خواتین کی ترقی اورسیاسی میدان میں کامیابی کانگریس کے برسراقتدار آنے سے ممکن کے پی سی سی دفترمیں منعقدہ تقریب یوم خواتین سے رہنماؤں کا اظہار خیال

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th March 2019, 12:15 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو14؍مارچ(ایس او نیوز) ویمنس کانگریس لیڈروں نے کہا کہ اگر سیاسی میدان میں خواتین کو ریزرویشن چاہئے تو مرکز میں کانگریس کا برسراقتدار آناضروری ہے۔ پردیش کانگریس کمیٹی دفتر میں ویمنس کانگریس کی جانب سے یوم خواتین تقریب کا اہتمام کیاگیاتھا، جس میں ریاستی وزیر جئے مالا، رکن اسمبلی سومیا ریڈی، مےئر گنگمبیکا ملیکارجن، سینئر خاتون کانگریس لیڈر مارگٹ آلوا،رانی ستیش سمیت پارٹی کی دیگر خواتین لیڈروں نے شرکت کی۔۔

اس موقع پر پردیش کانگریس کمیٹی ویمنس ونگ کی صدر ڈاکٹر پشپا امرناتھ نے کہا کہ انتخابات میں خواتین کو33فیصد ریزرویشن حاصل نہیں ہے۔ اگر مرکز میں کانگریس برسراقتدار آئی تو خواتین کو 33فیصد ریزرویشن دیاجائے گا۔ انہوں نے ویمنس ونگ کے تمام لیڈران اور کارکنوں سے گزارش کی کہ وہ پارلیمانی انتخابات کے دوران پوری لگن اور جدوجہد کے ساتھ کام کریں اور پارٹی امیدواروں کی کامیابی کے لئے کوشش کریں۔ا نہوں نے کہا کہ کانگریس صرف سیاسی پارٹی ہی نہیں ہے بلکہ یہ ایک جن آندولن ہے ، یہ عام آدمیوں کی پارٹی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی ملک کی آزادی کے بعد سے آج تک ملک کی خدمت کرتی آئی ہے۔ کانگریس پارٹی نے ملک کی ترقی میں اہم کردار اداکیاہے۔مارگٹ آلوانے کہا کہ مودی کی جئے بولنا وطن پرستی ہے اور ان کے خلاف بات کرنا ملک سے غداری ہے۔ یہ ماحول آج ملک میں دکھائی دے رہاہے۔

انہوں نے کہا کہ اس طرح کا ماحول پیداکرنے والے افراد جمہوری ہندوستان میں ہیں یا نہیں، شک ہونے لگا ہے۔ انہوں نے کہا کہ47سال کے دوران اتنے بڑے پیمانے پر بے روزگاری انہوں نے کبھی نہیں دیکھی اور افسوس اس کا ہے کہ مرکز میں نریندر مودی کے اقتدار پر آنے کے بعد ملک کئی مسائل میں گھرچکاہے۔اس کے خلاف آواز اٹھانے والوں کو ملک کا غدار کہاجانے لگا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مودی کی جئے بولنے والے ہی وطن پرست ہیں۔ اس طرح کے حالات پیداکردےئے گئے ہیں۔پارلیمانی انتخابات کو مدنظر رکھ کرکانگریس پر بے بنیاد الزامات لگانے کے حربے استعمال کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فرقہ پرست بی جے پی اپنی ناکامیوں کو چھپانے کے لئے کانگریس گھوٹالوں کا الزام لگارہی بوفورس معاملہ کو دوبارہ ہوادی جارہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ طیارہ سازی سے ناواقف انل امبانی کی کمپنی کو رافیل طیارہ کا کنٹراکٹ دیاگیاہے۔ انل مبانی دیگر تجارتی میدان کے ماہر ہیں۔ لیکن انہوں نے اس سے قبل نہ تو طیارہ سازی کی ہے اور نہ ہی اس کا ان کو کوئی تجربہ ہے۔ رافیل طیارہ کی تیاری کے معاہدہ کے بعد فرانس کی کمپنی نے جو رقم اداکی تھی اس سے انل امبانی نے ناگپورمیں زمین خریدی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مقامی ادارے ایچ اے ایل کو ملنے والے کنٹراکٹ کو مودی حکومت نے انل امبانی کو دے کر ملک کے تحفظ کے معاملہ میں جان بوجھ کر مداخلت کی ہے۔ آلوانے خواتین کارکن سے کہا کہ وہ لوک سبھا انتخابات کے دوران پوری ایمانداری کے ساتھ کام کریں، ہر سڑک کی دوخواتین ذمہ داری لے کر ہر بوتھ پرعوام کو لاکر ووٹ ڈلوانے کی کوشش کریں اور یہ خیال رکھیں کے کوئی ووٹ ضائع نہ ہو۔ انہوں نے عمومی طورپر پارٹی کے کارکنوں کو مشورہ دیا کہ ہر شخص پارٹی میں اہم ہے اور ہر کسی کو متحدہ کوشش کرنی چاہئے۔ اپنے اختلافات کو پارٹی کی کامیابی کے لئے قربان کردیں۔

ایک نظر اس پر بھی

دوسری بیوی رادھیکا اور بیٹی کی معلومات الیکشن کمیشن میں جمع نہ کرنے پرکمار سوامی کے خلاف شکایت درج

وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی کے خلاف ریاستی پولیس مہاسنگھا کے صدر ششی دھرنے الیکشن کمیشن میں شکایت درج کروائی ہے۔ اپنی شکایت میں انہوں نے کہاکہ اسمبلی انتخابات کے موقع پرکمار سوامی نے اپنی ذاتی تفصیلات کے سلسلہ میں الیکشن کمیشن کو معلومات فراہم نہیں تھیں۔

بنگلورنارتھ حلقہ سے کانگریس ٹکٹ دی جائے ورنہ بنگلور سنٹرل سے آزاد امیدوار بن جاؤں گا: ایچ ٹی سانگلیانہ

نگلورنارتھ لوک سبھا حلقہ سے مجھے کانگریس کی ٹکٹ دی جائے۔ پارٹی ہائی کمان اگر شام تک فیصلہ نہیں کرے گا تو آزاد امیدوار کے طورپر انتخابی میدان میں اتر جاؤں گا۔ یہ باتیں سابق رکن پارلیمان ایچ ٹی سانگلیانہ نے کانگریس قائدین کو انتباہ دیتے ہوئے کہیں۔

جے ڈی ایس نے بنگلورنارتھ کانگریس کے لئے چھوڑدیا بی یل شنکر کو میدان میں اتارے جانے کا امکان

کرناٹک میں لوک سبھا انتخابات کے پہلے مرحلہ کے کاغذات نامزدگی داخل کرنے کے لئے صرف ایک دن باقی ہے۔ کانگریس نے آج کہاہے کہ مخلوط پارٹنر جے ڈی ایس نے بنگلور نارتھ حلقہ کی سیٹ کانگریس کے لئے چھوڑ دی ہے۔

سابق ماہی گیر وزیر پرمود مادھوراج نےملپے سے سات ماہی گیروں کے ساتھ بوٹ کی گم شدگی کے لئے نیوی کو قرار دیا ذمہ دار

اڈپی اورچکمگلورو سیٹ سے جنتادل اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار اور سابق وزیر ماہی گیری پرمود مادھو راج نےسات ماہی گیروں کے ساتھ سوورنا تریبھوجا نامی کشتی کی گم شدگی کے لئے بحری فوج کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔

انتخابات کیلئے سرمایہ اکٹھا کرنے اولاٹیکسی پرپابندی عائد کی گئی تھی۔ گوڑا

مرکزی وزیر ڈی وی سداننداگوڑا نے الزام لگایا ہے کہ انتخابات کے لئے سرمایہ توقع کے مطابق جمع نہ ہونے کی وجہ سے کانگریس ۔ جنتادل (یس) مخلوط حکومت نے اولا ٹیکسی خدمات پر6؍ماہ کے لئے پابندی عائد کی تھی۔