پلوامہ میں 2 پولیس اہلکاروں کو قتل کرنے والے جہنم کے حقدار ہیں: عمر عبداللہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th June 2018, 11:53 PM | ملکی خبریں |

سری نگر،12جون ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں جنگجوؤں کے حملے میں دو پولیس اہلکاروں کی موت واقع ہوجانے پر دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے قاتل جہنم کے حقدار ہیں۔ انہوں نے مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کہا یہ سب کچھ شب قدر کی رات کے دوران ہوا۔ ان پولیس اہلکاروں کے قاتل جہنم کی آگ کے حقدار ہیں اور وہ اپنے آپ کو اسی آگ میں جلتے ہوئے پائیں گے۔ سوگوار کنبوں کے ساتھ میری دلی تعزیت۔ عمر عبداللہ نے کہا کہ جنگجو تنظیمیں سیز فائر کو ناکام بنانے کی تمام ترکوششیں کررہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا جنگجو تنظیمیں سیز فائر کو ناکام بنانے کی ہر ممکن کوشش کررہے ہیں۔ لیکن سیز فائر کے خاتمے پر سیکورٹی فورسز جب جنگجوؤں کے خلاف سخت اقدامات اٹھائیں گے تو وہ (جنگجو) اپنے آپ کو مشکل میں پائیں گے۔ واضح رہے کہ جنگجوؤں نے گذشتہ رات ضلع پلوامہ کے نئے کورٹ کمپلیکس کی حفاظت پر مامور ریاستی پولیس اہلکاروں پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں 2 پولیس اہلکار موقع ہی جاں بحق ہوئے جبکہ تیسرا ایک شدید طور پر زخمی ہوا۔ حملہ آور مارے گئے پولیس اہلکاروں کے ہتھیار بھی چھین کر لے گئے ہیں۔ یہ حملہ ماہ رمضان کی مقدس رات شب قدر کے دوران کیا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک کے مفادمیں متحد رہنے کانگریس جے ڈی ایس قائدین کا فیصلہ،14سال بعد دیوے گوڈا اور سدرامیا کی ایک ساتھ اخباری کانفرنس

آنے والے لوک سبھا انتخابات میں سیکولر سیاسی طاقتوں کو مضبوط کرنے کی غیر معمولی پہل کرتے ہوئے آج کانگریس اور جے ڈی ایس قیادت نے اتحاد کا غیر معمولی پیغام دیا۔

حکومت یونیورسیٹیوں میں اساتذہ کی اظہاررائے کی آزادی پربندش نہیں لگائے گی

فروغ انسانی وسائل کے مرکزی وزیرپرکاش جاویڈیکر نے دہلی یونیورسٹی میں لازمی خدمات فراہمی ایکٹ ( ا یسما) لگانے کے الزامات پر صفائی دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کا ارادہ اساتذہ کے اظہار رائے کی آزادی کو روکنے کا نہیں ہے۔