پلوامہ میں 2 پولیس اہلکاروں کو قتل کرنے والے جہنم کے حقدار ہیں: عمر عبداللہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th June 2018, 11:53 PM | ملکی خبریں |

سری نگر،12جون ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں جنگجوؤں کے حملے میں دو پولیس اہلکاروں کی موت واقع ہوجانے پر دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے قاتل جہنم کے حقدار ہیں۔ انہوں نے مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کہا یہ سب کچھ شب قدر کی رات کے دوران ہوا۔ ان پولیس اہلکاروں کے قاتل جہنم کی آگ کے حقدار ہیں اور وہ اپنے آپ کو اسی آگ میں جلتے ہوئے پائیں گے۔ سوگوار کنبوں کے ساتھ میری دلی تعزیت۔ عمر عبداللہ نے کہا کہ جنگجو تنظیمیں سیز فائر کو ناکام بنانے کی تمام ترکوششیں کررہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا جنگجو تنظیمیں سیز فائر کو ناکام بنانے کی ہر ممکن کوشش کررہے ہیں۔ لیکن سیز فائر کے خاتمے پر سیکورٹی فورسز جب جنگجوؤں کے خلاف سخت اقدامات اٹھائیں گے تو وہ (جنگجو) اپنے آپ کو مشکل میں پائیں گے۔ واضح رہے کہ جنگجوؤں نے گذشتہ رات ضلع پلوامہ کے نئے کورٹ کمپلیکس کی حفاظت پر مامور ریاستی پولیس اہلکاروں پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں 2 پولیس اہلکار موقع ہی جاں بحق ہوئے جبکہ تیسرا ایک شدید طور پر زخمی ہوا۔ حملہ آور مارے گئے پولیس اہلکاروں کے ہتھیار بھی چھین کر لے گئے ہیں۔ یہ حملہ ماہ رمضان کی مقدس رات شب قدر کے دوران کیا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

مالیگاؤں 2008ء بم دھماکہ معاملہ، بم دھماکوں میں زخمی ہونے والے دو افراد نے گواہی دی، دفاعی وکلاء عدالت سے غیر حاضر ، جرح اگلے ہفتہ متوقع

مالیگاؤں ۲۰۰۸ء بم دھماکہ معاملے میں سماعت روز بہ روز جاری ہے ، آج اس معاملے میں بم دھماکوں میں زخمی ہونے والے دو افراد کی گواہی عمل میں آئی

مثبت فکر اورتوانائی سے ملک کی ترقی ہوتی ہے:ارون جیٹلی 

مودی حکومت کے ناقدین کو بات بات پر احتجاج کرنے والا بتاتے ہوئے وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے جمعرات کو ان پر جھوٹ گھڑنے اور ایک منتخب حکومت کو کمزور کرکے جمہوریت کو برباد کرنے کا الزام لگایا۔ طبی معائنہ کے لیے امریکہ دورہ پر گئے ارون جیٹلی نے ایک فیس بک پوسٹ میں کہا کہ اظہار رائے کی ...

عد لیہ نے مہاراشٹر میں ڈانس بار پر پابندی لگانے والی کئی تجاویزمستردکیں 

سپریم کورٹ نے مہاراشٹر میں ڈانس بار کے لئے لائسنس اور اس کاروبار پر پابندی لگانے والے کچھ تجاویز جمعرات کومنسوخ کردیئے۔ جسٹس اے کے سیکری کی صدارت والے بنچ نے مہاراشٹر کے ہوٹل، ریستوران اور بار ہاؤس میں فحش رقص پر پابندی اورعورتوں کے وقار کی حفاظت سے متعلق قانون 2016 کے کچھ دفعات ...