بیلگام میں اغوا شدہ انجینئرنگ طالبہ کو پولیس نے چند گھنٹوں میں رہا کروایا؛ دوست گرفتار

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 21st April 2017, 12:30 AM | ریاستی خبریں |

بیلگاوی20؍ اپریل (ایس او نیوز)اغوا اور زرتاوان کے منصوبے کو خاک میں ملاتے ہوئے پولیس نے فوری کارروائی کے ذریعے آٹھ گھنٹوں کے اندر مغویہ لڑکی کا پتہ لگالیا اور اسے رہا کرواتے ہوئے اغوا کی اس واردات میں ملوث اس کے دو دوستوں کو گرفتار کرلیا۔

 پولیس کے بیان کے مطابق GITانجینئرنگ کالج کی طالبہ ارپیتا کے اغوا کا منصوبہ بالکل ہی فلمی انداز میں  اس کے بچپن کے دوست کیداری کے ساتھ مل کر دیویا ملیکا رجن مالگھانا نامی سہیلی نے بنایا تھا ۔اس منصوبہ کے تحت انہوں نے ارپیتا کو اپنے ساتھ کھانے کی دعوت دی، اور کھانا کھاتے وقت کولڈ ڈرنک میں نیند کی گولی اسے کھلائی گئی۔جب ارپیتا پر غنودگی طاری ہوگئی تو انہوں نے ببلو نامی ایک کار ڈرائیور کی مدد سے اس کا اغوا کیا اور گدگ لے گئے، اور کیداری کی گھر میں رات بتائی۔ بتایا گیا ہےکہ جب بھی ارپیتا کو ذراسا ہوش آتا اسے پھر سے چائے یا دوسرے مشروب میں نیند کی گولی کھلادی جاتی تھی۔

اس دوران ایک طرف کیداری نے ارپیتا کے والدین کو فون کرکے بتایاکہ وہ انڈر ورلڈ ڈان کا گُرگا ہے اور اس نے ارپیتا کو زرتاوان وصول کرنے کے لئے اغوا کرلیا ہے۔دوسری طرف جب ارپیتا کو  ذرا سا ہوش آیاتواس نے اپنے اغوا کاروں کی نظریں بچاکروالدین کو فون کرتے ہوئے  اصل حقیقت بتادی ۔ اس بنیا د پر اس کے والدین نے پولیس میں شکایت درج کروائی۔ڈپٹی کمشنر آف پولیس رادھیکا نے اس کیس کو حل کرنے کے لئے پولیس کی تین ٹیمیں بنائیں اوران میں سے ایک ٹیم نے صبح چار بجے کے وقت گدگ میں کیداری کے گھر پر چھاپہ مار کر ارپیتا کو برآمد کرنے کے علاوہ تین اغواکاروں کو گرفتار کرلیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پوچھ تاچھ کے دوران گرفتار شدہ اغواکاروں نے بتایا کہ انہوں نے 5کروڑ روپے تاوان وصول کرنے کے لئے ارپیتا کا اغوا کیا تھا اور منت بھی مانی تھی کہ وصول شدہ پانچ کروڑ روپوں میں سے 70لاکھ روپے تروپتی کے مندر میں عطیہ کے طور پر جمع کریں گے۔اس کے علاوہ شری کرشنا مٹھ اور کسی یتیم خانے کو بھی عطیہ دینے کی نیت انہوں نے کر رکھی تھی۔لیکن پولیس کی بر وقت کارروائی سے چند گھنٹوں کے اندر ہی یہ معاملہ حل ہوگیا اور اغوا کاروں کا منصوبہ دھرے کا دھرا رہ گیا۔
 

ایک نظر اس پر بھی

109؍ کروڑ کا دھوکہ، کلرک اور آڈٹ افسر ملزم

بروہت بنگلور مہانگر پالیکے(بی بی یم پی) کو جعلی بل ا ور دستاویزات منسلک کرکے 109؍ کروڑ روپیوں کا دھوکہ دینے پر انفراسٹرکچر ڈیولپمنٹ محکمہ کے فرسٹ ڈویژن کلرک ماینا اور محکمہ آڈٹ کے افسر ناگراج کارنت کے خلاف السور گیٹ پولیس تھانہ میں ایف آئی آر درج کی گئی ۔

کرناٹک کا دیرینہ خواب شرمندۂ تعبیر بنگلور شہر اسمارٹ سٹی کی فہرست میں شامل

بشمول راجدھانی بنگلور ملک کے 30؍شہروں کو مرکزی حکومت نے اسمارٹ سٹی کے طورپر ترقی دینے کے لئے منتخب کرلیاہے۔ مرکزی وزیر برائے شہری ترقیات وینکیا نائیڈونے آج اس کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ مرکزی اسمارٹ سٹی اسکیم کے تحت ان 30؍شہروں کو ترقی دی جائے گی۔

اب ڈیزل کی بھی ہوگی ہوم ڈیلیوری، بنگلور بنا پہلا شہر

بنگلور  ملک کا ایسا پہلا شہر بن گیا ہے جہاں پر لوگ اپنے گھر کے دروازے پر ڈیزل منگوا سکتے ہیں۔ٹھیک ویسے ہی جیسے آپ گھر بیٹھے اپنا پیزا، فوڈ، دودھ جیسی چیزیں آرڈر کرتے ہیں۔15جون کو مائی یٹرول پمپ نامی ایک اسٹارٹ اپ نے اس کی شروعات کی ہے۔یہ اسٹارٹ اپ ایک سال پرانی ہے