر کی لاپرواہی سے اس بچے کی جان گئی ہے۔